ایودھیا معاملہ پر فیصلہ صادر ہوتے ہی یو پی میں بند ہو سکتا ہے انٹرنیٹ

Source: S.O. News Service | Published on 9th November 2019, 10:26 AM | ملکی خبریں |

لکھنؤ،9؍اکتوبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) ملک کی سب سے بڑی عدالت یعنی سپریم کورٹ 10.30 بجے تاریخی فیصلہ سنانے والی ہے۔ سپریم کورٹ میں چیف جسٹس کی قیادت والی 5 ججوں کی بنچ ایودھیا معاملے میں فیصلہ دے گی۔ سپریم کورٹ نے ایودھیا معاملہ میں 40 دن تک لگاتار سماعت کرنے کے بعد 16 اکتوبر کو اپنا فیصلہ محفوظ رکھ لیا تھا۔ اس دوران ہندو اور مسلم فریق دونوں کی ہی طرف سے زوردار دلیلیں عدالت کے سامنے رکھی گئیں۔

اتر پردیش میں سب سے زیادہ سیکورٹی: اس فیصلے کی حساسیت کو دیکھتے ہوئے پورے ملک میں سیکورٹی کے انتظامات سخت کر دیے گئے ہیں۔ اتر پردیش میں خصوصی انتظامات کے تحت سبھی اسکول و کالج پیر کے روز تک بند ہیں۔ کئی شہروں میں انٹرنیٹ خدمات بھی بند کر دی گئی ہیں اور پوری ریاست میں دفعہ 144 نافذ کر دیا گیا ہے۔

ایودھیا کی ہوائی نگرانی: ایودھیا اور آس پاس کے علاقوں کی ہوائی نگرانی کی جا رہی ہے۔ اتر پردیش کے ڈی جی پی او پی سنگھ کا کہنا ہے کہ ’’ہم نے مذہبی لیڈروں اور شہریوں کے ساتھ ریاست بھر میں تقریباً 10 ہزار میٹنگیں کیں۔ ہم نے ریاست کے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ سوشل میڈیا پر افواہیں نہ پھیلائیں۔ ایودھیا میں نیم فوجی دستوں کی تعیناتی کی گئی ہے۔ ہوائی سرویلانس کیا جا رہا ہے۔ خفیہ نظام کو تیار کیا گیا ہے اور تلاشی کی جا رہی ہے۔ اے ڈی جی رینک کے افسر کی ایودھیا میں تعیناتی کی گئی ہے تاکہ آپریشن پر نظر بنا کر رکھی جا سکے۔‘‘

رام للا کے پجاری نے کی امن بنائے رکھنے کی اپیل: رام للا کے پجاری مہنت ستیندر داس نے کہا کہ ’’میں سبھی سے اپیل کرتا ہوں کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کی عزت کریں اور امن بنائے رکھیں۔ وزیر اعظم نے صحیح کہا ہے کہ ایودھیا کا فیصلہ کسی کی ہار یا جیت نہیں ہے۔‘‘

یو پی کے 31 اضلاع حساس قرار، غیر مستقل جیل کی ہوئی تعمیر: اتر پردیش کے ڈی جی پی او پی سنگھ نے کہا ہے کہ ریاست کے 31 اضلاع حساس ہیں جہاں سیکورٹی زیادہ سخت ہے۔ مرکز سے ملے 40 کمپنی نیم فوجی دستہ کو انہی اضلاع میں تعینات کیا جائے گا۔ سب سے سخت انتظام ایودھیا میں ہوگا۔ انھوں نے اشارہ دیا کہ فیصلہ آتے ہی ریاست میں انٹرنیٹ خدمات بند کی جا سکتی ہیں۔ دفعہ 144 نافذ کیے جانے کے ساتھ ہی سبھی اضلاع میں غیر مستقل جیل کی تعمیر بھی ہوئی ہے۔ انھوں نے کہا کہ سوشل میڈیا پر اشتعال انگیز پوسٹ ڈالنے والے 673 لوگ نگرانی میں ہیں۔ 10 نومبر کو بارہ وفات اور 11 سے 13 کو کارتک پورنیما کے لیے بھی پولس کو ہائی الرٹ کیا گیا ہے۔ 31 اضلاع جو حساس ہیں ان میں ایودھیا، آگرہ، میرٹھ، مراد آباد، علی گڑھ، پریاگ راج، لکھنؤ، وارانسی، مظفر نگر، سہارنپور، شاملی، باغپت، بلند شہر، رام پور، مین پوری شامل ہیں۔

16000 والنٹیرس تعینات: ایودھیا پولس نے سوشل میڈیا پر کسی بھی طرح کی غلط تشہیر یا کسی بھی فرقہ کے خلاف اشتعال انگیز مواد پھیلائے جانے پر نظر رکھنے کے لیے ضلع کے 1600 مقامات پر 16 ہزار والنٹیر تعینات کیے ہیں۔ گڑبڑی روکنے کے لیے 3000 لوگوں کو نشان زد کر کے ان کی نگرانی کی جا رہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

کشمیر: خراب موسمی حالات، جوتوں کی قیمتیں آسمان پر

 وادی کشمیر میں وقت سے پہلے ہی موسم کی بے رخی نے جہاں اہلیان وادی کو درپیش مصائب ومسائل کو دو بھر کردیا وہیں لوگوں کا کہنا ہے کہ جوتے فروشوں نے اس کا بھر پور فائدہ اٹھانے میں کوئی کسر باقی نہیں چھوڑی۔

کشمیر میں غیر یقینی صورتحال کا 104 واں دن، ہنوز غیر اعلانیہ ہڑتالوں کا سلسلہ جاری

وادی کشمیر میں ہفتہ کے روز لگاتار 104 ویں دن بھی غیر یقینی صورتحال کے بیچ معمولات زندگی پٹری پر آتے ہوئے نظر آئے تاہم بازار صبح اور شام کے وقت ہی کھلے رہتے ہیں اور سڑکوں پر اکا دکا سومو اور منی گاڑیاں چلتی رہیں لیکن نجی ٹرانسپورٹ کی بھر پور نقل وحمل سے کئی مقامات پر ٹریفک جام ...

ایودھیا قضیہ: لکھنؤ میں مسلم پرسنل لاء بورڈ کی میٹنگ کل

) ایودھیا میں بابری مسجد۔رام مندر متنازع اراضی ملکیت معاملے میں سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد آگے کی حکمت عملی طے کرنے کے لئے آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کی میٹنگ اتر پردیش کی راجدھانی لکھنؤ میں اتوار کو منعقد کی جائے گی۔

سی او کو مبینہ طور پر دھمکانے کا معاملہ:   سی ایم یوگی نے وزیر سواتی سنگھ سے وضاحت طلب کرلی 

فراڈ کے 150 سے زیادہ معاملات میں تحقیقات کا سامنا کر رہے انسل کے لئے مبینہ طور پر پیروی کرنا اورسی او کو دھمکانا ریاستی وزیر (آزادانہ چارج) سواتی سنگھ کو بھاری پڑ رہا ہے۔ ہفتہ کو سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ نے وائرل آڈیو کو لے کر وزیر سواتی سنگھ کو طلب کیا اوراس واقعہ کے تحت وضاحت طلب ...

یہ وقت سیاست کا نہیں، مل کر دہلی کی آلودگی دور کرنے کا ہے: کجریوال  

رافیل ڈیل پر سوال اٹھانے کے لئے اروند کجریوال سے معافی کا مطالبہ کر رہے وزیر ماحولیات پرکاش جاوڈیکر کو دہلی سی ایم نے سیاست چھوڑ کر متحدہوکر آلودگی کم کرنے کے لئے کام کرنے کو کہا ہے۔ جاوڈیکر نے یہ مطالبہ ٹویٹ کر کیا تھا۔ کجریوال نے ان کے   ٹوئٹ کو ’ر ی ٹوئٹس‘ کرتے ہوئے ایسا ...