محکمہ جنگلات کے افسران کے خلاف بھٹکل پولس اسٹیشن کے باہر احتجاج؛ اے ایس پی کو دی گئی تحریری شکایت

Source: S.O. News Service | Published on 15th October 2019, 6:17 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 15/اکتوبر(ایس او نیوز) جنگلاتی زمین کے حقوق کے لئے لڑنے والی ہوراٹا سمیتی کے کارکنان نے آج بھٹکل ٹاون پولس تھانہ کے باہر جمع ہوکر محکمہ جنگلات کے اہلکاروں کے خلاف کاروائی کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے احتجاج کیا اور بھٹکل سب ڈیویژن کے اسسٹنٹ ایس پی  کے نام میمورنڈم پیش کیا۔ 

ہوراٹا سمیتی کے ضلعی صدر ایڈوکیٹ رویندرا نائک کی قیادت  میں سو سے زائد لوگ بھٹکل ٹاون پولس تھانہ کے باہر جمع ہوئے اور  اسسٹنٹ ایس پی کی غیر موجودگی پر تھانہ انچارج پی ایس آئی کوڈگُنٹی کو بتایا کہ   محکمہ جنگلات کے اہلکار آتی کرم داروں کے مکانوں پر پہنچ کر لوگوں کو تنگ  و ہراساں کرنے میں مصروف ہیں، لہٰذا تمام آتی کرم داروں کو تحفظ فراہم کیا جائے اور جو بھی اہلکار لوگوں کو تنگ کرتے ہیں اُن کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے۔ احتجاج کرتی خواتین نے بتایا کہ  اہلکاروں کے گھروں میں آنے کی کوئی ٹائمنگ نہیں ہے، شام سات بجے بھی آتے ہیں ، رات کے اوقات میں بھی آتے ہیں اور زور زبرستی کرکے لوگوں کو ہراساں کرتے ہیں۔

اس موقع پر ایڈوکیٹ رویندرا نائک نے بتایا کہ  بھٹکل میں اتی کرم داروں کو محکمہ جنگلات کے افسران کی طرف سے ہراساں کیے جانے کی وارداتیں روز کا معمول بن گئی ہیں۔ اس تعلق سے  ہوراٹاسمیتی کی طرف سے کئی بار احتجاجی مظاہرے کیے گئے۔ محکمہ جنگلات کے اعلیٰ افسران سے شکایات کی گئیں۔ محکمہ پولیس کے افسران سے اس پر قابو پانے کی گزارش کی گئی، لیکن اس سے کوئی فائدہ نہیں ہوا ہے۔

 بھٹکل اے ایس پی کو میمورنڈم پیش کرتے ہوئے انہوں نے  قانون اور سرکاری احکامات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا  ہے کہ اتی کرم داروں کی درخواستیں ابھی زیر غور ہیں۔ قانونی طور پر تین ایکڑ سے کم زمین پر قبضہ رکھنے کو خالی کروانے یا پھر ان پر زور زبردستی کرنے کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔ اس کے باوجود محکمہ جنگلات کے واچ مین  اور دیگر کم درجوں پر فائز افسران کسی نہ کسی بہانے سے اتی کرم داروں کو ہراساں کررہے ہیں۔ میمورنڈم میں انہوں نے بتایا ہے کہ شہر بھٹکل کے اطراف جالی، بیلکے جیسے علاقوں میں محکمہ جنگلات کے افسران گھروں کے کمپاؤنڈ، دیواروں یا پھرفصلوں کو نقصان پہنچاتے رہتے ہیں۔جو مکانات اور عمارتیں پہلے ہی سے تعمیر شدہ ہیں وہاں پہنچ کر لوگوں کو جسمانی اور ذہنی طور پر اذیت دی جارہی ہے۔ اس طرح محکمہ کے افسران کی طرف سے صریح طور پر قانون کی خلاف ورزی کی جارہی ہے اور جنگلاتی زمین پر اتی کرم کرنے والوں خوف میں مبتلا کیا جا رہا  ہے۔

میمورنڈم میں بھٹکل میں پیش آئے ہوئے تازہ 16 معاملات کا حوالہ دیاگیا ہے جس میں گھر نمبر 783جالی روڈ کے مکین خان میر صاحب باغ  سراج،  جامعہ آباد جنتاکالونی کی مکین رحیمہ شاہ بندری ،  امین الدین روڈ مدینہ کالونی کے رہنے والے محمد فیصل،  گورٹے کے مہادیو گوند موگیر،  یلوڈی کوور کے شریدھر سومیا  جوگی وغیرہ کے نام شامل ہیں جن  کو محکمہ جنگلات کے افسران نے ہراساں کیا ہے۔

 میمورنڈم میں واضح کیا گیا ہے کہ  بھٹکل میں  جنگلاتی زمین پر  برسہا برس سے بڑی تعداد میں لوگ  رہتے آرہے ہیں اور یہ  لوگ  ان زمینات کو کھیتی باڑی اور رہائش کے لئے استعمال کرتے ہیں۔ یہ سمیتی   ایسے اتی کرم داروں کو قانونی حقوق دلانے کے لئے  سرگرم ہے۔

اے ایس پی کے نام  میمورنڈم پیش کرنے کے بعد ضلع ہوراٹا سمیتی کے صدر ایڈوکیٹ رویندرا نائک نے بتایا  کہ انہوں نے پولیس سے شکایت کرتے ہوئے محکمہ جنگلات کے خاطی افسران کے خلاف کارروائی کرنے اور جن اتی کرم داروں نے اپنے حقوق کے لئے درخواستیں حکومت کو دی ہیں ان کو تحفظ فراہم کرنے کی مانگ کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولس  نے میمورنڈم کو  قبول کرتے ہوئے یقین دلایا ہے کہ وہ اعلیٰ پولیس افسران سے اس معاملے پر بات چیت کریں گے اور اس ضمن میں مناسب اقدامات کریں گے۔

اس موقع پر ہوراٹا سمیتی کی طرف سے  ایڈوکیٹ رویندرا نائک کے ساتھ سید علی،  دیوراج گونڈا،  پانڈو نائک، لکشمی پجاری، عبدالقیوم، محمد رضوان و دیگر کافی لوگ موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل اور ساحلی کرناٹکا میں پہلی مرتبہ گھروں میں ہی منائی جائی جارہی ہے عید ؛ کورونا بحران کے سبب دنیا بھر میں پائی جارہی ہے مایوسی

بھٹکل سمیت ساحلی کرناٹکا بالخصوص اُڈپی، مینگلور اور پڑوسی ریاست کیرالہ میں سنیچر کو  30 روزے مکمل کرنے کے بعد آج اتوار کو عید الفطر منائی جارہی ہے، مگر انسانی تاریخ میں پہلی مرتبہ مسلمان عید گھروں میں ہی  منانے پر مجبور ہیں۔ عیدالفطر کے موقع پر اخوت، بھائی چارگی، غم گساری، ...

بھٹکل کی فکروخبر میڈیا کی طرف سے فقہ شافعی آن لائن کوئیز مقابلہ؛ کوئیز جیتنے والوں کے لئے پچاس ہزار روپئے کے انعامات

بھٹکل کی فکروخبر میڈیا کی طرف سے فقہ شافعی کا آن لائن کوئیز مقابلہ منعقد کیا گیا ہے جس میں کوئیز جیتنے والوں کے لئے پچاس ہزار روپئے کے انعامات تقسیم کئے جائیں گے۔ اس  بات کی اطلاع  مدیر فقہ شافعی فکروخبر بھٹکل مولوی  سید اظہر برماور ندوی  نے دی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ملک بھر ...

اُڈپی میں پھر پائے گئے پانچ کورونا پوزیٹو معاملات؛ بیندور میں بھی نکلے تین کووِ ڈ پوزیٹیو معاملات۔ اڈپی میں متاثرہ افراد کی تعداد ہوگئی 55

اڈپی ضلع کے بیندور میں مہاراشٹرا سے واپس لوٹے ہوئے تین افراد کی کووِڈجانچ رپورٹ پوزیٹیونکلی ہے۔ جس کے بعد ضلع میں متاثرین کی تعداد 50ہوگئی ہے۔ان میں ایکٹیو معاملات کی تعداد 46ہے۔

برازیل میں ایک دن میں 1179 مریض چل بسے

لاطینی امریکہ میں کرونا وائرس سے بدترین متاثر ملک برازیل میں منگل کو 1179 افراد ہلاک ہوئے، جو ملک میں 24 گھنٹوں کے دوران ہلاکتوں کا نیا ریکارڈ ہے۔ ان میں سے 324 اموات صرف ایک صوبے ساؤپولو میں ہوئی ہیں۔