کاروار :ساحلی پٹی کے مختلف ترقیاتی کاموں کو مرحلہ وار شروع کیاجائے : وزیر کوٹاشری نواس پجاری

Source: S.O. News Service | By Abu Aisha | Published on 8th June 2020, 8:26 PM | ساحلی خبریں |

کاروار : 8؍جون (ایس اؤ نیوز) کاروار سے منگلورو کے اُلال تک 320کلومیٹر لمبی ساحلی پٹی پر ایشیا ڈیلوپمنٹ  بینک کے تعاون سے شروع کئے گئے مختلف کام باقی ہیں، جنہیں مرحلہ وار تکمیل تک پہنچایا جائے گا، اس بات کی اطلاع  ریاستی ماہی گیر وزیر کوٹا شری نواس پجاری نے   دی۔ انکولہ تعلقہ کے گابت کینی  سمندر کے ساحلی علاقوں کا معائنہ کرنے کےبعد وزیر پجاری کاروار میں اخبارنویسوں سے بات کر رہے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ ریاست کی بندرگاہوں پر موجود کیچڑ نکالنے کی مانگوں کا جائزہ لیا جارہاہے۔ عام طورپر سمندری دیوار کی تعمیر کا مطلب سمندر میں پتھر پھینکے جانے کا الزام لگایا جاتاہے۔ اگر ضلع ڈی سی فوری طورپر ساحل پر پتھر ڈالے جانے کی رپورٹ دیتےہیں تو انہی پتھروں کو مستقل دیوار کی تعمیر کے لئے استعمال کئے جانے کا منصوبہ تشکیل دیاجائےگا۔

نیلا انقلاب : مرکزی حکومت کی طرف سے ماہی گیری کو زراعت کا حصہ مانتے ہوئے سرکلر جاری کیا ہے، اس مرتبہ قریب 20ہزار کروڑ روپئے ملک بھر میں ماہی گیری کے لئے استعمال کیاجائے گا۔ نیلے انقلاب کے تحت ریاست کو پانچ برسوں میں 3.5 سے 4ہزار کروڑ روپئے ملنے کی امید ظاہر کی۔ انہوں نے اگلے تین برسوں میں بندرگاہوں، ماہی گیری اور ماہی گیروں کی ترقی کے لئےمختلف منصوبہ جات تشکیل دئیے جانے کی بھی جانکاری دی ۔ گزشتہ بجٹ میں 1،000ماہی گیرخواتین کو 50فی صد کی رعایت پر دوپہیہ سواریاں دینے کا اعلان کیا گیا تھا جو جاری ہے۔ 6کروڑروپئے منظور ہوتے ہی سواریاں تقسیم کئے جانے کا تیقن دیا۔ اسی طرح  انہوں نے ماہی گیروں کا 60کروڑ قرضہ معاف کرنے کی جانکاری دی جس سے وزیر موصوف کے مطابق  23ہزار عوام کو فائدہ پہنچا ہے۔ پجاری نے کہا کہ  اُڈپی ضلع کو 80، دکشن کنڑا اور اترکنڑا ضلع کو فی کس 10فی صد حصہ دیاگیا ہے۔ متعلقہ اضلاع کی نیشنل بینکوں سے ماہی گیروں کو قرضہ دینے کی بینک مینجروں کو ہدایات دی گئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ  جنوری سے مارچ تک ماہی گیروں کے لئے ڈیزل سبسڈی نہیں دی گئی ہے ، لیکن محکمہ خزانہ کو 33کروڑروپئے کی پیش کش ارسال کی جاچکی ہے انہوں نے یقین دلایا کہ  اگلے ایک ہفتہ میں  اسے منظور کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

اننت کمار ہیگڈے نے لگایابی ایس این ایل میں دیش دروہی افسران موجود ہونے کا الزام

اپنے متنازعہ بیانات کے لئے پہچانے جانے والے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے الزام لگایا کہ بھارت سنچار نگم لمیٹڈ کے اندر دیش دروہی افسران بیٹھے ہوئے جس کی وجہ سے اس کے کام کاج میں کوئی ترقی نہیں ہورہی ہے۔ اس لئے آئندہ دنوں میں اس کی نج کاری (پرائیویٹائزیشن) کیا جائے گا۔

ایم پی اننت کمار ہیگڈے کا بھٹکل دورہ؛ 23.72کروڑ روپے کے ترقیاتی منصوبوں کو دکھائی ہری جھنڈی

پیر کو رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے بھٹکل کا دورہ کرتے ہوئے  بھٹکل تعلقہ میں ’پردھان منتری گرام سڑک یوجنا‘کے تحت 23.72کروڑ روپے لاگت کے مختلف ترقیاتی منصوبوں کو ہری جھنڈی دکھائی۔ وہ یہاں ماروتی نگر میں بی جے پی تعلقہ آفس کا افتتاح کرنے کے بعد خطاب کررہے تھے۔

مینگلور کے قریب سولیا میں ہائی ٹینشن الیکٹرک کیبل کی زد میں آکر بائک کے ساتھ بائک سوا ر بھی جل کرخاکستر

ضلع دکشن کنڑا کے  سولیا میں کلّیری نامی علاقے میں آج منگل صبح 5.30بجے پیش آئے  ایک انتہائی دردناک حادثہ میں دو لوگ موقع پر ہی جل کر ہلاک ہوگئے جن میں ایک  شناخت  اُمیش (45) کی حیثیت سے کی گئی ہے، جبکہ  بائک کی پچھلی سیٹ پر سوار اس کے  ساتھی کا  نام معلوم نہ ہوسکا۔

کاروار:ایس ایس ایل سی امتحان کے نتائج۔ سرسی کی سنّدھی ہیگڈے نے پایا ریاست میں پہلا رینک

امسال ریاست میں ایس ایس ایل سی کے جو امتحانات ہوئے تھے اس کا سامنا طلبہ نے کووڈ وباء کے پس منظر میں ذہنی تناؤ کے ساتھ کیا تھا۔اس کے بعد کافی دنوں سے طلبہ بڑی بے چینی کے ساتھ اپنے نتائج کا انتظار کررہے تھے۔