آننت کمار ہیگڈے۔ جو صرف ہندووادی ہونے کی اداکاری کرتا ہے ’کراولی منجاؤ‘کے چیف ایڈیٹر گنگا دھر ہیرے گُتّی کے قلم سے

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 4th February 2019, 12:07 AM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | ملکی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

بھٹکل 3/فروری (ایس او نیوز) اُترکنڑا کے رکن پارلیمان آننت کمار ہیگڈے جن کے بارے میں مشہور ہے کہ وہ  عین انتخابات کے موقعوں پر متنازعہ بیانات دے کر اخبارات کی سُرخیاں بٹورتے ہوئے انتخابات جیتنے میں کامیاب ہوتا ہے، اُس کے تعلق سے کاروار سے شائع ہونے والے معروف کنڑا روزنامہ کراولی منجاو کے ایڈیٹر نے سنڈے  ایڈیشن میں اپنے خیالات کا اظہار  کیا ہے، جس کا اُردو ترجمہ یہاں پیش کیا جارہا ہے۔

  ’’ہند و لڑکیو ں کے جسم کو چھونے والے ہاتھ کاٹ دئے جائیں۔‘‘ یہ ہمارے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کا بیان ہے جو ان کے دسیوں متنازع بیانات میں سے ایک ہے، جس کے ذریعے انہوں نے ایک اور پانسہ پھینکا ہے۔اننت کمار ہیگڈے کو اگرکوئی کٹرپنتھی یا کٹر وادی مہابرہمن اور منووادی سمجھتا ہے تو پھر یہ غلط ہے۔ اگر اس لحاظ سے کسی کے پاس کوئی اہلیت ہے اور کسی کو  ایسی کوئی ڈگری دی جاسکتی ہے تو وہ ہمارے ضلع میں سرسی کے رکن اسمبلی اور سابق وزیر وشویشورا ہیگڈے کاگیری ہیں جو اس کے قابل ہیں۔

جہاں تک اننت کمار ہیگڈے کا معاملہ ہے وہ سیاسی مفاد کے لئے متنازع بیانات کو چارے کے طور پراستعمال کرتے ہیں۔ وہ سمجھتے ہیں کہ ایسے میں اگر مخالف پارٹیوں کی جانب سے ان کی مخالفت ہوتی ہے تو پھر یہ ان کے لئے عوامی مقبولیت کا سبب ہوتی ہے۔فی الحال وہ رکن پارلیمان کی حیثیت سے اپنی ناکامیوں کی وجہ سے پیش آنے والی صورتحال سے گزر رہے ہیں۔اس کی وجہ سے اگر انہیں کوئی انتہا پسند، ہندو وادی اور اقلیتوں کو قصوروار ٹھہرانے والا فرقہ پرست مانتا ہے تو وہ ان کی اپنی عقل اور سوچ کی حد ہے۔ وہ بے شک منو وادی نہیں ہے۔ ذات پات کے نظام والے ہندو دھرم میں برہمنوں کے ایک محافظ کے طور پر ان کو دیکھنابس ایک چھلاوہ ہے۔ وہ ہر گھڑی گرگٹ کی طرح ایک رنگ بدلنے والی شخصیت ہے۔ وہ نئے زمانے کے چانکیہ کی طرح عقل اور زبان کی طاقت سے کمزور شودروں کو اپنی عسکری طاقت بناکر ان کے دلوں میں اقلیتوں کے خلاف زہر گھولنا اور انہیں دیش مخالف قرار دے کر اپنے فوجیوں کو قربان کرنے والے انسان ہیں۔ سماجی ترقی کے مقابلے میں صرف فرقہ پرستی کو ہوا دینے میں کامیاب ہوئے ہیں۔

گزشتہ پانچ میعادوں میں کسی ایک تعمیری کام کی بنیاد رکھنے کی کوئی خبریا کسی منصوبے کے افتتاح کاپروگرام ان کے نام نہیں ہے۔ تو پھرسوال اٹھ سکتا ہے کہ کروڑوں روپے کے ایم پی فنڈ کاانجام کیا ہوا۔اس لئے انہوں نے اسے فرقہ واریت کا موضوع چھیڑ کر دبا رکھا ہے۔ لیکن وہ بے شک فرقہ پرست نہیں ہیں ۔ وہ محض ایک افیون ہے جو عوامی نمائندہ بننے کے لئے عوام کو کھلارہے ہیں۔ وہ کبھی بھی ہندو دھرم یا ہندوؤں کے مفاد کے لئے رہے ہی نہیں۔ یہ صر ف ان کے لئے ایک لبادہ ہے۔یہ بیانات سب ناٹک ہیں۔ وہ دیش، ذات اور دھرم کے چاہنے والے بھی نہیں ہیں۔ صرف خودپسند اور خود پرست آدمی ہیں۔ ایک بات یاد رکھئے کہ اپنی ذمہ داریاں نبھانے میں ناکام ہونے والے عوام کے سامنے اس کا اعتراف کرنے میں شرمندگی محسوس کرتا ہے۔مگر اس ناکامی کو بھی جو اپنی عیاری اور چالاکی سے سماجی اقدار کی شکل میں پیش کرتے ہوئے سڑک چھاپ ناٹک کے طرز پر ڈائیلاگ بازی کرتا ہے اور اداکاری کیا کرتا ہے، وہ اننت ہے!
 

ایک نظر اس پر بھی

بنٹوال میں ایمبولینس اور ٹرک کا تصادم۔ 1خاتون ہلاک، 4زخمی    

نیرلکٹے کے پاس پیش آنے والے ٹرک اور ایمبولینس کے تصادم میں ایک خاتون موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ ایمبولینس میں موجود مریض سمیت دیگر 4افراد زخمی ہوگئے ہیں، جنہیں علاج کے لئے پتور کے سرکاری اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔

کاروار:اپنی نجی خواہشات کے لئے دوسروں پر الزام عائد نہ کریں : وزیر دیش پانڈے کا ہیبار پرپلٹ وار

اغی گروپ میں شامل یلاپور کے رکن اسمبلی شیورام ہیبار نےاپنے فیس بک پیج پر ضلع نگراں کار وزیر آر وی دیش پانڈے کے خلاف لگائے گئے الزاما ت کا وزیر دیش پانڈے نے بھی فیس بک پر  ہی  کچھ اس طرح جواب دیا ہے۔ ’ہیبار اپنے نجی اور انفرادی فیصلوں اور خواہشات کے لئے خود ذمہ دار ہیں ، اس ...

اڈپی ضلع پولیس نے کروائی گائیں چرانے کے معاملات میں ملوث157 افرادکی پریڈ۔ شہر بدرکرنے اور غنڈہ ایکٹ لاگو کرنے کی دی گئی وارننگ

اڈپی ضلع میں پولیس نے گائیں چرانے کے معاملات میں شامل رہنے والے افراد کو مختلف مقامات پر طلب کرکے ان کی اجتماعی پریڈ کروائی اور انہیں تنبیہ کرتے ہوئے کہا کہ آئندہ اس طرح کی وارداتوں میں اگر وہ ملوث ہونگے تو پھر ان کے خلاف شہر بدر کرنے یا پھر غنڈہ ایکٹ لاگو کرنے جیسے اقدامات کیے ...

مفرورمنصورخان کاایک اورویڈیو 24 گھنٹے میں ہندوستان واپسی کاوعدہ!

لوگوں کو کروڑوں روپئے کا دھوکہ دینے والی پونزی کمپنی آئی ایم اے کے بانی وایم ڈی محمد منصور خان کیا واقعی 24 گھنٹوں میں ہندوستان واپس لوٹ آئیں گے؟ جبکہ اس گھپلے کی جانچ کررہی ایس آئی ٹی نے یہ دعویٰ کیا ہے کہ منورخان کا پاسپورٹ انٹرپول کے ذریعہ کالعدم قرار دیا گیا ہے -

 گجرات:  ٹھاکر کمیونٹی کادقیانوسی قانون،لڑکیوں کے موبائل کے استعما ل پر مکمل پابندی، بھاگ کر شادی کرنے پر اہل خانہ کو بھرنا ہوگا جرمانہ 

گجرات کے بناس کا ٹھا میں ٹھا کر کمیونٹی کی طرف سے 12 دیہات میں عجیب و غریب اور دقیانوسی قوانین بنائے گئے ہیں۔ اس میں ایک اصول ایسا ہے کہ لڑکیاں اپنے پاس موبائل نہیں رکھ پائیں گی۔

 اب تمام علاقائی زبانوں میں ہون گے ڈاک محکمہ کے امتحانات، راجیہ سبھا میں ہنگامہ کے بعد حکومت نے منسوخ کیا پیپر 

ڈاک محکمہ کی گزشتہ ہفتے ہوئے ایک امتحان کا ذریعہ صرف ہندی اور انگریزی رکھنے کی مخالفت میں منگل کو راجیہ سبھا میں کئی جماعتوں کے ارکان کے ہنگامے کی وجہ سے کاروائی کئی بار روکنا پڑی۔

پاکستانی جیل میں قید سابق ہندوستانی افسر کلبھوشن پر بین الاقوامی عدالت کا فیصلہ آج

پاکستان کی جیل میں بند ہندوستانی بحریہ کے سابق فوجی افسر کلبھوشن جادھو کے معاملے میں بدھ کو ہیگ واقع بین الاقوامی عدالت (آئی سی جے) اپنا فیصلہ سنائے گی۔ ’دی ہیگ‘ کے پیس پیلس میں 17 جولائی کو ہندوستانی وقت کے مطابق شام ساڑھے چھ بجے کھلی سماعت ہوگی جس کے بعد چیف جسٹس عبدالقوی ...

کرناٹک : استعفیٰ دینے والوں کی فہرست میں یلاپور رکن اسمبلی ہیبار بھی شامل۔کیاوزارت کے لالچ میں چل پڑے آنند اسنوٹیکر کے راستے پر؟

ریاست کرناٹک  میں جو سیاسی طوفان اٹھ کھڑا ہوا ہے اور اب تک کانگریس، جے ڈی ایس مخلوط حکومت کے تقریباً 13 اراکین اسمبلی اپنا استعفیٰ پیش کرچکے ہیں اس سے مخلوط حکومت پر کڑا وقت آن پڑا ہے اور قوی امکانا ت اسی بات کے دکھائی دے رہے ہیں کہ دونوں پارٹیوں کے سینئر قائدین کی جان توڑ کوشش ...

بھٹکل میں 110 کے وی اسٹیشن کے قیام سے ہی بجلی کا مسئلہ حل ہونے کی توقع؛ کیا ہیسکام کو عوامی تعاون ملے گا ؟

بھٹکل میں رمضان کے آخری دنوں میں بجلی کی کٹوتی سے جو پریشانیاں ہورہی تھی، سمجھا جارہا تھا کہ  عین عید کے  دن  بعض نوجوانوں کے  احتجاج کے بعد  اُس میں کمی واقع ہوگی اور مسئلہ حل ہوجائے گا، مگر  عید الفطر کے بعد بھی  بجلی کی کٹوتی یا انکھ مچولیوں کا سلسلہ ہنوز جاری ہے اور عوام ...

بھٹکل تعلقہ اسپتال میں ضروری سہولتیں تو موجود ہیں مگر خالی عہدوں پر نہیں ہورہا ہے تقرر

جدید قسم کا انٹینسیو کیئر یونٹ (آئی سی یو)، ایمرجنسی علاج کا شعبہ،مریضوں کے لئے عمدہ ’اسپیشل رومس‘ کی سہولت کے ساتھ بھٹکل کے سرکاری اسپتال کو ایک نیا روپ دیا گیا ہے۔لیکن یہاں اگر کوئی چیز نہیں بدلی ہے تو یہاں پر خالی پڑی ہوئی اسامیوں کی بھرتی کا مسئلہ ہے۔ 

آر ایس ایس کی طرح کوئی مسلم تنظیم کیوں نہیں؟ از: ڈاکٹر سید فاضل حسین پرویز

مسٹر نریندر مودی کی تاریخ ساز کامیابی پر بحث جاری ہے۔ کامیابی کا سب کو یقین تھا مگر اتنی بھاری اکثریت سے وہ دوبارہ برسر اقتدار آئیں گے اس کا شاید کسی کو اندازہ نہیں تھا۔ دنیا چڑھتے سورج کی پجاری ہے۔ کل ٹائم میگزین نے ٹائٹل اسٹوری مودی پر دی تھی جس کی سرخی تھی ”India’s Divider in Chief“۔

خود کا حلق سوکھ رہا ہے، مگر دوسروں کو پانی فراہم کرنے میں مصروف ہیں بھٹکل مسلم یوتھ فیڈریشن کے نوجوان؛ ایسے تمام نوجوانوں کو سلام !!

ایک طرف شدت کی گرمی اور دوسری طرف رمضان کا مبارک مہینہ  ۔ حلق سوکھ رہا ہے، دوپہر ہونے تک ہاتھ پیر ڈھیلے پڑجاتے ہیں،    لیکن ان   نوجوانوں کی طرف دیکھئے، جو صبح سے لے کر شام تک مسلسل شہر کے مختلف علاقوں میں پہنچ کر گھر گھر پانی سپلائی کرنے میں لگے ہوئے ہیں۔ انہیں  نہ تھکن کا ...

مودی جی کا پرگیہ سنگھ ٹھاکور سے لاتعلقی ظاہر کرنا ایسا ہی ہے جیسے پاکستان کا دہشت گردی سے ۔۔۔۔ دکن ہیرالڈ میں شائع    ایک فکر انگیز مضمون

 وزیر اعظم نریندرا مودی کا کہنا ہے کہ وہ مہاتما گاندھی کے قاتل ناتھو رام گوڈسے کو دیش بھکت قرار دیتے ہوئے ”باپو کی بے عزتی“ کرنے کے معاملے پر پرگیہ ٹھاکورکو”کبھی بھی معاف نہیں کرسکیں گے۔“امیت شاہ کہتے ہیں کہ پرگیہ ٹھاکور نے جو کچھ کہا ہے(اور یونین اسکلس منسٹر اننت کمار ہیگڈے ...