گاندھی جی پر ہتک آمیز بیان کے بعد اننت کمار ہیگڈے نے معافی مانگنے سے کیا انکار؛ ہیگڈے کے خلاف دیش سے غداری کا مقدمہ درج کرنے کانگریس کا مطالبہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 4th February 2020, 10:12 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | ملکی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

بھٹکل 4/فروری (ایس او نیوز) دوتین دن قبل ملک کی جدوجہد آزادی میں گاندھی جی کے کردار پر سوال اٹھاتے ہوئے بی جے پی کے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے نے بنگلور میں منعقدہ ایک عوامی اجلاس میں  بابائے قوم کا خطاب رکھنے والی گاندھی کی شخصیت کو اپنے طنز اور مذاق کا نشانہ بنایا تھا جس کے بعد بی جے پی ہائی کمان نے انہیں  معافی مانگنے کا حکم دیا تھا، مگر  تازہ خبر یہ ہے کہ  اننت کمار ہیگڈے نے معافی مانگنے سے انکار کردیا ہے  اور کہا ہے کہ انہوں نے اپنے خطاب میں گاندھی کا نام ہی نہیں لیا ہے، ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ انہوں نے نہ گاندھی کے خلاف کوئی تبصرہ کیا اور نہ ہی کسی کا نام لے کر کچھ کہا ہے، انہوں نے  اپنی ہانڈی میڈیا پر پھوڑتےہوئے کہا ہے کہ یہ سب کچھ میڈیا کا کیا دھرا ہے جنہوں نے ان کے بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کیا ہے۔

خیال رہے کہ   بی جے پی نے اپنے رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کو وجہ بتاؤ نوٹس جاری کرتے ہوئے پوچھا تھا  کہ ان کے خلاف  تادیبی کارروائی کیوں نہیں کی جائے۔اس کے علاوہ وزیراعظم نریندر مودی کی طرف سے بھی سخت ناراضگی ظاہر کی گئی تھی جس کے بعد اننت کمار ہیگڈے کو بی جے پی کی پارلیمانی کمیٹی کی میٹنگ سے باہر رکھے جانے کی بھی با ت سنائی دے رہی ہے۔

 لیکن ان سب کے درمیان خبر یہ بھی ملی ہے کہ  بی جے پی کے ریاستی صدر اور رکن پارلیمان نلین کمار کٹیل نے بنگلورو سے دہلی کے لئے روانہ ہونے سے قبل اننت کمار ہیگڈے سے ملاقات کی تھی۔ انہوں نے بتایا کہ”گاندھی کے سلسلے میں ہتک آمیزبیان پر گفتگو ہوئی۔  جس میں اننت کمار ہیگڈے نے اُنہیں بتایا کہ انہوں نے پارٹی کے قومی صدر جے پی ندّا کو اپنا وضاحتی جواب بھیج دیا ہے“

باخبر ذرائع سے پتہ چلاہے کہ ریاستی صدر نلین کمار کٹیل کی تمام کوشش ناکا م ہوگئی ہے اور اننت کمار ہیگڈے نے کسی بھی حالت میں اپنا متنازع بیان واپس لینے یا معافی مانگنے  سے انکار کردیا ہے۔اور صاف طور پر کہہ دیا ہے کہ میں نے نوٹس کا جواب دے دیا ہے۔ اب پارٹی جو فیصلہ کرنا چاہتی ہے کرنے دو۔ میں اپنا موقف بدلنے والا نہیں ہوں۔ بتایا جارہا ہے کہ اب پارٹی کے قومی صدر اس سلسلے میں ضابطے کے مطابق ضروری کارروائی کریں گے۔

اننت کمار ہیگڈے کے متنازعہ بیان پر سیاسی گلیاروں میں اور خاص کر کانگریس پارٹی کی طرف سے شدید ردعمل جاری ہے۔   کانگریس پارٹی نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ اننت کمار ہیگڈے کے خلاف ملک سے غداری کا معاملہ درج کیاجائے۔اس کے علاوہ یہ مانگ بھی کی جارہی ہے کہ اپنے سابق وزیر کے اس رکیک بیان پر وزیر اعظم نریندرا مودی خود قوم سے معافی مانگیں۔ کانگریسی لیڈر آنند شرما نے کہا ہے کہ پارلیمانی سیشن میں پہنچ کر خود اننت کمار ہیگڈے کو اپنے بیان کے سلسلے میں وضاحت کرنی چاہیے اور وزیراعظم مودی کو یہ بتانا ہوگا کہ ان کی  عقیدت مہاتما گاندھی کے ساتھ ہے یا پھر گوڈسے کے ساتھ ہے۔

 کانگریسی لیڈر اور سپریم کورٹ کے وکیل برجیش کالپّا نے لوک سبھا اسپیکراوم برلا کے پاس رکن پارلیمان اننت کمار ہیگڈے کے خلاف تحریری شکایت درج کی ہے۔اس میں انہوں نے کہا ہے کہ ”رکن پارلیمان رہتے ہوئے اننت کمار ہیگڈے جس طرح کے بیانات عوام کے درمیان دے رہے ہیں، اس پر غور کرنے سے ایسا لگتا ہے کہ ان کے ساتھ کوئی بہت ہی گہری دماغی خرابی پید اہوگئی ہے۔ اور دستور ہند کی دفعہ 102کے تحت ایسے شخص کو رکن پارلیمان بنے رہنے کاحق نہیں ہوتا جس کا دماغی توازن بگڑ گیا ہو۔اس وجہ سے شمالی کینرا کی پارلیمانی سیٹ خالی ہوجانے کا اعلان کردیاجائے۔“

 راجستھان کے وزیر اعلیٰ اشوک گہلوت نے اس تنازع پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ”بی جے پی کو جنگ آزادی کے سلسلے میں کوئی رشک اور فخر نہیں ہے۔ وہ تو صرف دکھانے کے لئے گاندھی کے نام کا استعمال کرتے ہیں۔

خیال رہے کہ  اننت کمار ہیگڈے کا نام وقفہ وقفہ سے اپنے جارحانہ اور فرقہ وارانہ بیانات کی وجہ سے سرخیوں میں آتارہتا ہے۔ کبھی اپنے ٹویٹر ہینڈل سے گاندھی کے قاتل گوڈسے کی ستائش کرنے کے بعد پھر وہ کہتے ہیں کہ ٹویٹر اکاؤنٹ ہیاک ہوگیا تھا۔ کبھی ملک کا دستور بدلنے کی بات کہنے کے بعد پارلیمنٹ میں معافی مانگنی پڑتی ہے۔ کبھی ہندولڑکیوں کو چھونے والوں کے ہاتھ کاٹ دینے پر ہندو نوجوانوں کو اکساتے ہیں تو کبھی دہشت گردی ختم کرنے کے لئے دنیا سے اسلام کو ہی مٹانے کی آواز لگاتے ہیں۔کبھی اپنی ہی مرکزی حکومت کے خلاف بیان دیتے ہوئے کہتے ہیں کہ مرکزی فنڈ کے 40کروڑ روپے واپس دہلی لے جانے کے لئے بی جے پی نے جان بوجھ کرمہاراشٹرا میں 80 گھنٹوں کے لئے اپنی حکومت قائم کی تھی۔کبھی وہ عقلیت پسند دانشوروں کے خلاف زبانی طور پررکیک حملے کرتے ہیں توکبھی اسپتال میں گھس کر غنڈوں کی طرح ڈاکٹروں پر حملہ کرتے ہوئے سی سی کیمرے میں قید ہوجاتے ہیں۔اس طرح اننت کمار ہیگڈے کانام اختلافات اور تنازعات کو جنم دینے والی ایک جارحانہ شخصیت کی علامت بن کر رہ گیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل:طوفانی بارش کے درمیان بیچ سمندر میں بوٹ کا انجن بند؛ بری طرح پھنسے ماہی گیروں کو بچالیا گیا

بھٹکل میں آج صبح سے رات دیر گئے تک طوفانی ہواوں کے ساتھ بارش کا سلسلہ جاری ہے، ایسے میں آج اتوار صبح ماہی گیروں کی ایک بوٹ جو بحر عرب میں  بری طرح پھنس گئی تھی اور اُس پر سوار چار ماہی گیروں کے جان کے لالے پڑ گئے تھے، شام تک چاروں کو بچالئے جانے کی اطلاع ملی ہے۔

بھٹکل میں دو مختلف سڑک حادثات؛ بائک اور کار کی ٹکر میں دو زخمی، آٹو رکشہ اور لاری کی ٹکر میں ایک زخمی

بھٹکل میں آج اتوار کو ہوئےدو مختلف سڑک حادثات میں تین لوگ زخمی ہوگئے جن میں  ایک سرکاری اسپتال سے ابتدائی طبی امداد کے بعد اُڈپی شفٹ کیا گیا ہے جبگہ   دیگر دو کو   قریبی اسپتال سے  مرہم پٹی کرائی گئی ہے۔

بھٹکل : رویل اسپورٹس ہال میں میونسپالٹی حکام کی عوامی میٹنگ؛ اسسٹنٹ کمشنر کے سامنے پیش کئے گئے علاقہ کے مسائل

عوام کے مسائل کو جاننے اور اُن کو حل کرنے کی ہرممکن کوشش کرنے  بھٹکل کے مختلف علاقوں میں  پہنچ کر میونسپل حکام ہرروز عوامی میٹنگ کا انعقادکررہے ہیں  اسی طرح کی ایک میٹنگ سنیچر کو  علوہ اسٹریٹ میں  واقع رویل اسپورٹس سینٹر کے ہال میں  منعقد کی گئی جس میں اسسٹنٹ کمشنر بھرت نے بھی ...

کاروار: سابق وزیر آنند اسنوٹیکر کے سامان میں پستول۔ بنگلورو ایئر پورٹ پر تفتیش کے بعد جانے کی دی گئی اجازت

بنگلورو سے بذریعہ ہوائی جہاز گوا ہوتے ہوئے کاروار کے لئے نکلے سابق وزیر اور جنتا دل لیڈر آنند اسنوٹیکر کو سنٹرل انڈسٹریل سیکیوریٹی فورس  نے سنیچر کو  بنگلورو ایئر پورٹ پراپنی تحویل میں لیا گیا تھا  کیونکہ ان کے سامان میں پستول  موجود تھا جسے ساتھ لے جانے کی اجازت انہوں نے ...

کاروار: سابق وزیر آنند اسنوٹیکر کے سامان میں پستول۔ بنگلورو ایئر پورٹ پر تفتیش کے بعد جانے کی دی گئی اجازت

بنگلورو سے بذریعہ ہوائی جہاز گوا ہوتے ہوئے کاروار کے لئے نکلے سابق وزیر اور جنتا دل لیڈر آنند اسنوٹیکر کو سنٹرل انڈسٹریل سیکیوریٹی فورس  نے سنیچر کو  بنگلورو ایئر پورٹ پراپنی تحویل میں لیا گیا تھا  کیونکہ ان کے سامان میں پستول  موجود تھا جسے ساتھ لے جانے کی اجازت انہوں نے ...

جے ڈی ایس لیڈر رمیش بابو کانگریس میں شامل

جنتادل(سکیولر) کے سینئر لیڈر اور سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوے گوڑا کے اقرباء میں شامل سابق رکن کونسل رمیش بابو نے ہفتہ کے روز اپنی پارٹی چھوڑ کر کانگریس میں باضابطہ شمولیت اختیار کرلی۔

بہار: اسمبلی انتخاب میں نوجوان ووٹر ہی کریں گے امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ

اس بار اسمبلی انتخابات میں نوجوان ووٹروں  کی ایک بڑی تعداد اپنی  حق رائے دہی کا استعمال کرنے جارہی ہے۔ الیکشن کمیشن نے زیادہ سے زیادہ ووٹروں  کی تعداد میں 18 سال کی عمر کو عبور کرنے والے ووٹروں  کو اندراج کرنے کے لئے ایک مہم کا آغاز کیا ہے۔ انٹرنیٹ پر بھی نام شامل کیے جارہے ...

ممبئی پولیس نے عدالت کو بتایا- تبلیغی جماعت کے 20 غیر ملکی اراکین کے خلاف درج کیسز لئے جائیں گے واپس

ممبئی پولیس میں تبلیغی جماعت سے منسلک ایک معاملے میں ممبئی پولیس نے مقامی عدالت کو بتایا ہےکہ اندھیری میں 20 غیر ملکی شہریوں کے خلاف درج قتل اورقتل کی کوشش کا معاملہ واپس لیا جائے گا۔

اپوزیشن کی شدید مخالفت کے درمیان راجیہ سبھا میں زراعتی اصلاحات کا بل منظور

راجیہ سبھا میں آج اپوزیشن کے شدید ہنگامے کے درمیان زراعتی اصلاحات سے متعلق دو بل 'کسانوں کی پیداوار کے کاروبار اور تجارت (فروغ اور سہل کاری) بل 2020' اور 'کسان (تفویض اختیار اور تحفظ) کو قیمت کی یقین دہانی اور زراعتی خدمات کا معاہدہ بل، 2020 کو صوتی ووٹ کے ذریعہ منظور کیا گیا اوراس ...

شوپیان تصادم میں فوجی تحقیقات سے اجنبیت کے احساس میں نمایاں کمی ہوگی: الطاف بخاری

 جموں و کشمیر اپنی پارٹی کے صدر سید محمد الطاف بخاری نے کہا ہے کہ شوپیاں انکاونٹر کی تحقیقات میں فوج کا یہ اعتراف کرنا کہ ضابطہ اخلاق اور فوجی قوانین کی خلاف ورزی ہوئی ہے، اعتماد کے فقدان اور جموں وکشمیر کے لوگوں میں اجنبیت کے احساس میں نمایاں کمی لائے گا۔

ملک میں کورونا کیسز کی مجموعی تعداد 54 لاکھ سے تجاوز، اب تک 86 ہزار سے زیادہ ہلاک

 ملک میں خوفناک عالمی وبا کورونا وائرس کے بڑھتے قہر کے درمیان گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران وبا کے 92 ہزار سے زائد نئے کیسز کی آمد کے بعد متاثرین کی مجموعی تعداد 54 لاکھ سے تجاوز کر گئی جبکہ اسی عرصہ میں 94 ہزار سے زائد مریض شفایاب ہوئے ہیں۔

ساحلی علاقے میں کاروباری سرگرمیوں کا اہم مرکزبننے جارہا ہےانکولہ شہری ہوائی اڈہ، بندرگاہ اور انڈسٹریل ایسٹیٹ کے تعمیری کام سے بدل رہا ہے نقشہ

آج کل  شمالی کینرا کے شہر انکولہ میں بڑے اہم سرکاری منصوبہ جات پر کام شروع ہورہا ہے جس کی وجہ سے ایسا لگتا ہے کہ  مستقبل قریب میں یہاں کا نقشہ ہی بدل جائے گا اور پورے ساحلی علاقوں میں  انکولہ شہر کاروباری سرگرمیوں کا اہم مرکز بن جائے گا اورانکولہ  پورے ملک کی توجہ اپنی طرف ...

کاروار: سمندر میں غذاکی کمی سے  مچھلیوں کی افزائش اورماہی گیری کا کاروبار ہورہا ہے متاثر۔ ۔۔۔۔۔ایک تجزیاتی رپورٹ 

ساحلی علاقے میں مچھلیوں کی افزائش میں کمی سے اس کاروبار پر پڑنے اثرا ت کے بارے میں مختلف ماہرین نے اپنے اپنے اندازمیں تبصرہ اور تجزیہ کیا ہے۔کاروار ہریکنترا مینو گاریکے سہکاری سنگھا کے صدر کے سی تانڈیل کا کہنا ہے کہ ندیوں سے بہتے ہوئے  سمندر میں جاکر ملنے والا پانی بہت زیادہ ...

ملک تباہ، عوام مطمئن، آخر یہ ماجرا کیا ہے!۔۔۔۔ آز:ظفر آغا

ابھی پچھلے ہفتے لکھنؤ سے ہمارے عزیزداروں میں سے خبر آئی کہ گھر میں موت ہو گئی۔ پوچھا کیا ہوا۔ پتہ چلا کورونا وائرس کے شکار ہوئے۔ ایک ہفتے کے اندر انتقال ہو گیا۔ پوچھا باقی سب خیریت سے ہیں۔ معلوم ہوا ان کی بہن بھی آئی سی یو میں موت و زندگی کے درمیان ہیں۔

 کاروار:پی ایس آئی کے نام سے فیس بک پر نقلی اکاؤنٹ۔ آن لائن دھوکہ دہی کا نیا طریقہ ۔ تیزی سے چل رہا ہے فراڈ  کا کاروبار 

ڈیجیٹل بینکنگ اور بینک سے متعلقہ کام کاج انٹرنیٹ کے ذریعے انجام دینے کی سہولت اس لئے عوام کو فراہم کی گئی ہے تاکہ لوگ کم سے کم وقت میں بغیر کسی دقت کے اپنی بینکنگ کی ضرورریات پوری کرسکیں ۔ نقدی ساتھ لے کر گھومنے اور پاکٹ ماری کے خطرے جیسی مصیبتوں سے بچ سکیں۔لیکن اس سسٹم نے جتنی ...

بھٹکل کے بلدیاتی اداروں میں چل رہا ہے سرکاری افسران کا ہی دربار۔ منتخب عوامی نمائندے بس نام کے رہ گئے

ریاستی حکومت کی بے توجہی اورغلط پالیسی کی وجہ سے مقامی  بلدیاتی اداروں میں عوامی منتخب نمائندے بس نام کے لئے رہ گئے ہیں اور خاموش تماشائی بنے رہنے پر مجبور ہوگئے ہیں ۔جبکہ ان اداروں میں سرکاری افسران کا ہی دربار چل رہا ہے۔بھٹکل میونسپالٹی، جالی پٹن پنچایت  وغیرہ کا بھی یہی ...