بنگلورو کےپروگرام میں ’پاکستان زندہ باد‘ کا نعرہ ؛ امولیا کو سی اے اے مخالف احتجاجیوں نے کردیا باہر ؛ کیا تھا امولیا کا منشاء ؟

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 20th February 2020, 9:06 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | ملکی خبریں |

بنگلورو:20؍فروری(ایس اؤ نیوز) شہریت قانون کی مخالفت میں  بنگلور کے فریڈم پارک میں منعقدہ احتجاجی جلسہ میں اچانک  امولیا نامی خاتون مقرر نے پاکستان زندہ باد کے نعرے لگانے شروع کردیے  جس پر منتظمین اور اسٹیج پر تشریف فرما حیدر آباد کے رکن پارلیمان اسد الدین اویسی  حیرت میں پڑ گئے ۔  فوری طور پر اُس کا مائک چھین کر اُسے خطاب کرنے سے روک دیا گیا۔ بعد میں پولس نے   امولیا کو اپنی تحویل میں لے لیا۔ واردات جمعرات کی شام کو پیش آئی۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  احتجاجی جلسہ شروع ہوتے ہی  مائک کو سنبھالتے ہوئے  امولیا نے تین  مرتبہ پاکستان زندہ باد کے نعرے لگائے، مگر منتظمین کی جانب سے فوری طور پر مداخلت کرتے ہوئے   مائک اُس کے ہاتھ سے چھین لیا گیا، اس دوران اسدالدین اویسی بھی کرسی چھوڑ کر امولیا کےقریب مائک  لینے کے لئے آگئے تھے۔ بعد میں  امولیا کو پولس اپنے ساتھ لے گئی۔

ذرائع کی مانیں تو  مائک چھیننے کے دوران امولیا نے کہا کہ "مجھے اپنی بات پوری کرنے کا موقع دیں،  میں فرق بتانا چاہتی ہوں کہ پاکستان زندہ باد اور ہندوستان زندہ باد کے نعرے پر ۔۔۔۔"  مگراس دوران  اُسے  اسٹیج سے نیچے اُتارا گیا۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے اسدالدین اویسی نے واقعے کی سخت مذمت کی اور کہا کہ  اس لڑکی کو یہاں آکر پاکستان زندہ باد کے نعرے نہیں لگانے چاہئے تھے، اویسی نے کہا کہ میرا یا میری پارٹی کا اس خاتون سے کوئی تعلق نہیں ہے، ہم اس کی مذمت کرتے ہیں، انہوں نے آرگنائزر سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ آپ کو ایسے  لوگوں کو نہیں بلانا چاہئے تھا، اگر مجھے معلوم ہوتا کہ یہاں  ایسا کچھ ہونے والا ہے تو میں ہرگز یہاں نہیں آتا۔ ہم انڈیا کے لئے ہیں اور ہمارا اپنے دشمن پاکستان کی حمایت کرنے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ ہماری پوری مہم  انڈیا کے تحفظ کے لئے ہے۔  منتظمین نے بھی اچانک پاکستان زندہ باد کے نعرے لگانے پر دنگ رہ گئے اور اویسی کی باتوں  کی حمایت کی۔

جےڈی ایس کارپوریٹر عمران پاشا نے شک ظاہر کیا کہ  ہمارے پروگرام میں انتشار پیدا  کرنے کے لئے مخالف گروپ نے اسے یہاں بھیجا ہوگا۔

 اسٹوڈنٹس ونگ لیڈر امولیا نے اس سے قبل مختلف جگہوں پر منعقدہ  احتجاجی جلسوں میں شہریت قانون کی سختی کے ساتھ مخالفت کرتے ہوئے جوشیلا  خطاب کیا تھا اور  سی اے اے، این آر سی اور این پی آر کے مضر اثرات پر عوام الناس میں بیداری پیدا کرنے کی کوشش میں سرگرم نظر آرہی تھی ۔ امولیا  بالخصوص نوجوانوں کے اندر آزادی کے نعرے بلند کرکے  جوش پیدا کرنے کا کام کررہی تھی، مگر آج بنگلور فریڈم پارک میں اچانک پاکستان زندہ باد کے نعرے انہوں نے کیوں لگائے ، کیا وہ ان نعروں کے بعد کچھ کہنا چاہتی تھی یا کیا اس کا منشاء تھا، یہ ابھی تک معلوم نہیں ہوسکا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں پایا گیا کورونا پوزیٹیو کا ایک اور مریض؛چھوٹے بھائی کے بعدآج بڑے بھائی کی بھی رپورٹ آئی پوزیٹو؛ کئی لوگوں کو کیا گیا انجمن کورنٹائن سینٹر منتقل

چھوٹے بھائی کی رپورٹ کورونا پوزیٹیو موصول ہونے کے بعد آج اسی کے بڑے  بھائی کی رپورٹ بھی پوزیٹیو موصول ہوئی جس کے ساتھ ہی بھٹکل یا اُترکنڑا میں کورونا سے متاثرہ لوگوں کی تعداد بڑھ کر آٹھ ہوگئی ہے۔

کورونا معاملات کو لے کر بھٹکل لاک ڈاون کی صورتحال کا جائزہ لینے کاروار ایس پی کا بھٹکل دورہ؛ تعلقہ اسپتال پہنچ کر بھی لیا جائزہ؛ کل کریں گے مشتبہ مریضوں کو انجمن ہوسٹل میں منتقل

بھٹکل میں کورونا متاثرین کی سنگین صورتحال کے بعد لاک ڈاون کا جائزہ لینے اور حفاظتی انتطامات  کے تعلق سے جانکاری حاصل کرنے ضلع اُترکنڑا کے ایس پی شیوپرکاش دیوراج نے آج پیر کو بھٹکل کا دورہ کیا ، پولس کو ضروری ہدایات دینے اور اخباری نمائندوں سے بھی بات چیت کرنے اور یہاں کے ...

بھٹکل: کوروناوائرس کی روک تھام اور لاک ڈاون میں مزید سختی برتنے اب اُڑائے جائیں گے ڈرون کیمرے؛ گلی کوچوں میں آوارہ گردی کرنے والے ہوشیار

صرف کرناٹک ہی نہیں بلکہ ملک بھر میں بھٹکل کو لے کر تشویش پائی جارہی ہے کیونکہ  اتنے چھوٹے سے علاقہ میں  کورونا وائرس سے متاثرہ لوگوں کی تعداد  بڑھتی جارہی ہے۔چونکہ یہاں کے اکثر لوگ بیرون ممالک میں رہتے ہیں، اس لئے یہ وائرس دوسرے ملکوں سے یہاں آرہی ہے۔  ہمیں دہلی سے فون بھی ...

بھٹکل لاک ڈاؤن: کسی کے بیمارہونے پر ہیلپ لائن کو فون کریں، ڈاکٹر خود گھر پر پہنچ جائیں گے۔ضلع انتظامیہ کی یقین دہانی

کورونا وائرس وباء کی وجہ سے جو لاک ڈاؤن کیا گیا ہے اس میں بہت سارے مسائل پیش آ رہے ہیں، جس میں ایک اہم مسئلہ لوگوں کے بیمار ہونے کی صورت میں اسپتال یا ڈاکٹر کے پاس مریض کو لے جانے کا ہے۔

کرناٹک میں کورونا کے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 88 ہوگئی؛ متاثرین کی تعداد میں روزبروز اضافہ سے معاملہ سنگین

کرناٹک میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد میں اضافہ مسلسل جاری ہے۔ ہفتہ کے روز جہاں ایک ہی دن میں 18نئے معاملات سامنے آئے اتوار کے روز مزید 7نئے معاملوں کے انکشاف نے اس صورتحال کی سنگینی کی طرف واضح اشارہ کیا ہے۔ 

بھٹکل: کوروناوائرس کی روک تھام اور لاک ڈاون میں مزید سختی برتنے اب اُڑائے جائیں گے ڈرون کیمرے؛ گلی کوچوں میں آوارہ گردی کرنے والے ہوشیار

صرف کرناٹک ہی نہیں بلکہ ملک بھر میں بھٹکل کو لے کر تشویش پائی جارہی ہے کیونکہ  اتنے چھوٹے سے علاقہ میں  کورونا وائرس سے متاثرہ لوگوں کی تعداد  بڑھتی جارہی ہے۔چونکہ یہاں کے اکثر لوگ بیرون ممالک میں رہتے ہیں، اس لئے یہ وائرس دوسرے ملکوں سے یہاں آرہی ہے۔  ہمیں دہلی سے فون بھی ...

کرناٹک میں کورونا کے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 88 ہوگئی؛ متاثرین کی تعداد میں روزبروز اضافہ سے معاملہ سنگین

کرناٹک میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد میں اضافہ مسلسل جاری ہے۔ ہفتہ کے روز جہاں ایک ہی دن میں 18نئے معاملات سامنے آئے اتوار کے روز مزید 7نئے معاملوں کے انکشاف نے اس صورتحال کی سنگینی کی طرف واضح اشارہ کیا ہے۔ 

کورونا وائرس: کرناٹک میں لاک ڈاؤن کا اثر۔ پھل اور ترکاریاں مفت تقسیم ہورہی ہیں نا ہی فروخت؟ عوام پریشانی میں مبتلا 

ہر گزرتے دن کے ساتھ پورے ملک اور خصوصاً کرناٹک میں کورونا وائرس سے متاثر ہو کر فوت ہونے اور بیمار ہونے والوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ ہوتا جارہا ہے اور عوام میں دہشت اور خوف بھی بڑھتا جارہا ہے۔ 

کورونا وائرس کے مشتبہ افراد کی زیادہ سے زیادہ تشخیص ضروری: سیتا رام یچوری

 مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم) کے جنرل سکریٹری سیتا رام یچوری نے کورونا وائرس (کووڈ -19) سے لڑنے کے لئے حکومت کے سامنے سات سوال اٹھاتے ہوئے کورونا وائرس کے مشتبہ مریضوں کی زیادہ سے زیادہ جانچ کرانے پر زور دیا ہے تاکہ ہم بروقت اس کا حل نکال سکیں۔