ہندوستان دورہ سے پہلے ہی ڈونالڈ ٹرمپ نے مودی حکومت کو دیا جھٹکا

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 19th February 2020, 11:46 PM | ملکی خبریں | عالمی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی 19/فروری (ایس او نیوز/ایجنسی) امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ 24 فروری کو بھارت   کے دو روزہ دورہ پر آرہے ہیں، ان کی آمد پر ایسی امیدیں لگائی جا رہی تھیں کہ ٹرمپ اس دورہ کے دوران ہندوستان کے ساتھ کچھ بڑے تجارتی معاہدے کریں گے، لیکن امریکی میڈیا سے گفتگو  کرتے ہوئے انھوں نے ایسی تمام  امیدوں پر پانی پھیر دیا ہے۔ مودی حکومت کو جھٹکا دیتے ہوئے امریکی صدر نے واضح لفظوں میں کہہ دیا ہے کہ ہندوستان سے امریکہ فی الحال کوئی بڑا تجارتی معاہدہ نہیں کرے گا۔

واشنگٹن میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ٹرمپ نے کہا کہ تجارتی معاہد کو لے کر  ابھی  کچھ بھی پختہ طور پر نہیں کہا جا سکتا کیونکہ امریکی انتخاب سے قبل کوئی بڑا تجارتی معاہدہ ہندوستان سے کرنا ممکن نہیں۔ لیکن بعد میں آگے چل کر کوئی چھوٹا تجارتی معاہدہ ہو سکتا ہے۔ امریکی صدر نے کہا کہ ’’ہم اس بار ہندوستان کے ساتھ ٹریڈ ڈیل کر سکتے ہیں، لیکن کوئی معاہدہ بعد میں ہی ہو پائے گا۔‘‘

کیلیفورنیا روانگی سے پہلے ٹرمپ نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ہندوستانی دورہ کے تعلق سے کئی باتیں کہیں۔ انھوں نے کہا کہ ’’ہندوستان نے ہمارے ساتھ بہت اچھا سلوک نہیں کیا، لیکن میں وزیر اعظم نریندر مودی کو بہت پسند کرتا ہوں۔‘‘

اس سے قبل ٹرمپ نے واشنگٹن میں واقع اپنے اوول آفس میں میڈیا سے گفتگو  کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ اپنے ہندوستان دورہ کی تیاری کر رہے ہیں جہاں لاکھوں لوگ ان کا استقبال کرنے کے لیے تیار ہیں۔ وہائٹ ہاؤس سے اس سے پہلے 10 فروری کو جانکاری دی گئی تھی کہ صدر ٹرمپ 24  اور 25 فروری کو ہندوستان کے دورہ پر آئیں گے۔ اپنے دو روزہ دورے کے دوران ٹرمپ احمد آباد اور دہلی میں رہیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

کشمیر: فور جی موبائل انٹرنیٹ سروس پر جاری پابندی طلباء کے مستقبل پر لٹکتی تلوار

عالمی سطح پر پھیلنے والے کورونا وائرس کے خطرات و خدشات کے باعث گھروں میں ہی محصور اور قریب آٹھ ماہ سے فور جی انٹرنیٹ خدمات سے محروم وادی کے طلبا کو اپنا تعلیمی مستقبل تاریک ہی نہیں بلکہ خطرے میں نظر آرہا ہے۔

اٹلی: کورونا پازیٹو مریضوں کا علاج کر رہے 51 ڈاکٹروں کی موت

کورونا وائرس نے اٹلی میں اپنا قہر سب سے زیادہ برپا کر رکھا ہے۔ مہلوکین کی تعداد اٹلی میں چین سے بہت زیادہ ہو چکی ہے اور متاثرین کی تعداد بھی یہاں اتنی زیادہ ہے کہ ڈاکٹروں کو علاج کرنے میں کافی مشقتوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

امریکا: کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ سے متجاوز

امریکا میں کرونا وائرس کے سبب اموات اور نئے کیس سامنے آنے کا سلسلہ جاری ہے۔ اس سلسلے میں مزید 354 افراد کی اموات واقع ہوئی ہیں اور 18 ہزار نئے کیسوں کا اندراج ہوا ہے۔ یہ ایک روز کے اندر اموات اور متاثرین کی ریکارڈ تعداد ہے۔

امریکی بحری بیڑے پر موجود 23 افراد کی کرونا کا شکار ہونے کی تصدیق

بحر الکاہل میں موجود امریکی طیارہ بردار بحری بیڑے 'یو ایس ایس تھیوڈور روزویلٹ' پر موجود کم سے کم 23 افراد کے کرونا کا شکار ہونے کی تصدیق کی گئی ہے۔ کرونا میں مبتلا ہونے والے تمام مریضوں کو ایک بندرگاہ پر الگ تھلگ کیا جا رہا ہے۔

کشمیر میں کورونا وائرس کی وباء سے دوسری موت، 62 سالہ شخص فوت

وادی کشمیر میں شمالی ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک 62 سالہ شخص کی کورونا وائرس کے باعث موت واقع ہوئی ہے جس کے بعد وادی میں اس عالمی وباء کی وجہ سے جاں بحق ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 2 ہوگئی ہے۔

’ہزاروں مہاجر مزدوروں کا پیدل سفر کرنا ’کورونا‘ سے بھی بڑا سانحہ‘: اجے ماکن

کانگریس کے سینئر رہنما اجے ماکن نے کہا کہ ہزاروں کی تعداد میں پریشان حال غریب، مزدور، خواتین اور بچوں کا لاک ڈاؤں کے دوران شہروں سے اپنے گھروں کو لوٹنے کے لئے سینکڑوں کلو میٹر کا سفر پیدل طے کرنا آج کے دور کا ایک عظیم انسانی سانحہ ہے۔

سعودی عرب میں کرونا وائرس سے چوتھی موت کی تصدیق، مزید 99 افراد کے ٹیسٹ مثبت

سعودی عرب کی وزارتِ صحت نے ہفتے کے روز کرونا وائرس سے چوتھی ہلاکت کی تصدیق کی ہے اور بتایا ہے کہ گذشتہ 24 گھنٹے کے دوران میں مزید 99 افراد کے اس مہلک وائرس کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں اور اس کے مریضوں کی تعداد 1203 ہوگئی ہے۔