ملک کے بڑے تاجر بھی کھول سکیں گے اپنا بینک،آر بی آئی کمیٹی کی تجویز

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 21st November 2020, 8:38 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،21 /نومبر(آئی این ایس انڈیا)اگر سب کچھ ٹھیک رہا تو آنے والے وقت میں ملک کے بڑے تاجر بھی نجی بینک کے پروموٹر بن سکتے ہیں۔ در اصل ریزرو بینک کی ایک کمیٹی نے کہا ہے کہ بڑی کمپنیوں یا صنعتی گھرانوں کو بینکوں کا پروموٹر بننے کی اجازت دی جاسکتی ہے۔ ریزرو بینک آف انڈیا (آر بی آئی) کمیٹی نے یہ بھی کہا ہے کہ نجی بینکوں میں ترقی دینے والوں کے حصص کو موجودہ 15 فیصد سے بڑھا کر 26 فیصد کیا جاسکتا ہے۔

واضح رہے کہ یہ کمیٹی ریزرو بینک نے تشکیل دی تھی۔گروپ کو جن موضوعات پر غور کرنے کے لئے دیا گیا تھا ان میں بینک لائسنس کی درخواست کے لئے انفرادی طور پر یا یونٹوں کے لئے اہلیت کے معیارات شامل تھے۔ اس کے علاوہ بینکوں میں طویل مدتی شیئر ہولڈنگ کے قواعد پر بھی پروموٹرز اور دیگر حصص یافتگان کا جائزہ لیا گیا۔ دریں اثنا کمیٹی نے سفارش کی ہے کہ بڑی کمپنیوں / صنعتی گھرانوں کو بینکوں کا پروموٹر بنایا جائے۔ اگر کمیٹی کی سفارش کو آر بی آئی نے منظور کرلیا تو پھر ملک کے بڑے تاجر بھی اپنا بینک کھول سکیں گے۔ اس کے ساتھ ہی کمیٹی نے کہا کہ نان بینکاری مالیاتی کمپنیوں (این بی ایف سی) کو 50000 کروڑ روپے اور اس سے زیادہ کے اثاثوں کے ساتھ بینکوں میں تبدیل کرنے پر غور کیا جاسکتا ہے۔ اس میں وہ یونٹ بھی شامل ہیں جن کے کارپوریٹ ہاؤس ہیں۔ لیکن اس کے 10 سال کے لئے آپریشن کی ایک لازمی شرط ہونی چاہئے۔ کمیٹی نے یہ بھی تجویز کی کہ آفاقی بینکاری کے لئے نئے بینک لائسنس کے لئے کم سے کم ابتدائی سرمایہ کو 500 کروڑ سے بڑھا کر ایک ہزار کروڑ روپے کیا جائے۔ اس کے ساتھ ہی چھوٹے فنانس بینک کے لئے 200 کروڑ روپے سے بڑھا کر 300 کروڑ روپے کیا جانا چاہئے۔

ایک نظر اس پر بھی

لو جہاد: یوگی حکومت کے ذریعہ منظور آرڈیننس کو سی پی آئی-ایم ایل نے آئین پر حملہ ٹھہرایا

 کمیونسٹی پارٹی آف انڈیا (ایم ایل) کی اترپردیش اکائی نے یوگی کابینہ کے ذریعہ مبینہ لوجہاد پر منظور کیے گئے آرڈیننس کو ملک کے آئین پر حملہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ ملکی آئین میں حاصل ایک شہری کو انتخاب، مذہب اور شہری آزادی کے حقوق پر کھلا حملہ ہے۔

شاہین باغ کی دادی ’ٹائم میگزین‘ کے بعد ’بی بی سی‘ کی 100 بااثر خواتین کی فہرست میں بھی شامل

ٹائم میگزین کی 2020 میں 100 سب سے بااثر شخصیات کی فہرست میں جگہ بنانے کے بعد اب شاہین باغ کی بلقیس دادی نے ایک اور کامیابی حاصل کرتے ہوئے ’بی بی سی- 100 ویمن آف دی ایئر‘ میں بھی مقام حاصل کیا ہے۔