پانچ ماہ کی بچی کے ساتھ مبینہ زیادتی، رشتہ دار پر لگا الزام، تفتیش میں پولیس مصروف 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th June 2019, 12:07 PM | ملکی خبریں |

 جالون13/جون (ایس او نیوز/ آئی این ایس انڈیا) ضلع میں پانچ ماہ کی ایک معصوم بچی کے ساتھ زیادتی کئے جانے کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ الزام ہے کہ ایک نوجوان نے بچی کوٹافی کے بہانے گھر سے باہر لے گیا اور پھر اس کے ساتھ مبینہ طور پر زیادتی کے واقعہ کو انجام دے دیا۔ واپس لوٹنے کے بعد شک ہونے پر اہل خانہ نے اسے پکڑ کر جم کر پیٹا اور پھر پولیس کے حوالے کر دیا۔ پولیس نے ملزم کو حراست میں لے کر پوچھ گچھ شروع کر دیا ہے۔ذرائع کے مطابق اس واقعہ کو انجام دینے کے بعد نوجوان معصوم کو لے کر گھر پہنچا اور اس کے بستر پر لٹا دیا لیکن دیہاتیوں نے معصوم کو خون میں لت پت دیکھا تو وجہ جاننا چاہا۔ لیکن نوجوان بھاگنے لگا، شک ہونے پر گاؤں کے باشندگان نے اسے پکڑ لیا اور اس جم کر پٹائی کی۔واقعہ کے تحت جالون کے ایڈمرل پرمل کمار نے بتایا کہ بچی کا میڈیکل ٹیسٹ کیا جا رہا ہے اور لواحقین کی شکایت پر  کارروائی کی جائے گی۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ماروتی سوزوکی نے نرملا سیتا رمن کو غلط قرار دیا، کہا کہ ”پہلے تحقیق کریں پھر بیان دیں“

آٹو موبائل سیکٹر میں مندی کیلئے وزیر مالیات نرملا سیتارمن کی جانب سے اولا اوبیر کو ذمہ دار ٹھہرائے جانے پر ہر طرف تنقید ہورہی ہے۔ اب ملک کی سب سے بڑی کارمینو فیکچرنگ کمپنی ماروتی سوزوکی نے بھی اس بیان کو غلط قرار دیتے ہوئے بیان جاری کیا ہے۔

بابری مسجد معاملہ: سپریم کورٹ کا فیصلہ عقیدے کی بنیاد پر ہو گا: سبرامنیم سوامی

بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے سینئر لیدڑ و راجیہ رکن سبرامنیم سوامی نے دعوی کیا ہے کہ اجودھیا قضیہ کا فیصلہ عقیدے کی بنیاد پر آئے گا اور متنازعہ زمین پر جلد ہی رام مندر کی تعمیر کا کام شروع ہوجائے گا۔

اعظم خان کی حمایت میں جیل جانا بھی منظور: اکھلیش یادو

سماج وادی پارٹی رکن پارلیمان محمد اعظم خان کے خلاف انتظامیہ کی جانب سے 81 سے زیادہ مقدمے درج کئے جانے کے بعد رکن پارلیمان اور ان کے اہل خانہ کے ساتھ اپنی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے پارٹی صدر اکھلیش یادو نے سنیچر کو کہا کہ پارٹی کے سینئر لیڈر کی حمایت میں وہ پارٹی لیڈروں و کارکنوں ...

ہندی کو پورے ملک کی زبان بنانے کےامت شاہ کے بیان پر اپوزیشن کا سخت ردعمل

  بھارتیہ جنتا پارٹی کے صدر اور وزیر داخلہ امت شاہ کے یوم ہندی کے موقع پر ہندی کو پورے ملک کی زبان بنانے کے بیان پر حزب اختلاف نے شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اسے ملک کی سالمیت کو متاثر کرنے والا بیان قرار دیا اور اسے واپس لینے کا مطالبہ کیا۔