مودی کے الیکشن کو چیلنج کرنے والی درخواست مسترد 

Source: S.O. News Service | Published on 6th December 2019, 11:23 PM | ملکی خبریں |

الہ آباد،6 دسمبر (ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا) وارانسی نشست سے بی جے پی کے ٹکٹ پرمنتخب ہونے والے وزیر اعظم نریندر مودی کو آج الہ آباد ہائی کورٹ سے ایک بڑی راحت ملی ہے۔ ہائیکورٹ نے وزیر اعظم مودی کے انتخاب کو منسوخ کرنے کے لیے دائر انتخابی درخواست کو مسترد کردیا ہے۔یہ انتخابی درخواست سابق فوجی تیج بہادر یادو کی جانب سے دائر کی گئی تھی۔ عدالت نے میرٹ پر سماعت کے بغیر ہی یہ انتخابی درخواست خارج کردی ہے۔ دراصل، اس معاملے میں، وزیر اعظم مودی کی جانب سے عدالت میں یہ دلیل پیش کی گئی تھی کہ تیج بہادر نہ تو انتخابات میں امیدوار تھے اور نہ ہی وہ وارانسی سیٹ سے ووٹر ہیں، لہٰذاان کو انتخابی عرضی داخل کرنے کاکوئی حق نہیں ہے۔عدالت نے وزیر اعظم مودی کی درخواست منظور کی اور اسی بنیاد پر تیج بہادر کی درخواست مسترد کردی۔اس معاملے میں، جسٹس منوج کمار گپتا کے سنگل بنچ نے سماعت مکمل ہونے کے بعد 23 اکتوبر کو اپنا فیصلہ محفوظ کرلیا۔عدالت نے اپنے 58 صفحات پر مشتمل فیصلے میں کہا کہ تیج بہادر کو درخواست داخل کرنے کا حق نہیں ہے، لہٰذا انہیں میرٹ کی سماعت کے بغیر ہی میرٹ کی بنیاد پرمسترد کردیا گیا ہے۔ تیج بہادر کی درخواست مسترد ہونے کی وجہ سے وزیراعظم اور وارانسی کے رکن پارلیمنٹ نریندر مودی کو ایک بڑی راحت ملی ہے۔ 2014 کے انتخابات میں کانگریس کے اس وقت کے امیدوار اجے رائے کے ذریعہ دائر درخواست کو بھی ہائی کورٹ نے گزشتہ مدت کے دوران مسترد کردیا تھا۔

ایک نظر اس پر بھی

باپ کی املاک پر بیٹی کا بیٹے کی طرح یکساں حق: سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے منگل کو ایک دور رس نتائج والے اپنے فیصلہ میں کہا ہے کہ ہندو غیر منقسم خاندان کی آبائی املاک میں بیٹی کو بیٹے کی طرح ہی حقوق حاصل ہوں گے، یہاں تک کہ اگر ہندو جانشینی (ترمیمی) ایکٹ 2005 کے نفاذ سے قبل ہی اس کے والد کی موت کیوں نہ ہوگئی ہو۔

راجستھان میں سیاسی صلح، بی جے پی کے منھ پر زور کا طمانچہ: کانگریس

کانگریس نے راجستھان یونٹ میں کئی دنوں سے جاری تنازعہ کے سلجھنے پر ریاست کے عوام کو مبارکباد دیتے ہوئے اسے پارٹی اعلیٰ کمان کے ’سب کو ساتھ لے کر چلنے‘ کی پالیسی کا نتیجہ بتایا کہ اور کہا کہ یہی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو کرارا جواب ہے۔

یو جی سی امتحانات معاملے میں سماعت جمعہ تک ملتوی

سپریم کورٹ نے پیر کے روز حکومت سے یہ جاننے کی کوشش کی کہ کیا اسٹیٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایکٹ یونیورسٹی گرانٹس کمیشن (یو جی سی) کی ہدایت کو متاثر کر سکتا ہے؟ ۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے معاملے کی سماعت 14 اگست تک ملتوی کردی ۔