گلبرگہ سٹی کارپوریشن انتخابات کے لئے تمام تیاریاں مکمل، میدان میں ہیں 300امیدوار

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 29th August 2021, 6:45 PM | ریاستی خبریں |

گلبرگہ،29؍اگست(ایس او نیوز)  ڈپٹی کمشنر گلبرگہ وی وی جیوتسنانے جمعہ کے دن ایک صحافتی کانفرنس  سے خطاب کرتے ہوئے کہا  کہ سٹی میونسل کارپوریشن گلبرگہ کے انتخابات کے لئے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ جمعرات کے دن انتخابی امیدواروں  کی قطعی فہرست جاری کردی گئی تھی جس کے مطابق  300امیدوار انتخابی میدان میں ہیں اور گلبرگہ شہر کے55وارڈس میں رائے دہی کی نگرانی کے لئے 2750 افسران  کو ڈیوٹی پر متعین کردیا گیا ہے۔

اس بار 83امیدوار آزاد امیدوار کی حیثیت سے انتخاب لڑ رہے ہیں۔ کانگریس نے تمام 55وارڈس میں اپنے امیدوار کھڑاکئے ہیں جبکہ بی جے پی 47وارڈس اور جنتا دل سیکولر نے 45وارڈس میں اپنے امیدوار کھڑا کئے ہیں۔عام آدمی پارٹی 26نشستوں کے لئے مقابلہ کررہی ہے۔ جبکہ آل انڈیامجلس اتحاد المسلمین نے 20وارڈس میں اپنے امیدوار کھڑا کئے ہیں۔ دیگر جماعتوں میں سوشل  ڈیموکریٹک پارٹی آف آنڈیا SDPI  نے 10وارڈس میں، بہو جن سماج پارٹی نے 6نشستوں پر، کرناٹک راشٹریہ سمیتی نے 4پراور کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا نے 2نشستوں پر اپنے امیدوار کھڑا کئے ہیں  ویلفیر پارٹی آف  انڈیا  نے صرف ایک وارڈمیں اور انڈین  یونین مسلم لیگ بھی صرف ایک وارڈ میں اپناامیدوار کھڑا کیا۔ وارڈ نمبر 17میں جملہ 15امیدوار انتخاب لڑ رہے ہیں جب کہ ان میں سے 10آزاد امیدوار ہیں۔اسی طرح وارڈنمبر 18سے 11امیدوار انتخاب لڑ رہے ہیں  جب کہ وارڈ نمبر 19سے 10اور وارڈ نمبر 40سے بھی 10امیدوار انتخاب لڑ رہے ہیں۔

مسرز جیوتسنا نے کہا کہ الیکشن کے لئے تمام تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ 3ستمبر کو رائے دہی صبح 7بجے سے شام 6بجے تک جاری رہے گی۔27سیکٹر آفیسرس مقرر کئے گئے ہیں اور محکمہ داخلہ سے درخواست کی گئی ہے کہ انھیں مجسٹیرئیل اختیارات دئے جائیں۔  ووٹوں کی گنتی نوتن ودیالیہ پری یونیورسٹی کالج کیمپس ، گلبرگہ میں 6ستمبر کو ہوگی۔ مرد ووٹروں کی جملہ تعداد 2,58,755اور خواتین رائے دہندوں کی جملہ تعداد 2,60,543ہے جب کہ  146زنخوں کے بشمول ووٹرس کی جملہ تعداد 5,19,464ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلورو: محض 3 سال میں جھکی پولیس رہائش گاہ کی عمارت، 32 خاندانوں کو محفوظ نکالاگیا

بنگلورو میں پولیس کی رہائش کیلئے بنائی گئی عمارت صرف تین سالوں میں خستہ حالت میں پہنچ گئی ہے۔ صورتحال ایسی ہو گئی ہے کہ تہہ خانے میں کئی دراڑیں آ گئی ہیں اور عمارت نے ایک طرف جھکاؤ بھی شروع کر دیا ہے۔

بی جے پی کی مدد کرنے جے ڈی ایس نے مسلم امیدواروں کو ٹکٹ دیا ہے: ضمیر احمد خان 

رکن اسمبلی بی زیڈ ضمیر احمد خان نے جے ڈی ایس  پر الزام لگایا ہے کہ 30 ؍ اکتوبر کو سندگی ہانگل اسمبلی حلقوں میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں بی جے پی کی مدد کرنے کے مقصد سے جے ڈی ایس نے مسلم امیدواروں کو ٹکٹ دیا ہے۔

کلبرگی کے چنچولی میں زلزلوں کے جھٹکوں سے خوفزدہ لوگ گاؤں چھوڑنے پر مجبور۔شمالی کرناٹک میں زلزلوں کی وجہ ’’ہائیڈرو سسمسیٹی‘‘، این جی آر آئی کے ابتدائی مطالعہ میں انکشاف

شمالی کنڑا کے بیدر اور کلبرگی ضلع میں سلسلہ وار زلزلے درحقیقت ’’ہائیڈ رو سسمسیٹی‘‘ ( زمین کے اندر پانی کے دباؤ کاعمل  ) کا معاملہ ہے جو مانسون کے بعد ہوتا ہے ۔ یہ انکشاف این جی آر آئی کے ابتدائی مطالعہ میں ہوا ہے ۔

آئی ٹی کے دھاوے سیاسی تھے، کانگریس کے ساتھ کام کرنے پر نشانہ بنایا گیا ؛ انتخابی مہم کی کمپنی کا دعویٰ

بنگلورو میں محکمہ آئی ٹی کی جانب سے جس ڈیزائن با کسڈ‘‘ نامی کمپنی پر حال ہی میں دھاوا کیا ، اس کے منیجنگ ڈائرکٹر نریش اروڑا نے مرکزی محکمہ کو نشانہ بناتے ہوئے  کہا کہ یہ دھاوے واضح طور پر سیاسی تھے اور آئی ٹی عہد یداروں کو دھاوؤں کے دوران کچھ بھی ہاتھ نہیں لگا۔