یدی یورپا کو پورا اعتماد، صرف ایک دن کی مہمان ہے کمارسوامی حکومت

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 21st July 2019, 10:57 PM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،21/جولائی (ایس او نیوز/ آئی این ایس انڈیا) کرناٹک بی جے پی چیف اور سابق وزیراعلیٰ بی ایس یدی یورپا نے پوری امید ظاہر کی ہے کہ ریاست کی کانگریس۔ جے ڈی ایس اتحاد کی حکومت کے دن پورے ہو چکے ہیں اور پیر کو ان کی حکومت کا آخری دن ہوگا۔انہوں نے کہاکہ کانگریس کے سینئر لیڈر سدارمیا، وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمارسوامی اور اسپیکر نے کہا ہے کہ وہ پیر کو اکثریت ثابت کریں گے، ایسے میں مجھے پورا بھروسہ ہے کہ چیزیں ایک نتیجے پر پہنچیں گی،مجھے یقین ہے کہ پیر کا دن کمارسوامی حکومت کا آخری دن ہوگا۔ یدی یورپا ریاست میں پیدا ہوئے سیاسی بحران کی طرف اشارہ کر رہے تھے۔حالیہ دنوں میں ایک کے بعد ایک ممبران اسمبلی اور وزراء کے استعفیٰ سے بحران میں آئی کمارسوامی حکومت کو بچانے میں ریاست کے کانگریس اور جے ڈی ایس لیڈر پوری طاقت جھونک رہے ہیں، اگرچہ دو آزاد اراکین اسمبلی نے جہاں استعفیٰ کی تجویز واپس لے لی ہے، وہیں کانگریس کے ممبر اسمبلی شریمت پاٹل کے اچانک غائب ہونے اور بعد میں ممبئی کے اسپتال میں داخل ہونے کی خبر نے حکومت پر بحران کھڑا کر دیا ہے۔اب پیر کو کرناٹک اسمبلی میں فلور ٹیسٹ ہونا ہے جو کمارسوامی حکومت کا مستقبل طے کرے گا۔یدی یورپا نے الزام لگایا کہ ریاستی حکومت بے وجہ اکثریت ٹیسٹ کی تاریخ کو آگے بڑھاتی جا رہی ہے، جبکہ وہ جانتی ہے کہ اس کی طرف سے اپنے ممبران اسمبلی کو جاری کئے گئے وہپ کا کوئی مطلب نہیں ہے۔یدی یورپا نے پیر کو جاری سپریم کورٹ کے حکم کا حوالہ دیتے ہوئے کہاکہ سپریم کورٹ نے اپنے حکم میں صاف کہا ہے کہ ممبئی میں ٹھہرے ہوئے 15 ممبران اسمبلی کو ایوان کی کارروائی میں حصہ لینے کے لئے پابند نہ کیا جائے،یہ ان پر چھوڑ دیا جائے کہ وہ ایوان کی کارروائی میں حصہ لینا چاہتے ہیں یا نہیں۔انہوں نے کہا کہ ایسی صورت میں وہپ کی کوئی قیمت نہیں رہ جاتی ہے اور یہ حکمراں پارٹی کو بھی اچھے سے معلوم ہے۔یدی یورپا نے کہا کہ گورنر نے وزیر اعلی کمارسوامی کو واضح ہدایات دی ہیں کہ حکومت اقلیت میں ہونے کے سبب وہ کوئی اہم فیصلہ نہ اٹھائیں،اگرچہ وزیر اعلی نے ان کی رائے کو بھی ان سنا کر دیا ہے اور مسلسل اہم فیصلے لے رہے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

اے پی سی آر نے داخل کی انسداددہشت گردی قانون میں ترمیم کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل

مرکزی حکومت نے انسداد دہشت گردی قانون یو اے پی اے میں جو حالیہ ترمیم کی ہے اور کسی بھی فرد کو محض شبہات کی بنیاد پر دہشت گرد قرار دینے کے لئے تحقیقاتی ایجنسیوں کو جو کھلی چھوٹ دی ہے اسے چیلنج کرتے ہوئے ایسوسی ایشن فار  پروٹیکشن آف سوِل رائٹس (اے پی سی آر) نے سپریم کورٹ میں اپیل ...

ریاستی حکومت نے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے حوالے کیا

ریاست کی سابقہ کانگریس جے ڈی ایس حکومت کے دور میں کی گئی مبینہ ٹیلی فون ٹیپنگ کی سی بی آئی جانچ کے ا حکامات صادر کرنے کے دودن بعد ہی آج ریاستی حکومت نے کروڑوں روپیوں کے آئی ایم اے فراڈ کیس کی جانچ سی بی آئی کے سپرد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کیا شمالی کینرا سے شیورام ہیبار کے لئے وزارت کا قلمدان محفوظ رکھا گیا ہے؟

کرناٹکاکے وزیراعلیٰ  ایڈی یورپا نے دو دن پہلے اپنی کابینہ کی جو تشکیل کی ہے اس میں ریاست کے 13اضلاع کو اہمیت دیتے ہوئے وہاں کے نمائندوں کو وزارتی قلمدان سے نوازا گیا ہے۔اور بقیہ 17اضلاع کو ابھی کابینہ میں نمائندگی نہیں دی گئی ہے۔