افغانستان: خلیل زاد نے کی فریقین سے تشدد میں کمی لانے کی اپیل

Source: S.O. News Service | Published on 21st September 2020, 11:12 PM | عالمی خبریں |

ماسکو،21؍ستمبر(ایس او نیوز؍ایجنسی) افغانستان میں قیام امن اور مفاہمت کے لئے امریکی نمائندہ خصوصی زلمے خلیل زاد نے دوحہ میں امن مذاکرات کے دوران افغانستان میں دونوں فریقوں کے درمیان ہونے والے تشدد کو کم کرنے کی اپیل کی ہے۔ اتوار کے روز زلمے خلیل زاد نے کہا کہ ’’گزشتہ کچھ دنوں میں افغانستان میں تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔ یہ اضافہ مایوس کن ہے کیونکہ بہت سارے افغان شہری اس میں ہلاک ہوئے ہیں۔ افغانستان امن مذاکرات کے حالیہ آغاز کے پیش نظر یہ ضروری ہے کہ دونوں فریق تشدد کو کم کریں۔

قطر کے دارالحکومت دوحہ میں افغان حکومت اور طالبان کے مابین جاری امن مذاکرات کے باوجود گزشتہ دنوں پرتشدد جھڑپوں اور بم دھماکوں کے واقعات رونما ہوئے ہیں۔ اتوار کے روز ایک مقامی ذرائع نے بتایا کہ افغانستان کے صوبے ارزگان میں سیکورٹی فورسز اور عسکریت پسند گروپ کے مابین جاری جھڑپوں میں کم از کم دس پولیس افسران اور 15 طالبان ارکان ہلاک ہوگئے۔ انہوں نے بتایا کہ ارزگان کے ضلع گزاب میں سیکڑوں طالبانیوں نے افغان سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا اور گزشتہ تین دنوں میں بیشتر علاقوں پر کنٹرول کر لیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

انتخابی اشتہارات: ٹرمپ اور بائیڈن کی مہمات کیسے مختلف ہیں؟

امریکہ میں ری پبلکن جماعت کے صدارتی امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کے حریف جو بائیڈن نے فیس بک اور انسٹا گرام پر اشتہارات چلانے کے لیے 100 ملین ڈالر استعمال کیے ہیں۔ یہ رقم تین نومبر کے صدارتی انتخاب کے لیے دونوں جانب سے جون سے اب تک خرچ کی گئی ہے۔