دہلی میں عآپ کی جیت پر شیوسینا نے کی کیجریوال کی تعریف  کہا، بی جے پی رہنماؤں کی فوج کا کیجریوال نے اکیلے مقابلہ کیا

Source: S.O. News Service | By INS India | Published on 12th February 2020, 8:16 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،12/فروری(آئی این ایس انڈیا)  شیوسینا نے بدھ کو کہا کہ عام آدمی پارٹی کے ان کے کاموں کی بدولت اسے دہلی اسمبلی انتخابات میں شاندار جیت ملی۔ جبکہ بی جے پی کی پولرائزیشن کی کوشش قومی دارالحکومت کے ووٹروں کو راس نہیں آئی۔

شیوسینا نے دہلی کے وزیر اعلی اروند کجریوال کی یہ کہتے ہوئے تعریف کی انہوں نے وزرائے اعلی اور مرکزی رہنماؤں سمیت بی جے پی لیڈروں کی فوج کا اکیلے مقابلہ کیا اور تعلیم اور صحت کے شعبے میں اپنی حکومت کی طرف سے کئے گئے کاموں کو کامیابی کے طور پر  پیش کیا۔شیوسینا نے کہا کہ یہ غیر معمولی جیت  ہے کیونکہ ہندوستان میں انتخابات عام طور پر جذباتی مسائل پر لڑے جاتے ہیں۔

ادھو ٹھاکرے کی زیر قیادت پارٹی نے اپنی سابق حلیف پارٹی بی جے پی پر طنز کستے ہوئے کہا کہ آپ کی جیت ’گھمنڈ اور ہم جو کریں وہی قاعدہ ہے‘ والے رویہ کی شکست کو ظاہر کرتا ہے۔دہلی اسمبلی انتخابات ہارنا اور ملک کی مالیاتی دارالحکومت (مہاراشٹر) میں شیوسینا کا وزیر اعلی بننا مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کے لئے انتہائی دکھی کرنے والاہو گا جو قومی صدر کا عہدہ چھوڑنے کے بعد بی جے پی کی کم از کم ایک جیت کو ترس رہے تھے۔

منگل کو کیجریوال زیرقیادت عام آدمی پارٹی نے دہلی اسمبلی انتخابات میں ایک بار پھر شاندار کامیابی حاصل کی۔نظر ثانی شہریت قانون (سی اے اے) کی مخالفت میں جاری مظاہروں کے درمیان اس مقابلے پر سب کی نظر تھی جہاں آپ نے اہم حریف بی جے پی کو زبردست جھٹکا دیا اور کانگریس کا مکمل طور پر خاتمہ کر دیا۔شیوسینا نے کیجریوال کو فتح کی مبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ بی جے پی دہلی اسمبلی انتخابات میں اپنے ممبران پارلیمنٹ، ممبران اسمبلی اور پڑوسی ریاستوں کے وزرائے اعلی کی پوری فوج کے ساتھ اتری تھی لیکن کیجریوال اکیلے ان پر بھاری پڑ گئے۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے اپنے انتخابی تشہیر کو سی اے اے،ہندو مسلم اور شاہین باغ کو مسلمانوں کی تحریک بتانے جیسے مسائل پر مرکوز رکھا لیکن ووٹر اس  پولرائزیشن کے چکر میں نہیں پڑے اور کیجریوال کے حق میں ووٹ دیا۔

ایک نظر اس پر بھی

متھرا : کرشن مندر کے لئے مسجد کے انہدام کا اعلان کرنے والے دیو مراری کے خلاف ایف آئی آر

 ایودھیا میں بابری مسجد کو شہید کرنے کے بعد فیصلہ مندر کے حق میں آنے کے بعد سے ایک طبقہ کے حوصلہ بلند نظر آ رہے ہیں اور اب ان کی نظریں ملک کی دیگر ان مساجد پر مرکوز ہیں جہاں تنازعہ کھڑا ہوتا رہا ہے۔

یوپی میں نظم و نسق کی حالت کافی خراب: مایاوتی

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سپریمو مایاوتی نے اترپردیش میں نظم ونسق پر سوالیہ نشان کھڑے کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں جرائم پر کنٹرول اور نظم ونسق کے معاملے میں سابقہ سماج وادی پارٹی(ایس پی) اور برسراقتدار بی جے پی میں اب کوئی فرق نہیں رہ گیا ہے۔

دبئی میں ایک سواری نے ایک شخص کو رونڈ ڈالا؛ مہلوک ایشیائی شخص کی شناخت ہنوز نہیں ہوپائی؛ پولس نے عوام سے کی تعاون کی اپیل

یہاں ایک سواری کی ٹکر میں ایک شخص ہلاک ہوگیا مگر اُس شخص کی شناخت ابھی تک معمہ بنی ہوئی ہے اور یہ کون ہے، کس ملک یا کس  شہر سے ہے کچھ پتہ نہیں چل پایا ہے۔ پولس کا کہنا ہے کہ یہ ایشیاء کے  کسی ملک سے تعلق رکھتا ہے۔

بھٹکل کا نوجوان اُدیاور میں ہوئے سڑک حادثہ میں شدید زخمی؛ علاج کے لئے مالی تعاون کی اپیل

بھٹکل مخدوم کالونی کا ایک نوجوان اُڈپی کے اُدیاور میں سڑک حادثہ میں شدید زخمی ہوا ہے اور اسے منی پال کستوربا اسپتال شفٹ کیا گیا ہے، نوجوان کی مالی حالت کمزور ہونے  کی وجہ سے علاج کے لئے  قریب تین لاکھ  روپیوں کی فوری ضرورت ہے۔ نوجوان کی شناخت سمیرسوکیری (34) کی حیثیت سے کی گئی ...

بھٹکل میں الحاج محی الدین مُنیری کے نام سے موسوم ہائی ٹیک ایمبولنس کا خوبصورت افتتاح

   یہاں نوائط کالونی میں  دبئی کے معروف تاجر جناب عتیق الرحمن  مُنیری کی طرف سے ان کے والد مرحوم الحاج محی الدین مُنیری کے نام سے منسوب ایک ہائی ٹیک ایمبولنس کا خوبصورت افتتاح عمل میں آیا جس میں بھٹکل کی سرکردہ شخصیات سمیت علماء و عمائدین   موجود تھے۔

بنگلورو فساد: مسلمانوں نے پیش کی ہم آہنگی کی مثال، انسانی زنجیر بناکر مندر کی حفاظت

کرناٹک کی راجدھانی بنگلورو میں سوشل میڈیا کی ایک قابل اعتراض پوسٹ کے بعد بھڑکنے والے فرقہ وارانہ فساد کے درمیان مسلم نوجوانوں نے مذہبی ہم آہنگی کی مثال پیش کرتے ہوئے ایک مندر کی حفاظت کی اور ہندوستان کی اس خوبصورت تصویر کو نمایاں کیا جس پر ہر ہندوستانی کو فخر ہونا چاہیے۔

 بھٹکل جالی پٹن پنچایت کی نئی عمارت کی تعمیرروک دی جائے۔ پنچایت اراکین نے کیا اسسٹنٹ کمشنر سے مطالبہ 

بھٹکل جالی پٹن پنچایت کے اراکین نے اسسٹنٹ کمشنرکو میمورنڈم دیتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ ایڈمنسٹریٹر کی حیثیت سے تحصیلدار نے جالی پٹن پنچایت کی نئی عمارت تعمیر کرنے کا جو کام شروع کیا ہے