بنگلورو سلک بورڈ جنکشن راہگیروں کے لئے خطرناک

Source: S.O. News Service | Published on 19th February 2020, 11:45 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،19/فروری(ایس او نیوز) الیکٹرانک سٹی اور شرجاپور میں واقع اپنے دفاتر کو جانے کے لئے بسوں کو پکڑنے کے لئے فٹ پاتھوں پر پیدل چلنے اور سلک بورڈ جنکشن کا استعمال کرنے والے ٹیکیوں کا کہنا ہے کہ، یہاں کی سڑکوں پر سے پیدل چل کر جانا ایک خطر ناک معاملہ ہوتا ہے۔راہگیروں کا کہنا ہے کہ یہاں مناسب فٹ پاتھ بھی نہیں پائے جاتے، جس کی وجہ سے لوگ بھاری ٹرافک اژدہام کا شکار چوراہے کی اصل سڑکوں پر اتر کر چلنے کے لئے مجبور ہو تے ہیں، اس پر تکلیف دہ بات یہ ہے کہ اکثر لوگ یہاں سڑک کے کنارے کی جگہوں کو کھلے میں پیشاب پاخانہ کرنے کے لئے بھی استعمال کرتے ہیں، اس کے علاوہ قریب ہی موجود کھلے ہوئے گندے پانی کے نالے سے نکلنے والی بد بو بھی لوگوں کو پریشان کرتی ہے۔اگست 2019 میں فٹ پاتھوں کی دیکھ بھال کے لئے خاص طور پر 33 لاکھ روپیوں کا بجٹ جاری کیا گیا تھا، وارڈ کے کارپوریٹر نے کہا ہے کہ اس سلسلہ میں کام کا آغاز جلد ہی ہوگا، اسی کے ساتھ یہاں موجود برساتی نالے کو بھی کیچڑ اور گاد وغیرہ سے صاف کیاا جا رہا ہے، الیکٹرانک سٹی میں کا م کرنے والے ایک ٹیکی پنا گپتا جو روزانہ مڈیوال سے بس پر سوار ہوتے ہیں کا کہنا ہے کہ ”چونکہ یہاں مناسب فٹ پاتھ نہیں پائے جاتے، ہم اصل سڑک پر اتر کر چلنے کے لئے مجبور ہوتے ہیں، کئی مرتبہ گاڑیوں سامنے کی جانب سے تیز رفتاری کے ساتھ آتی ہیں اور یہ بہت ہی زیادہ خطرناک ہوتا ہے، برساتی نالے کو کھلا چھوڑ دیا گیا ہے اور کئی مقامات پر ریلنگس بھی ٹوٹی ہوئی ہیں ٹوٹی ہوئی پتھر کی سلوں اور زمین سے باہر نکلی ہوئی لوہے کی سلاخوں کی وجہ سے میں خود بھی دو تین مرتبہ زخمی ہو گیا تھا، چونکہ اس مقام پر روشنی کے بلب بھی نہیں پائے جاتے رات کے اوقات میں اس سڑک پر سے گزر نا اور بھی زیادہ مشکل ہو جاتا ہے“۔

ایک نظر اس پر بھی

عوام کو گھروں سے باہر نکلنے سے روکنے کیلئے ریاستی حکومت کا سخت اقدام؛ کرناٹک فوج کے حوالے کیا جاسکتا ہے؟

کرناٹک میں کورونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی تعداد میں روز افزوں اضافے اور حکومت کی طرف سے نافذ لاک ڈاؤن کی پابندی کو توڑے جانے کے واقعات کو دیکھتے ہوئے ریاستی حکومت لاک ڈاؤن کو مؤثر طور پر نافذ کرنے کیلئے فوج کو اتار نے کی تیاری کررہی ہے -

کورونا وائرس سے حالات مزید ابتر؛ بھٹکل میں مزید ایک شخص کی رپورٹ پوزیٹیو آنے کی خبر، چھ متاثرہ مریض کاروار۔نیوی اسپتال منتقل

ملک بھر میں جہاں کورونا وائرس کو لے کر خوف وہراس بڑھتا جارہا ہے اور ہر روز کورونا سے متاثرہ لوگوں کی تصدیق کی جارہی ہے۔ ایسے میں کرناٹک کے شہر بھٹکل کی حالت مزید دگرگو ہوتی نظر آرہی ہے۔ کل شام کو ایک ساتھ تین لوگوں کی رپورٹ کورونا پوزیٹیو آنے کی خبر ملی تھی جس کی  آج ...

کرناٹکا میں کورونا کے مزید دس معاملات؛ بھٹکل کے پھر تین لوگوں کی رپورٹ آئی پوزیٹیو؛ بھٹکل میں مکمل خاموشی؛ آئی این ایف نے اسپتال کے لئے فراہم کئے کٹس

  کرناٹکا میں کورونا  پوزیٹیو کے آج دس معاملے سامنے آئے ہیں جس میں ضلع اُترکنڑا کے تین لوگ بھی شامل ہیں۔ کرناٹکا میں دس معاملے سامنے آنے کے بعد ریاست بھرمیں کورونا سے متاثرہ مریضوں کی تعداد بڑھ کر 74ہوگئی ہے۔

بھٹکل کورونا وائرس معاملہ؛ انتظامیہ نے جاری کیا وبائی مرض اور ہنگامی حالات سے نمٹنے کے لئے سرکاری فنڈ؛ فاقہ کشی پر مجبور افراد کے لئے بھی  کھانے کا انتظام

ضلع شمالی کینرا کے ڈپٹی کمشنر نے ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس قدرتی آفت سے پیدا شدہ صورتحال سے نپٹنے کے لئے ضلع انتظامیہ نے سرکاری فنڈ جاری کردیا ہے۔

بھٹکل ہیلتھ ایمرجنسی:گھروں تک پہنچائی جائیں گی ضروری اشیاء اور دوائیاں؛ گھروں سے باہر نکلنا بند کریں، اب گاڑیاں ضبط کی جائیں گی

ضلع انتظامیہ کی طرف سے بھٹکل میں ’ہیلتھ ایمرجنسی‘ لاگو کیے جانے کے بعد تعلقہ انتظامیہ نے عوام کو سہولیات فراہم کرنے کے لئے مختلف نوڈل افسران کو نامز د کیا ہے، جو اس بات کا خیال رکھیں گے کہ سماجی رابطے سے دور رکھنے کے لئے عوام کو گھروں میں جو بند کرکے رکھا گیا ہے اس سے  بنیادی ...