کرناٹکا کے 878 پی یو سی طلبہ نے بغیر امتحان ظاہر کئے گئے نتائج کو کیا ریجیکٹ؛ 19 اگست کو لکھیں گے امتحان

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 2nd August 2021, 5:28 PM | ریاستی خبریں |

بنگلور 2/اگست (ایس او نیوز)  کرناٹک کے 878  پی یو سی سکینڈ  طلبہ نے  بغیر امتحان   ظاہر کئے گئے نتائج کو ریجیکٹ کردیا ہے، جن کے لئے اب  19/اگست کو امتحانات ہوں گے۔

یاد ہوگا کہ کورونا وباء کے چلتے اس بار پی یوسی دوم کا امتحان نہیں  رکھا گیا تھا اور پی یو سی اول نیز میٹرک امتحانات میں لئے گئے مارکس کی بنیاد پر سکینڈ پی یو سی کے  مارکس دئے گئے تھے اور 20 جولائی کو  نتائج کا اعلان کیاگیا تھا، اس موقع پر پی یو بورڈ نے واضح کیا تھا کہ جو طلبہ دئے گئے مارکس یا نتائج سے مطمئن نہیں ہیں  اُن کے لئے اگست میں امتحان  رکھا جائے گا۔ جس کے بعد اگست میں حاصل ہونے والے مارکس فائنل قرار دئے جائیں گے۔ 

کرناٹک سے 6 لاکھ سکینڈ پی یو سی طلبہ میں سے  878 طلبہ نے  نتائج کو  ریجیکٹ کرتے ہوئے نئے سرے سے امتحان دینے کی خواہش ظاہر کی ہے۔ اس میں  سے  صرف بلاری سے ہی 237 طلبہ ہیں جو  نئے سرے سے اگست میں ہونے والے امتحان میں شریک ہونا چاہتے ہیں۔ ان میں سے 221  فریشرس ہیں جبکہ 16 ریپیٹرس بھی ہیں۔

جن طلبہ نے  نتائج کو قبول کرنے سے انکار کیا ہے، اُن کا کہنا ہے کہ  ان کے  فرسٹ پی یو سی اور میٹرک کے مارکس کم تھے، لیکن  اُنہیں اُمید تھی کہ سکینڈ پی یو سی میں وہ زیادہ مارکس حاصل کرسکتے ہیں، لیکن  جو مارکس ملے ہیں اُن سےوہ مطمئن نہیں ہیں لہٰذا  اُنہیں اُمید ہے کہ وہ   امتحان لکھ کر زائد مارکس  حاصل کرسکتے ہیں۔

ایک نظر اس پر بھی

کرناٹک میں پی یو سی دوم کے نتائج کا اعلان ؛ 18،414 طلبا میں سے 5،507 طلبا کا میاب

پی یو سی دوم کا چیلنجنگ امتحان لکھنے والے طلبا کے نتائج ظاہر کردئے گئے  ہیں۔ جملہ 18،414 طلبا نے امتحان کے لئے اپنا اندراج کرویا تھا۔ ان میں سے 17،470 پرائیویٹ طلبا ، 351 رپیٹرس ، 592 فریشریس  طلبا نے امتحان میں شرکت کی ۔

بنگلورو: 5سالہ بچی کی عصمت پر حملہ، مقامی لوگوں کا پولیس تھانہ پر احتجاج

کل رات یہاں سنجے نگر پولیس تھانے کے سامنے ایک سو سے زیادہ افراد اکٹھا ہوگئے اور احتجاج کرنے لگے۔ وہ اس 25سالہ فرد کو ان کے حوالے کرنے کا مطالبہ کر رہے تھے جس نے ایک 5 سالہ معصوم بچی پر جنسی حملہ کیا تھا۔

سدانند گوڈا کی جانب سے ’جعلی ویڈیو‘ کے خلاف سائبر پولیس میں شکایت، اشاعت پر پابندی اور خاطیوں کو گرفتار کرکے سخت سے سخت سزا دینے کا مطالبہ

سابق وزیر اعلیٰ اور حال تک مرکزی وزیر رہ چکے ڈی وی سدانند گوڈا نے کل یہاں پولیس میں ایک شکایت درج کروائی ہے جو ایک ویڈیو کلپنگ کے بارے میں ہے جس میں انہیں دیکھا جا سکتا ہے۔

کرناٹک میں نظم و ضبط کی صورتحال انتہائی خراب، وزیر اعلیٰ کو جان سے مارنے کی کھلے عام دھمکی حالات کی عکاس:کانگریس

کرناٹک میں دن بدن بگڑتی ہوئی نظم و ضبط کی صورتحال پر کانگریس نے ریاستی حکومت کو نشانہ بنایا ہے اور کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ بسوراج بومئی کو کھلے عام جان سے مارنے کی دھمکی دی جا رہی ہے اور حکومت اس طرح کی دھمکی دینے والے عناصر کے خلاف فوری کارروائی کرنے میں ٹال مٹول سے کام لے رہی ہے۔