اپوزیشن کے 8ممبران پارلیمنٹ کی معطلی مرکزی حکومت کا اختلاف رائے سے عدم راوداری کا نمونہ۔ ایس ڈی پی آئی

Source: S.O. News Service | Published on 22nd September 2020, 11:20 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،22؍ستمبر(ایس او نیوز؍پریس ریلیز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا (ایس ڈی پی آئی) کے قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے جاری کردہ اخباری بیان میں زرعی بل منطور کئے جانے کی مخالفت کرنے پر اپوزیشن کے 8اراکین پارلیمنٹ کو ایک ہفتہ کیلئے پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس میں شرکت سے معطل کرنے کے اقدام کو جمہوریت مخالف قرار دیتے ہوئے کہاہے کہ یہ آر ایس ایس کی فاشسٹ نظریے سے چلنے والی حکمران جماعت کی اختلا ف رائے سے عدم رواداری کا ایک نمونہ ہے۔

حکومت سے اختلا ف رائے اور سوال کرنے کی آزادی ایک صحت مند جمہوریت کے خوبصورت عناصر ہیں۔ فاشسٹ جمہوریت سے خوفزدہ ہیں اور ان کو اصولوں کی کوئی قدر نہیں ہے۔ حکومت جن بلوں کو بغیر کسی رکاوٹ کے منظور کرنا چاہتی ہے وہ کسان مخالف بل ہیں جس سے صرف کارپوریٹس کو مدد حاصل ہوگی، کاشتکاروں کو نہیں۔ ملک بھر کے کسان ان تباہ کن بلوں کے خلاف احتجاج کررہے ہیں۔ حکومت بلوں پر بحث سے بھی خوفزدہ ہے لہذا وہ وزیر زراعت کے جواب اور رائے دہندگی کیلئے ایوان کو ایک دن ملتوی کرنے کے اپوزیشن کے مطالبے کو نظر انداز کرتے ہوئے حکومت نے جلد بازی میں بلوں کو منظور کیا ہے۔ راجیہ سبھا میں ہنگامے کے درمیان یہ بل صوتی ووٹوں سے منظور کیا گیا جہاں حکمران جماعت کی اکثریت نہیں ہے۔

ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے مزید کہا ہے کہ انتہا پسند دائیں بازو کے فاشسٹوں کے دور حکومت میں ہندوستان میں جمہورت ماضی کے دور کی داستان بن رہی ہے۔ ایس ڈی پی آئی ملک میں جمہوریت مخالف رجحان اور حکمران جماعت کی بڑھتی عدم رواداری کے بارے میں سخت چوکس ہے۔ ایم کے فیضی نے امید کا اظہار کیا ہے کہ مرکزی حکومت کی بدانتظامی اور غیر اخلاقی کارروائیوں کے خلاف ملک کے عوام جمہوری ردعمل کا اظہار کریں گے اور یہ کہ وہ جمہوریت کو ہلاک نہیں ہونے دیں گے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

ملک میں کورونا متاثرین کی تعداد تقریباً 80 لاکھ

ملک میں اتوار کے روز کورونا وائرس ’کووِڈ۔19‘ وبا سے متاثرین کی تعداد تقریباً 80 لاکھ یعنی 79,07,321 ہو گئی ہے لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ متاثرین کے مقابلے صحتیاب ہونے والوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔

زرعی قانون کے خلاف وجے دشمی پر پی ایم مودی، اڈانی اور امبانی کا کسانوں نے جلایا مجسمہ

زرعی قوانین کے خلاف پنجاب میں وجے دشمی کے موقع پر کسانوں کے ذریعہ وزیر اعظم مودی، اڈانی اور امبانی کے مجسموں کو نذر آتش کرنے کے بارے میں ایک رپورٹ شیئر کرتے ہوئے کانگریس کے رہنما راہل گاندھی نے کہا کہ "یہ کل پورے پنجاب میں ہوا۔

بہار کے عوام کو مفت ویکسین، تو کیا ہم بنگلہ دیشی ہیں؟: ادھو ٹھاکرے

 شیو سینا کی 66 سالہ تاریخ میں پہلی بار کسی دوسری جگہ منعقد کی گئی دسہرہ ریلی سے خطاب کے دوران مہاراشٹرا کے وزیراعلیٰ اور شیو سینا کے سربراہ ادھو ٹھاکرے نے وزیر اعظم نریندر مودی پر براہ راست اور سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ "بہار کے عوام کو مفت ویکسین کی تقسیم، تو کیا ہم ...