ہندوستان: کورونا کے نئے معاملہ ایک دن میں65 ہزار سے پار، اب تک کے سب سے زیادہ

Source: S.O. News Service | Published on 9th August 2020, 11:22 AM | ملکی خبریں |

 نئی دہلی،9؍اگست (ایس او نیوز؍ایجنسی) ملک میں کورونا وائرس کی دن بدن خراب ہوتی صورتحال کے درمیان سنیچر کی دیر رات تک65,156نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 21.50لاکھ سے زیادہ ہوگئی اور 875مزید لوگو کی موت سے مرنے والوں کی تعداد 43,446تک پہنچ گئی لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ مریضوں کے صحت یاب ہونے کی شرح 69فیصد کے قریب پہنچ گئی۔

مختلف ریاستوں سے موصولہ اطلاع کے مطابق سنیچر کی دیر رات تک 65ہزار سے زیادہ نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 21,52,020ہوگئی ہے۔ صحت یاب ہونے والوں کی شرح میں مسلسل اضافہ کے باوجود انفیکشن کے نئے معاملے بڑھنے سے ملک میں اس دوران فعال معاملات میں 10,869کا اضافہ ہوا جس سے ان کی تعداد 6,29,957ہوگئی ہے۔ راحت کی بات یہ ہے کہ اس دوران 49,325لوگوں کے صحت یاب ہونے سے اس بیماری سے نجات پانے والوں کی تعداد بھی 14,76,994پر پہنچ گئی ہے۔

اس طرح صحت یاب ہونے والے مریضوں کی شرح بڑھ کر آج 68.66فیصد ہوگئی جو جمعہ تک 68.32فیصد تھی جبکہ اموات کی شرح 2.01فیصد رہی۔

صحت اور خاندانی فلاح و بہبود کی مرکزی وزارت کی طرف سے سنیچر کی صبح جاری اعدادو شمار کے مطابق انفیکشن کے 61,537معاملے آنے سے ان کی تعداد 20,88,612ہوگئی تھی۔ جمعہ کو 62,538معاملے سامنے آئے تھے۔

کورونا سے سب سے زیادہ متاثرہ مہاراشٹر میں سب سے زیادہ 12,822نئے معاملے سامنے آئے جبکہ جنوبی ریاست آندھراپردیش میں اس کے بعد 10.080معاملے، کرناٹک میں 7,718معاملے، تملناڈو میں 5883نئے معاملے، اترپردیش میں 4,660معاملے، بہار میں 3992، مغربی بنگال میں 2949، تلنگانہ میں 2256معاملے اور آسام میں 2,218نئے معاملے سامنے آئے۔

ایک نظر اس پر بھی

بالاسبرامنیم اس ملک کے موسیقی اورلسانی ثقافت کی ایک عمدہ مثال تھے: سونیا گاندھی

کانگریس  کی  چیئرپرسن سونیا گاندھی نے موسیقی کی دنیا کی ایک عظیم ہستی بالاسبرامنیم کے انتقال پراپنے گہرے رنج  وغم  کا اظہار کرتےہوئے کہا ہے کہ وہ ملک کی  موسیقی اور لسانی  ثقافت کے عمدہ مثال تھے اور ان کے نہیں رہنے  سے آرٹ اور کلچرل کی دنیا پھیکی پڑگئی ہے۔

الطاف بخاری کا راجوری کے تین متاثرہ کنبوں کو معقول معاوضہ و نوکریاں فراہم کرنے کا مطالبہ

اپنی پارٹی کے صدر سید محمد الطاف بخاری نے کہا ہے کہ پولیس کی فارنسک رپورٹ میں امشی پورہ شوپیاں انکاؤنٹر میں ہلاک ہونے والے راجوری ضلع کے 3 مقتول مزدوروں کی شناخت کی تصدیق سے قانون کے تحت سزا یقینی ہے