کرناٹک کے کولار نرسنگ کالج میں 32 طلبا کورونا پازیٹو

Source: S.O. News Service | Published on 2nd September 2021, 10:43 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو، 2؍ستمبر (ایس او نیوز) ہندوستان کی کئی ریاستوں میں اسکول اور کالج کھولنے کا اعلان کر دیا گیا ہے، لیکن اس کے منفی اثرات بھی سامنے آ رہے ہیں، کرناٹک میں گزشتہ مہینے ہی اسکول و کالج کھولنے کا اعلان کیا گیا تھا، اور اب کرناٹک کے کولار ضلع واقع ایک نرسنگ کالج میں 32 طلبا کے کورونا پازیٹو ہونے کی خبریں سامنے آ رہی ہیں۔ ان سبھی طلبا کا گزشتہ دو دنوں میں کورونا ٹیسٹ کرایا گیا ہے۔ ان طلبا میں سے بیشتر کا تعلق تمل ناڈو اور کیرالہ سے ہے۔ وزیر صحت نے اس سلسلے میں افسران سے رپورٹ طلب کی ہے اور کولار ضلع کا دورہ بھی کیا ہے۔

کرناٹک کے وزیر صحت کے. سدھاکر کا کہنا ہے کہ ’’کرناٹک کے طلبا کی کورونا رپورٹ پازیٹو آئی ہے۔ وہ سبھی کیرالہ سے لوٹے ہیں۔ میں کالج کا دورہ کروں گا اور انتظامیہ کے خلاف کارروائی کروں گا۔‘‘ دراصل کرناٹک کے کچھ اضلاع کی سرحد کیرالہ کے نزدیک ہے۔ کیرالہ میں کووڈ انفیکشن کا خطرہ بہت زیادہ ہے۔ کیرالہ میں روزانہ تقریباً 30 ہزار سے زیادہ کورونا کے نئے معاملے سامنے آ رہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ کرناٹک الرٹ ہو گیا ہے اور کیرالہ کے حالات پر گہری نظر بھی رکھے ہوئے ہے۔

جہاں تک کرناٹک کی بات ہے، کیرالہ کے مقابلے یہاں کی حالت کافی بہتر ہے۔ کرناٹک میں منگل کے روز کووڈ کے 1217 نئے معاملے سامنے آئے ہیں اور 25 مریضوں کی موت ہوئی ہے۔ اس کے ساتھ ہی مجموعی طور پر متاثرین اور مہلوکین کی تعداد بڑھ کر بالترتیب 29 لاکھ 49 ہزار 445 اور 37 ہزار 318 ہو گئی ہے۔ محکمہ صحت نے منگل کو بتایا کہ دن میں 1198 مریض نے کورونا کو شکست دی، جس کے بعد مجموعی طور پر صحت مند ہوئے لوگوں کی تعداد بڑھ کر 28 لاکھ 93 ہزار 715 ہو گئی۔

ایک نظر اس پر بھی

ہبلی میں مبینہ تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے شدت پسند ہندو تنظیموں کے کارکنوں نے چرچ کے اندر گھس کر گایا بھجن

ہبلی میں تبدیلی مذہب کی مخالفت کرتے ہوئے ہندو شدت پسند تنظیموں کے کارکنوں نے ایک چرچ کے اندر گھس کر بھجن گانا شروع کردیا جس کی وائرل ہونے والی ویڈیو میں درجنوں مرد و خواتین کو دیکھا گیا ہے کہ وہ کس طرح ہبلی کے بیری ڈیوارکوپا چرچ کے اندر بیٹھے ہاتھ جوڑ کر بھجن گارہے ہیں۔

ایڈی یورپاکی عوامی تحریکوں میں کروبا طبقے کاتعاون اہم رہاہے:راگھویندرا

تعلقہ میں بی ایس ایڈی یورپاکے تمام عوامی وفلاحی تحریکوں میں کروبا طبقہ کا تعاون اہم رہاہے،اس کے بدلے میں ایڈی یورپانے بھی اپنے دور اقتدار میں طبقے کی ترقی کیلئے جتنابھی ممکن ہوسکے کام کیا اور ہر طرح سے امداد فراہم کی۔یہ بات رکن پارلیمان بی وائی راگھویندرانے کہی۔

جے ڈی ایس ہی مسلمانوں کو سیاسی مستقبل کی ضمانت دے سکتی ہے: محیط الطاف

ریاستی اسمبلی میں اس وقت مسلم نمائندگی پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے جے ڈی ایس لیڈر ونئی دہلی میں سابق خصوصی نمائندہ برائے کرناٹک ڈاکٹر سید محیط الطاف نے آج کہا کہ ریاست کرناٹک میں 45اسمبلی حلقے ایسے ہیں جہاں اگر مسلمان متحد ہوکر کام کریں تو مسلم امیدوار منتخب ہوسکتے ہیں اور 75اسمبلی ...

بنگلورومیں بارش کے ساتھ ڈینگی معاملات میں اضافہ، 15دنوں میں 177نئے کیس سمیت جملہ 717متاثرین

راجدھانی بنگلورومیں بارش کی مقدارمیں اضافہ ہوتاجارہاہے،سلسلہ وارحادثات بھی پیش آرہے ہیں،ا س کے ساتھ ڈینگی بخار کے معاملات میں اضافہ ہورہاہے۔برساتی موسم سے پہلے یعنی ماہ مئی میں 102ڈینگی معاملات دکھائی دئے تھے،اکتوبر میں اس تعدادمیں 717تک اضافہ ہوگیا،گزشتہ 15دنوں کے دوران ...