ایران سے ہندوستان لوٹے 277 مسافر کورونا کی جانچ میں منفی پائے گئے

Source: S.O. News Service | Published on 26th March 2020, 10:59 AM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،26؍مارچ (ایس او نیوز؍ایجنسی) کورونا وائرس سے متاثرہ ایران سے لائے جانے والے کل 277 ہندوستانی کورونا وائرس کی جانچ میں منفی پائے گئے ہیں۔ یہ سبھی لوگ بدھ کی صبح جودھپور ایئر پورٹ پہنچے تھے۔ راجستھان کے ایڈیشنل چیف سکریٹری روہت کمار سنگھ نے یہ اطلاع دی۔

ان 277 ہندوستانیوں میں 273 زائرین اور 4 دیگر مسافر ہیں، جن میں پانچ بچے اور ایک نوزائدہ بھی شامل ہے۔ افسران نے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ یہ افراد بدھ کی صبح جودھپور پہنچے تھے۔ مسافروں میں 149 خواتین اور 128 مرد شامل ہیں۔ سبھی کو جودھپور ملٹری اسٹیشن کی آرمی ویلینس فیسیلٹی لے جایا گیا ہے۔

راجستھان ڈیفنس کے پی آر او کرنل سوبیت گھوش نے کہا، ’’پہلے ایئرپورٹ پر تمام مسافروں کی ابتدائی اسکریننگ کی گئی اور اس کے بعد انہیں جودھپور ملٹری اسٹیشن میں واقع آرمی ویلینس فیسلیٹی میں لے جایا گیا۔ آرمی راجستھان کے ریاستی میڈیکل آفیسرز اور سول انتظامیہ کے ساتھ تال میل بیٹھا کر کام کر رہی ہے۔

جودھپور میں ان لوگوں کے قیام اور طبی و دیگر انتظامات کے لئے خاطر خواہ اقدامات کیے گئے ہیں۔ ادارے کے پاس وقف ڈاکٹروں کی ٹیم ہے، جو مسلسل ان کے یہاں رہنے کے دوران صحت کی جانچ کرے گی۔‘‘

ایک نظر اس پر بھی

متھرا : کرشن مندر کے لئے مسجد کے انہدام کا اعلان کرنے والے دیو مراری کے خلاف ایف آئی آر

 ایودھیا میں بابری مسجد کو شہید کرنے کے بعد فیصلہ مندر کے حق میں آنے کے بعد سے ایک طبقہ کے حوصلہ بلند نظر آ رہے ہیں اور اب ان کی نظریں ملک کی دیگر ان مساجد پر مرکوز ہیں جہاں تنازعہ کھڑا ہوتا رہا ہے۔

یوپی میں نظم و نسق کی حالت کافی خراب: مایاوتی

بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) سپریمو مایاوتی نے اترپردیش میں نظم ونسق پر سوالیہ نشان کھڑے کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں جرائم پر کنٹرول اور نظم ونسق کے معاملے میں سابقہ سماج وادی پارٹی(ایس پی) اور برسراقتدار بی جے پی میں اب کوئی فرق نہیں رہ گیا ہے۔

دبئی میں ایک سواری نے ایک شخص کو رونڈ ڈالا؛ مہلوک ایشیائی شخص کی شناخت ہنوز نہیں ہوپائی؛ پولس نے عوام سے کی تعاون کی اپیل

یہاں ایک سواری کی ٹکر میں ایک شخص ہلاک ہوگیا مگر اُس شخص کی شناخت ابھی تک معمہ بنی ہوئی ہے اور یہ کون ہے، کس ملک یا کس  شہر سے ہے کچھ پتہ نہیں چل پایا ہے۔ پولس کا کہنا ہے کہ یہ ایشیاء کے  کسی ملک سے تعلق رکھتا ہے۔