اب انگلش میڈیم کے سرکاری اسکول ؛ انگریزی میڈیم پڑھانے والے والدین کے لئے خوشخبری۔ ضلع شمالی کینرا میں ہوگا 26سرکاری انگلش میڈیم اسکولوں کا آغاز

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 29th April 2019, 8:46 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں | اسپیشل رپورٹس |

کاروار29/اپریل(ایس اونیوز) سرکاری اسکولوں میں طلبہ کے داخلے میں کمی اور والدین کی طرف سے انگلش میڈیم اسکولوں میں اپنے بچوں کے داخلے کے رجحان کو دیکھتے ہوئے اب سرکاری اسکولوں میں بھی انگلش میڈیم کی سہولت فراہم کرنے کا منصوبہ بنایاگیا ہے۔

 نئے تعلیمی سال کے ساتھ ضلع شمالی کینرا کے سرسی اور کاروار جیسے 2تعلیمی اضلاع میں سے ہر ایک تعلیمی ضلع میں 13انگلش میڈیم اسکول قائم کیے جائیں گے۔ اس طرح شمالی کینرا ضلع میں کل 26مقامات پراسکولوں میں کنڑا میڈیم کے اسکولوں میں انگلش میڈیم کی بھی سہولت فراہم کی جائے گی۔ اس اسکیم کے تعلق سے گزشتہ بجٹ میں حکومت کی طرف سے اعلان بھی کیا گیا تھا۔فی الحال ہر اسمبلی حلقے میں 3مقامات پرسرکاری اسکولوں میں انگلش میڈیم کی سہولت دستیاب رہے گی۔ حالانکہ کنڑا حامی تنظیموں کی طرف سے اس اسکیم کی سخت مخالفت ہورہی ہے، لیکن حکومت نے سرکاری اسکولوں میں طلبہ کی تعداد کو بڑھانے کے لئے اس منصوبے پر عمل کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

 پہلی جماعت سے انگلش میڈیم:    موصولہ تفصیلات کے مطابق اسی سال جون سے منتخب کنڑا اسکولوں میں ہی انگلش میڈیم کا شعبہ شروع ہوگا اورپہلی جماعت سے داخلے کیے جائیں گے۔انگلش میڈیم میں پڑھانے لائق اساتذہ کی موجودگی، قریب میں ہائی اسکول واقع ہونے اور بنیادی سہولتیں اور ضروری عملہ پہلے سے موجود رہنے جیسے نکات کو ذہن میں رکھتے ہوئے انگلش میڈیم شعبے کے لئے اسکولوں کا انتخاب کیا گیا ہے۔انگلش میڈیم میں پڑھانے کے لئے ضروری اسٹاف کی تقرری کا عمل بھی شروع کیا گیا ہے۔فی الحال چونکہ پہلی جماعت میں داخلہ شروع کیا جارہا ہے، اس لئے اسکولوں میں انگریزی مضمون پڑھانے والے ٹیچر کو ہی اس کلاس کی ذمہ داری دی جائے گی۔اس کے بعد بتدریج ضروری اسٹاف کی بھرتی کی جائے گی۔

 سرسی تعلیمی ضلع کے ڈی ڈی پی آئی دیواکر شیٹی نے بتایا کہ جن سرکاری اسکولوں میں انگلش میڈیم کا شعبہ شروع کرنا ہے اس کی فہرست بناکر محکمہ کو بھیج دی گئی ہے۔ جلد ہی اس کی منظوری ملنے کی امید ہے۔ اسی طرح کاروار تعلیمی ضلع کے ڈی ڈی پی آئی کے منجوناتھ نے بتایا کہ انگریزی میڈیم کی کلاس شروع کرنے کے لئے تیاریاں کی جارہی ہیں۔ امسال پہلی جماعت سے داخلے شروع ہونے والے ہیں۔اس لئے سرکاری ہائیر پرائمری اسکولوں کے علاوہ کرناٹکا پبلک اسکولوں میں کے جی سے کلاسس شروع کرنے کے امکانات ہیں۔

 مخالفت زوروں پر:    ریاست بھر میں حکومت کی طرف سے 1000انگلش میڈیم اسکول قائم کرنے کا جو منصوبہ بنایا گیا ہے، ادبی ا ور سیاسی محاذ پر  اس کی مخالفت بڑے زرور وشور سے کی گئی تھی۔ مخالفین کا کہنا تھا کہ مادری زبان اور ثقافت پر اس کے منفی اثرات پڑیں گے۔اس لئے حکومت سے اس اسکیم کو واپس لینے کا مطالبہ کیا جارہا تھا۔جبکہ حکومت نے یہ موقف اپنایا ہے کہ بچوں کو سرکاری اسکولوں کی طرف راغب کرنے کے لئے یہ اقدام ضروری ہے۔اور بدلتے ہوئے حالات کے ساتھ چلنے اور اس کے تقاضے پورے کرنے کے لئے اس قسم کا فیصلہ نہایت ضروری ہے۔حکومت کا کہناتھا کہ کنڑا اسکولوں کو بند کرنے کی جو نوبت آگئی ہے، اس کے پیش نظر اسکولوں کو بند کرنے کے بجائے وہاں پر انگلش میڈیم کی سہولت فراہم کرکے اسکولوں کو باقی رکھنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ انگریزی میڈیم کی کلاس چونکہ پہلی جماعت سے شروع ہورہی ہے، اس لئے جو طلبہ ان اسکولوں میں پہلے سے کنڑا میڈیم میں زیر تعلیم ہیں ان کو اُسی میڈیم سے اپنی تعلیم جاری رکھنی پڑے گی۔

 کہاں کہاں ہونگے انگلش میڈیم اسکول؟:     کاروار تعلیمی ضلع کے تحت آنے والے سرکاری ہائیر پرائمری اسکول بئیلور(بھٹکل)، سرکاری ہائیر پرائمری اسکول گورٹے اورسرکاری ہائیر پرائمری آر ایم ایس اے ترقی شدہ اسکول (بھٹکل)، سرکاری ہائیر پرائمری اسکول تیرنامکّی (بھٹکل)، سرکاری ہائیر پرائمری اسکول چیتّار(بھٹکل)، سرکاری ماڈل ہائیر پرائمری اسکول منکی(ہوناور)، سرکاری ہائیر پرائمری اسکول اگسور (انکولہ)،سرکاری ہائی اسکول اورکے جی ایس کاروار/سرکاری ہائیر پرائمری اسکول بازار، سرکاری ہائیر پرائمری اسکول شیرواڈ (کاروار)، سرکاری ہائی اسکول آمدلّی (کاروار)، سرکاری ہائیر پرائمری   اسکول اگناشینی (کمٹہ)، گوکرن نمبر2/سرکاری ہائیر پرائمری اسکول اور ناڈو ماستی سرکاری ہائی اسکول (کمٹہ)، سرکاری ماڈل ہائیر پرائمری اسکول (کمٹہ)،  سرکاری ہائی اسکول سنتے گولی (کمٹہ) میں امسال انگلش میڈیم کا شعبہ شروع کیا جائے گا۔

 سرسی تعلیمی ضلع کے تحت ایم ایل اے ماڈل سرکای ہائیر پرائمری اسکول(ہلیال)، سرکای ہائیر پرائمری اسکول اور سرکای ہائی اسکول بی کے ہلّی(ہلیال)، سرکای ہائیر پرائمری اسکول تیرگاؤں (ہلیال)، سرکای ہائیر پرائمری اسکول نمبر2 ہلیال، سرکاری ہائی اسکول مورکاواڈ (ہلیال)، سرکاری پی یو کالج ہلگیری (سداپور)، سرکای ہائیر پرائمری اسکول بیلور (سداپور)، سرکای ہائیر پرائمری اسکول اور سرکاری اردو ہائی اسکول بنواسی (سرسی)، ایم ایل اے ماڈل سرکای ہائیر پرائمری اسکول سرسی، سرکای ہائیر پرائمری اسکول چیگلّی (منڈگوڈ)،  سرکای ہائیر پرائمری اسکول ملگی (منڈگوڈ)،  سرکای ہائیر پرائمری اسکول منڈگوڈ، سرکای ہائیر پرائمری اسکول کیروتّی (یلاپور) میں انگریز میڈیم کی کلاسس کا آغاز ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

منڈگوڈ کے جنگلات سے صندل لکڑی کی چوری : چار گرفتار ،بی جےپی لیڈر سے بھی پوچھ تاچھ

تعلقہ کے کُرلی جنگلات سے دو صندل کے درختوں کو کاٹ کر غیرقانونی سپلائی کرنے  کے الزام میں فاریسٹ افسران نے چار ملزموں کو گرفتار کرتے ہوئے بائک اور صندل لکڑی کو ضبط کرلینےکا واقعہ پیش آیا ہے ۔

کمٹہ میں ریوینیو منسٹر آر اشوک کے ہاتھوں رکھاگیا مِنی ودھان سودھا کا سنگ بنیاد۔ طلبہ کودیا حکومت کی طرف سے لیپ ٹاپ کا تحفہ

محکمہ ریوینیو کے وزیر آر اشوک کے ہاتھوں کمٹہ میں مِنی ودھان سودھا کا سنگ بنیا درکھا گیا۔اس کے علاوہ قدرتی آفات سے متاثرہ افراد کی باز آبادکاری کے ایک مرکز کا بھی افتتاح کیا۔ اس تعلق سے منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا سیلاب زدگان کے لئے مکانات کی تعمیر کے مقصدسے فی ...

کیرالہ میں آر ایس ایس کارکن گرفتار، پوچھ تاچھ میں ہوئے حیرت انگیز انکشافات

پڑوسی ریاست کیرالہ  کے کنور میں آر ایس ایس دفتر کے پاس واقع پولس پوسٹ پر بم پھینکے جانے کے الزام میں پولس نے آر ایس ایس کارکن کو گرفتار کرنے کی خبر موصول ہوئی ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق تمل ناڈو کے کوئمبٹور سے آر ایس ایس کا یہ ورکر بدھ کے روز گرفتار ہوا جس کے بعد اس سے سختی کے ...

ہندوتوا کارکنوں پر درج ہوئے مقدمات بی جےپی حکومت واپس لے گی : وزیر کے ایس ایشورپا

موجودہ ریاستی بی جے پی کی حکومت ہندوتوا تنظیموں کے کارکنانوں پر دائر ہوئے مقدمات کو واپس لینےکی تیاری  میں ہے ، اس سلسلےمیں ریاستی وزیر کے ایس ایشورپا نے سرسی میں بیان دیتے ہوئے کہاکہ پچھلی سرکار ہندوتوا تنظیموں کے کارکنوں پر بے وجہ در ج کئے مقدمات کو بی جے پی حکومت واپس لے گی، ...

بھٹکل سرکاری محکمہ جات کے مسائل کو حل کرنے کا مطالبہ لے کر رکن اسمبلی کا وزیر تحصیل کو میمورنڈم

محکمہ تحصیل میں کئی سارے مسائل فائلوں کی دھول چاٹ رہے ہیں، انہیں کوئی پوچھنے والا نہیں ہے، اس سلسلے میں حل کے لئے کارروائی کامطالبہ لےکر بھٹکل کے رکن اسمبلی سنیل نائک نے بدھ کو وزیر برائے تحصیل آر اشوک کو میمورنڈم سونپا۔

کمٹہ میں ریوینیو منسٹر آر اشوک کے ہاتھوں رکھاگیا مِنی ودھان سودھا کا سنگ بنیاد۔ طلبہ کودیا حکومت کی طرف سے لیپ ٹاپ کا تحفہ

محکمہ ریوینیو کے وزیر آر اشوک کے ہاتھوں کمٹہ میں مِنی ودھان سودھا کا سنگ بنیا درکھا گیا۔اس کے علاوہ قدرتی آفات سے متاثرہ افراد کی باز آبادکاری کے ایک مرکز کا بھی افتتاح کیا۔ اس تعلق سے منعقدہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا سیلاب زدگان کے لئے مکانات کی تعمیر کے مقصدسے فی ...

وقف بورڈ چیر مین کے انتخاب سے عین قبل ریاستی بی جے پی حکومت کی شرارت، راتوں رات ضلع وقف کمیٹیاں برخاست اور نئی کمیٹیوں کی تشکیل

ریاست کی بی جے پی حکومت کی طرف سے وقف بورڈ کو کھوکھلا کرنے اور اس کے امور میں بے جا مداخلت کرتے ہوئے راتوں رات 25ضلعی وقف کمیٹیوں کو برطرف کرنے اور ان کی جگہ نئی کمیٹیاں تشکیل دیتے ہوئے حکم نامہ جاری کرنے کا تنازع سامنے آیا ہے۔

منگلوروایئرپورٹ بم معاملہ: کمارا سوامی اور بی جے پی کے درمیان جاری ہے زبانی بمباری  

ایک طرف منگلورو ایئر پورٹ پر دھماکہ خیز مادہ (آئی ای ڈی) رکھنے والا ملزم آدتیہ راؤنے بنگلورو میں پولیس کے سامنے خودسپردگی کی ہے اور اپنا جرم قبول کرلیا ہے۔ جس کے بعد اسے گرفتار کرکے پوچھ تاچھ کی جارہی ہے۔دوسری طرف اس معاملے پر سابق وزیراعلیٰ وزیراعلیٰ کمارا سوامی اور بی جے پی ...

شہریت قانون کے خلاف احتجاج کاردعمل، بنگلورو میں بچوں سمیت48افراد پر ایف آئی آر درج

بنگلورو شہر میں پیر کے روز گنگونڈنا ہلی میں شہر یت قانون کے خلاف احتجاج کو پولس کی طرف سے اجازت دینے اور بعد میں اسے منسوخ کردینے کے بعد بھی جلسہ کے اہتمام پر طیش میں آکر چندرا لے آؤٹ پولس نے 48افراد کے خلاف ایف آئی آر درج کیا ہے جن میں چند بچے بھی ہیں۔

کنڑا روزنامہ کا بی جے پی پر پھر وار؛ لکھا،کرناٹک سے بی جےپی کے 25ایم پی منتخب ہونے کے باوجود مرکز نے کیا کرناٹک کو نظر انداز

بی جےپی اور اس کے لیڈران سمیت پالیسی کی زبردست حمایت کرنےو الے کنڑا روزنامہ ’وجئے وانی ‘ نے دوسرے دن بھی اپنے فرنٹ پیج پر بی جےپی کی مرکزی حکومت پر کڑی تنقید کرتےہوئے اپنی ہی پارٹی کے زیر اقتدار ریاست کرناٹکا کو نظر انداز کئے جانےکے متعلق رپورٹ شائع کی ہے ، جس کا ترجمہ قارئین ...

شہریت ترمیمی ایکٹ اور این آر سی کی مخالفت میں بھٹکل میں مزید مظاہروں کےآثار؛ کئی ٹورنامنٹ ملتوی

ملک کا خوفناک قانون  شہریت ترمیمی ایکٹ (سی اے اے)  اور این آر سی کی مخالفت  میں جہاں ملک بھر میں احتجاجی مظاہرے ہورہے ہیں،و ہیں بھٹکل  میں بھی آنے والے دنوں میں  مزید بڑے پیمانے پر مظاہرے اور احتجاجی ریلیاں نکالے جانے کے آثار نظر آرہے ہیں۔