ایران سے رہا ہونے والے سبھی ہندوستانی ماہی گیر خیروعافیت کے ساتھ دبئی پہنچ گئے

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 10th January 2019, 1:12 AM | ساحلی خبریں | خلیجی خبریں |

دبئی 9/جنوری (ایس او نیوز) کل منگل کو ایرانی عدالت کے حکم سے رہا ہونے والے ضلع اُتر کنڑا کے 18 ماہی گیر سمیت جملہ 28 ماہی گیروں کی دونوں بوٹ  آج بدھ رات کو خیر و عافیت کے ساتھ دبئی پہنچ گئی۔ جس کے ساتھ ہی سبھی ماہی گیروں کے گھروالوں اور دوست احباب میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے۔

دبئی وقت کے مطابق رات قریب 9:30 بجے (ہندوستانی وقت کے مطابق رات گیارہ بجے)  دونوں بوٹ دبئی کے جُمیرا بندرگاہ پہنچی، جہاں ان کے دوست احباب انہیں ریسیو کرنے پہلے ہی  سے موجود تھے۔

خیال رہے کہ تین بوٹوں پر سوار جملہ 28 ماہی گیر جو دبئی سمندر میں مچھلیوں کا شکار کررہے تھے، ایران نیوی نے  الگ الگ دنوں میں بوٹ سمیت یہ کہہ کر گرفتار کرلیا تھا کہ وہ لوگ دبئی سے مچھلیاں پکڑتے پکڑتے  ایران کی سرحد میں داخل ہوچکے ہیں۔ کافی تگ و دو کے بعد قریب چھ ماہ بعد کل منگل کو ایرانی عدالت نے سبھی  ماہی گیروں کی رہائی کے احکامات صادر کئے تھے اور رہائی کا پروانہ ملتے ہی سبھی لوگ دبئی کے لئے روانہ ہوگئے تھے۔

واضح رہے کہ جملہ 28 ماہی گیروں میں 18 کا تعلق ریاست کرناٹک کے ضلع اُترکنڑا سے ہے، پانچ کا تعلق مہاراشٹرا کے رتناگیری اور بقیہ پانچ بوٹس کے مالک ہیں، جن کا تعلق  دبئی سے ہے۔

ضلع اُترکنڑا کے 18 ماہی گیروں کی تفصیلات اس طرح ہے: بھٹکل سے  محمد شریف، عثمان بمبئیکر، عبداللہ ڈانگی، عتیق الرحمن گھارو، جعفر تڈلیکر، خلیل پانی بڈو، نعیم بھنڈی، ابراہیم مُلا، ایم انصار بابو ۔ کمٹہ سے یعقوب شمالی، الیاس امباڑی، عنایت شمالی، الیاس گھارو، اجمل شمالی، ابراہیم ہوڈیکر، ہوناور کے منکی سے مطلوب سارنگ، انکولہ سے قاسم شیخ اور شیرور، اُڈپی سے عبدالحسین۔

دبئی کے جُمیرا بندرگاہ پر ان کی بوٹ پہنچتے ہی دبئی میں موجود ان کے رفقاء میں خوشی کی لہر دوڑ گئی،  بوٹ سے اُترتے ہی ان کے دوست احباب نے  سبھی ماہی گیروں کو گلے سے لگایا اور خیر وعافیت کے ساتھ  آمد پر اللہ رب العزت کا شکر بجالایا۔

 

ایک نظر اس پر بھی

بھٹکل میں لنگر انداز 2کشتیاں پانی کے تیز بہاؤ کی وجہ سے ٹکرا گئیں;کشتیوں کو نقصان

موسلادھار بارش کے ساتھ تیز ہواؤں کی وجہ سے سمندر میں اونچی لہریں اٹھ رہی ہیں جس کا اثر بندگاہوں پر لنگر انداز کشتیوں پر بھی دیکھنے کو مل رہا ہے۔  ایسا ہی ایک واقعہ بھٹکل بندرگاہ پر بھی سامنے آیا جس میں ساحل سے ٹکرانے والی تیز سمندری لہروں اور شرابی ندی میں سیلاب آجانےسے پانی کا ...

شموگہ میں زبردست بارش کے نتیجے میں ہوناور کے شراوتی ندی کے اطراف رہنے والوں کے لئے بج گئی خطرہ کی گھنٹی؛ ڈیم سے کسی بھی وقت پانی چھوڑے جانے کی وارننگ

پڑوسی ضلع شموگہ میں زبردست بارش  کے بعد  لنگن مکّی ڈیم میں پانی کی سطح کافی حد تک بڑھ گئی ہے جس کو دیکھتے ہوئے کرناٹکا پاور کارپوریشن (کے پی سی ایل) کی طرف سے  ہوناور تعلقہ کے شراوتی ندی کے اطراف بسنے والوں کے لئے خطرے کا الارم بجا دیا گیا ہے اور ندی کے اطراف بسنے والے دیہات کے ...

بھٹکل: شمالی کینرا میں طوفانی بارش کا سلسلہ جاری۔کئی دیہات تالاب میں تبدیل، ندی کنارے بسنے والوں کے لئے چوکنا رہنے کی ہدایت

ضلع شمالی کینرا کے تقریباً تمام تعلقہ جات میں موسلا دھار بارش اور تیز ہواؤں کا سلسلہ جاری ہے جس کے نتیجے میں کئی دیہاتوں میں زرعی زمین ، ناریل کے باغات اور راستے وغیرہ تالاب میں تبدیل ہوگئے ہیں،  مسلسل ہورہی بارش کی وجہ سے عام زندگی بھی ٹھپ ہوگئی ہے جبکہ ندیوں کے کنارے بسنے ...

سرسی: اسمبلی اسپیکر کے دفتر کے سامنے  دھرنا۔شمالی کینر ا کو تقسیم کرکے سرسی کو علیحدہ ضلع تشکیل دینے کا مطالبہ

عوامی مفادات اور انتظامی سہولیات کے پیش نظر ضلع شمالی کینرا کو تقسیم کرکے الگ سے سرسی ضلع تشکیل دینے اور بنواسی کو تعلقہ کا درجہ دینے کا مطالبہ کرتے ہوئے کل 21ستمبر کوسرسی ضلع ہوراٹا سمیتی نے احتجاجی ریالی  نکالی اوراسمبلی اسپیکروشویشور ہیگڈے کاگیری کے دفتر کے باہر  دھرنا ...