گجرات میں کورونا وائرس انفیکشن سے 14 ماہ کے بچے کی موت

Source: S.O. News Service | Published on 8th April 2020, 3:38 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

جام نگر،8؍اپریل (ایس او نیوز؍ایجنسی) کورونا وائرس انفیکشن کی وجہ سے گجرات میں سب سے کم عمر بچے کی موت کا معاملہ پیش آیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ جام نگر میں کورونا وائرس کی وجہ سے 14 ماہ کے ایک بچے کی موت ہو گئی ہے۔ محکمہ صحت کےا فسران کا کہنا ہے کہ جب اس بچے کو اسپتال لایا گیا تھا تو حالت کافی سنگین تھی اور بچے کو وینٹی لیٹر پر رکھا گیا تھا اور اسے بچانے کی ہر ممکن کوشش کی گئی لیکن وہ بچ نہیں سکا۔

میڈیا ذرائع میں آ رہی خبروں کے مطابق بچے کے والدین کا تعلق اتر پردیش سے ہے جو گجرات کے کارخانوں میں بطور مزدور کام کرتے ہیں۔ انھوں نے کافی عرصہ سے کوئی سفر بھی نہیں کیا ہے اس لیے انتظامیہ کے لیے یہ پتہ لگانا مشکل ہو رہا ہے کہ آخر بچے میں کورونا انفیکشن ہوا کیسے۔ والدین میں بھی کورونا کی کوئی علامت دیکھنے کو نہیں مل رہی ہے، اس کے باوجود دونوں کو ضروری احتیاط برتتے ہوئے کوارنٹائن کے لیے بھیج دیا گیا ہے۔ جام نگر علاقے میں جس گاؤں میں یہ مزدور جوڑا رہتا تھا، اسے احتیاطاً پوری طرح سے بند کر دیا گیا ہے۔

بچے کے تعلق سے ایک سرکاری نوٹیفکیشن میں بتایا گیا ہے کہ اسے طبیعت خراب ہونے پر جام نگر کے ایک سرکاری اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔ اس کی حالت کافی خراب تھی اور دو دن قبل ہی بچے میں کورونا انفیکشن کی تصدیق ہوئی تھی۔ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ وائرس انفیکشن کی وجہ سے بچے کے کئی اعضاء نے کام کرنا بند کر دیا اور بالآخر اس کی موت ہو گئی۔

قابل ذکر ہے کہ پورے جام نگر ضلع میں اب تک بچے میں کورونا وائرس انفیکشن کا یہ پہلا معاملہ تھا۔ گجرات میں اس بچے میں سب سے کم عمر میں کورونا انفیکشن کا پتہ چلا تھا۔ چونکہ کمزور قوت مدافعت والے لوگوں پر کورونا کا زیادہ اثر ہوتا ہے، یہی وجہ ہے کہ اس بچے کی جان نہیں بچائی جا سکے۔

ایک نظر اس پر بھی

باپ کی املاک پر بیٹی کا بیٹے کی طرح یکساں حق: سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے منگل کو ایک دور رس نتائج والے اپنے فیصلہ میں کہا ہے کہ ہندو غیر منقسم خاندان کی آبائی املاک میں بیٹی کو بیٹے کی طرح ہی حقوق حاصل ہوں گے، یہاں تک کہ اگر ہندو جانشینی (ترمیمی) ایکٹ 2005 کے نفاذ سے قبل ہی اس کے والد کی موت کیوں نہ ہوگئی ہو۔

راجستھان میں سیاسی صلح، بی جے پی کے منھ پر زور کا طمانچہ: کانگریس

کانگریس نے راجستھان یونٹ میں کئی دنوں سے جاری تنازعہ کے سلجھنے پر ریاست کے عوام کو مبارکباد دیتے ہوئے اسے پارٹی اعلیٰ کمان کے ’سب کو ساتھ لے کر چلنے‘ کی پالیسی کا نتیجہ بتایا کہ اور کہا کہ یہی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو کرارا جواب ہے۔

یو جی سی امتحانات معاملے میں سماعت جمعہ تک ملتوی

سپریم کورٹ نے پیر کے روز حکومت سے یہ جاننے کی کوشش کی کہ کیا اسٹیٹ ڈیزاسٹر مینجمنٹ ایکٹ یونیورسٹی گرانٹس کمیشن (یو جی سی) کی ہدایت کو متاثر کر سکتا ہے؟ ۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے معاملے کی سماعت 14 اگست تک ملتوی کردی ۔

باپ کی املاک پر بیٹی کا بیٹے کی طرح یکساں حق: سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے منگل کو ایک دور رس نتائج والے اپنے فیصلہ میں کہا ہے کہ ہندو غیر منقسم خاندان کی آبائی املاک میں بیٹی کو بیٹے کی طرح ہی حقوق حاصل ہوں گے، یہاں تک کہ اگر ہندو جانشینی (ترمیمی) ایکٹ 2005 کے نفاذ سے قبل ہی اس کے والد کی موت کیوں نہ ہوگئی ہو۔

بنگلور: ٹرانسفرس کے احکامات ملتوی کرانے میں مبینہ طور پر با رسوخ اساتذہ کی لابی شامل، چار سال سے ڈگری کالجوں کے لکچررس کے تبادلے نہیں ہوسکے

ریاست کرناٹک کے سرکاری فرسٹ گریڈ کالجوں میں خدمات انجام دے رہے لکچررس کے تبادلے نہیں ہوسکے ہیں، جس کے سبب انہیں کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اس تعلق سے الزامات لگائے جارہے ہیں کہ  چند با رسوخ لکچررس کی طرف سے سیاسی اثر و رسوخ کا استعمال کرکے تبادلوں کی کاروائی ملتوی ...