دوبئی میں بھیانک سڑک حادثہ 12 ہندوستانی شہری سمیت17افراد ہلاک

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 8th June 2019, 2:23 PM | ملکی خبریں | خلیجی خبریں |

دوبئی-8/جون (ایس او نیوز) دوبئی میں جمعرات کی شام کو ہوئے ایک بھیانک سڑک حادثے میں 12 ہندوستانی شہریوں سمیت 17 افراد ہلاک ہوگئے جبکہ پانچ دیگر کی حالت نازک بتائی گئی ہے۔ ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق بس پر  مختلف ممالک کے کل 31مسافر سوار تھے۔

دوبئی پولیس نے بتایا کہ یہ حادثہ جمعرات شام قریب چھ بجے اس وقت  پیش آیا ہوا جب  بس عمان سے دبئی  آنے کےدوران ڈرائیور کے قابو سے باہر ہوگئی اور دوبئی  کے شیخ محمد بن زائد روڈ پر راشیدیہ میٹرو اسٹیشن کے نزدیک سڑک کے بائیں طرف واقع اونچے ٹریفک سگنل کے کھمبے سے تیز رفتاری کے ساتھ ٹکراگئی- پولس کے مطابق بس کے بائیں طرف والی سیٹوں پر سوار سبھی  مسافر   حادثے میں ہلاک ہوگئے جس میں  مختلف ممالک کے کم سے کم17شہری تھے جبکہ  پانچ دیگر سنگین طور پر  زخمی ہوگئے - پولس  نے بتایا کہ حادثے کے وقت بس پر  مختلف ممالک کے 31مسافر سوار تھے جن میں سے آدھے سے زیادہ مسافروں کا تعلق عمان سے تھا- بس پر سوار مسافر عید کی چھٹی منا کر عمان سے واپس دبئی   لوٹ رہے تھے ۔

دبئی میں واقعہ ہندوستانی قونصلیٹ نے ایک ٹوئٹ میں کہا ہے کہ دبئی میں ہندوستانی قونصلیٹ نے اس دردناک حادثے میں مارے گئے متاثرہ اہل خانہ کے تئیں اپنے گہرے دکھ کا اظہار کرتی ہے - قونصلیٹ کے دیگر افسروں نے متاثرہ لوگوں کے رشتہ داروں، پولیس افسروں اور اسپتال کے عملے سے ملاقات بھی کی ہے -اس درمیان ہندوستانی قونصلیٹ نے اس حادثے میں 8 ہندوستانیوں کے ناموں کی فہرست جاری کی ہے - جن میں راجا گوپالن، فیروز خان پٹھان، ریشما فیروز خان پٹھان، دیپک کمار، جمال الدین اراقک وٹھل، کرن جانی، واسو دیو اور تلک رام جواہر ٹھاکر شامل ہیں ۔ مرنے والوں میں دو مسافرپاکستان کے شہری بتائے گئے ہیں جن کی شناخت شفیق احمد اور شہزاد خان کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

حکومت  عمان کی ملکیت والی بس کمپنی مواصلات نے ٹوئٹر پر ایک بیان جاری کرتے ہوئے  مرنے والوں کے خاندانوں کے تئیں گہرے دکھ کا اظہار کیا  ہے  اور  اگلی اطلاع تک مسقط اور دوبئی کے درمیان روزانہ سروس کو معطل کرنے کا اعلان کیا  ہے -انہوں نے کہا کہ بس سروس کو معطل کرنے کا فیصلہ دوبئی کی سڑک اور ٹریفک اتھارٹی کے ساتھ صلاح ومشورہ کے بعد کیا گیا ہے۔

دوبئی پولیس کے سربراہ میجر جنرل عبداللہ المری نے حادثے پر گہرے دکھ کا اظہارکیا ہے۔ بتایا گیا ہے کہ قونصلیٹ کے افسروں نے کچھ متوفیوں کے اہل خانہ سے رابطہ کیا ہے اور تفصیلی اطلاعات کا انتظار کررہے ہیں تاکہ متاثرہ لوگوں کے اہل خانہ کو باخبر کیا جاسکے۔  قونصلیٹ کے مطابق چار زخمیوں کو ابتدائی طبی امداد کے بعد راشد اسپتال سے چھٹی دے دی گئی ہے -قونصلیٹ کے مطابق جیسے ہی مقامی افسروں سے تازہ تفصیلات حاصل ہوں گی ہم اسے اپ ڈیٹ کردیں گے - قونصلیٹ نے بتایا کہ ہمارے افسر راشد اسپتال، دوبئی میں تعاون کیلئے موجود ہیں - ہمارا ہیلپ لائن 565463903 971 + پر یا ہمارے افسر سنجیو کمار موبائل نمبر+971-504565441پر کسی بھی سوالات کا جواب دے سکتے ہیں -ہندوستانی قونصلیٹ نے متاثرہ اہل خانہ کے تئیں گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے تعزیت پیش کیا ہے - قونصلر جنرل نے دیگر افسروں اور حادثے سے متاثر لوگوں کے رشتہ داروں، انتظامیہ ا ور پولیس افسروں سے دیر تک ملاقات کی-

وزیرخارجہ کا اظہارافسوس:وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ہندوستانی مشن کی جانب سے ہلاک شدگان کے گھروالوں کو پوری مدد مہیا کرانے کا بھروسہ دلایا ہے -ڈاکٹر جے شنکر نے ٹویٹ کرکے کہاکہ دبئی  میں ہوئے  بس حادثے سے میں  بہت دکھی ہوں -دبئی میں واقع ہندوستانی قونصل خانہ لواحقین کی مدد کررہا ہے -قونصل خانے کے افسر راشیدیا پولیس تھانے اور مردہ گھر میں موجود ہیں اور ہلاک شدگان کے لواحقین کو ہرممکن مدد مہیا کرارہے ہیں -انہوں نے کہا کہ وہ جلد از جلد خانہ پری مکمل کرانے کی کوشش کررہے ہیں تاکہ ان کی نعشوں کو جلد ملک واپس لایا جاسکے -

ایک نظر اس پر بھی

پاکستان میں مندر کی تعمیر پر روک رجعت پسندانہ اقدام: التجا مفتی

 پی ڈی پی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کی صاحبزادی التجا مفتی نے پاکستان کے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں ایک مندر کی تعمیر پر جاری تنازعے کے حوالے سے کہا ہے کہ مندر کی تعمیر پر روک ایک اسلامی فلاحی ریاست کے مذہبی آزادی کے تصور کے منافی ہے۔

حجاج کے انتخاب کا معیار اس سال کیا ہوگا؟

سعودی عرب کی وزارتِ حج وعمرہ نے سوموار کو اس سال فریضۂ حج ادا کرنے والے خوش نصیبوں کے انتخاب کے معیار کا اعلان کردیا ہے اور ان کے انتخاب میں صحت کے معیارات کو اوّلین ترجیح اور مرکزی حیثیت حاصل ہوگی۔

دبئی سے بھٹکل و اطراف کے 181 لوگوں کو لے کر آج آرہی ہے دوسری چارٹرڈ فلائٹ؛ رات کو مینگلور ائرپورٹ میں ہوگی لینڈنگ

کورونا وباء اور اس کے بعد ہوئے لاک ڈاون سے  دبئی اور امارات میں پھنسے ہوئے 181 لوگوں کو لے کر آج دبئی سے دوسری چارٹرڈ فلائٹ مینگلور پہنچ رہی ہے۔ اس بات کا اطلاع بھٹکل کے معروف اورقومی سماجی ادارہ مجلس اصلاح و تنظیم کے نائب صدر  جناب عتیق الرحمن مُنیری نے دی۔