معہد الامام حسن البنا الشہید بھٹکل سے 12/ طالبات نے حاصل کی حفظ قرآن کی سعادت

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 2nd May 2019, 3:55 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 2/مئی (ایس او نیوز) معہد الامام حسن البنا الشہید بھٹکل کے زیراہتمام چل رہے جامعۃ الطیبات کے شعبہ حفظ سے امسال 12/ طالبات نے حفظ قرآن کی سعادت حاصل کی اس موقع پر اُن کے اعزاز میں ایک پروگرام بھی منعقد کیا گیا جس میں حفظ مکمل کرنے والی تمام طالبات کا قران ختم کرایا گیا۔ اس بات کی اطلاع  ادارہ کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز میں دی گئی ہے۔

پریس ریلیز کے مطابق مؤرخہ 23/شعبان 1440ھ؁ مطابق 29/اپریل 2019ء؁ بروز پیر  کو دوپہر ڈھائی بجے پروگرام کا آغاز ہوا۔ جس میں طالبات نے پرنم آواز میں حمد ونعت نیز تقریر یں پیش کیں ۔ اس موقع پر  مقامی زبان میں معاشرہ کے تعلق سے مکالمہ بھی پیش کیا گیا۔  معہد کی پرنسپل نے  معہد کا سالانہ رپورٹ پیش کیا، انہوں  نے ہی  مجلس کی نظامت کے فرائض بھی انجام دئے۔بعد نماز عصر پانچ بجے حضرت مولانا محمد صادق صاحب اکرمی دامت برکاتھم نے مختصر بیان کے بعدامسال حافظ ہونے والی طالبات کو قرآن ختم کرایا جس کو تمام حافظات نے  ایک آواز کے ساتھ پڑھا جبکہ  اخیر میں دعائے ختم قرآن فرمائی۔

معہد الامام حسن البناء الشہید کے بانی و  ناظم  مولانا ناصر سعید اکرمی  نے  اس موقع پراخبارنویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے امسال سابقہ سالوں سے بھی زائد تعداد میں طالبات کے حفظ قران مکمل کرنے پر  خوشی کا اظہار کیا اور   دُعا فرمائی کہ اللہ پاک اس جلسے کو بے انتہا قبول فرمائے اور اس سال حافظ ہونے والی طالبات کو قرآن کی برکات سے نوازے،ان کے والدین کے لیے ذخیرہ  آخرت بنائے ان کے حفظ کو زندگی کی آخری سانس تک باقی رکھے۔

اخیر میں تواضع کے ساتھ مغرب کی اذان سے پہلے پہلے جلسہ برخاست ہوا،اس سال حافظ ہونے والی طالبات کے نام یہ ہیں:
(۱) راسخہ بنت محمد زبیر رکن الدین
(۲)ہالہ بنت عبدالحکیم رکن الدین نواب
(۳) ام ھانی بنت باشاہ سدی احمدا
(۴) رجاء بنت کفایت اللہ صدیقہ
(۵) مہناز بنت محمد اشرف رکن الدین
(۶) الفیٰ بنت محمد اشرف معلم
(۷) خدیجہ بنت عبدالرحمن اکرمی
(۸) عائشہ بنت عبدالماجد صدیقہ
(۹) فریحہ بنت محمد اکرم اکرمی
(۱۰) عامرہ تزئین بنت عظمت اللہ سعدا
(۱۱) حسینہ ریحاب بنت عبدالغنی محتشم
(۱۲) وثقیٰ بنت محمد اشرف معلم

ایک نظر اس پر بھی

کاروار میں قائم ہوئی بچوں کے لئے ’چائلڈ فرینڈلی‘ خصوصی عدالت؛ کرناٹکا ہائی کورٹ جسٹس بی اے پاٹل کے ہاتھوں افتتاح

بچوں کے ساتھ ہوئے جنسی ہراسانی اور عصمت دری کے مقدمات پوکسو قانون کے تحت نپٹانے کے لئے ریاست کی تیسری ’چائلڈ فرینڈلی‘ خصوصی عدالت کاروار میں قائم کی گئی۔اس کا افتتاح کرناٹکا ہائی کورٹ کے جسٹس بی اے پاٹل کے ہاتھوں عمل میں آیا۔

کاروار میں ماہی گیروں کا احتجاج ہوا ختم۔ سپریم کورٹ کے وکیل نے کی ساحل سمندر کو بچانے کے لئے متحد ہونے کی اپیل

ساگر مالا منصوبے کے تحت کاروار تجارتی بندرگاہ کی دوسرے مرحلے کی توسیع اور ٹیگور ساحل پرسمندری موجوں کو روکنے والی دیوار تعمیر کیے جانے کے خلاف مقامی ماہی گیروں اور عوام نے جو احتجاج اور دھرنا شروع رکھا تھا، سنیچر کے دن اس کو ختم کردیا گیا کیونکہ ہائی کورٹ سے تعمیری کام پر ...

کاروار میں 71ویں یومِ جمہوریہ کا جشن : ضلع انچارج وزیر کے ہاتھوں پرچم کشائی ، کہا؛ دستور کی وجہ سے ہی ہرایک شہری کو مساوی حق حاصل ہے

ڈاکٹر بی آر امبیڈکر کی قیادت میں تشکیل دئیے گئے دستور کی وجہ سے ہی ایک عام آدمی سمیت خواتین وغیرہ سیاست وغیرہ میں شریک ہوکر اعلیٰ مقام حاصل کرنا ممکن ہونے کا وزیر برائے خواتین اور ضلع نگراں کار وزیر ششی کلا جولے نے خیال ظاہر کیا۔

بھٹکل میں یوم ِ جمہوریہ کی خوب صورت تقریب : بھارتی دستور کی وجہ سے ہی شہری راجابنے ہیں : اسسٹنٹ کمشنر ساجد ملا کا خطاب

تعلقہ انتظامیہ، تعلقہ پنچایت ، بھٹکل میونسپالٹی اور پٹن پنچایت جالی کے اشتراک سے نوائط کالونی میں واقع تعلقہ کھیل میدان میں26جنوری 2020بروز اتوار کو  71واں یومِ جمہوریہ کا جشن بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر ساجد ملا کی پرچم کشائی کے ذریعے  دھوم دھام سے منایاگیا ۔

یوم جمہوریہ کے موقع پر پس مرگ پدما وبھوشن ایوارڈ پانے والوں میں شامل ہیں اڈپی پیجاورمٹھ سوامی اور جارج فرنانڈیز

یوم جمہوریہ کے موقع پر مرکزی حکومت کی طرف سے مختلف شعبہ ہائے زندگی میں نمایاں خدمات انجام دینے والی شخصیات کو پدما بھوشن اور پدماوبھوشن جیسے اعزازات سے نوازا جاتا ہے۔ امسال جن شخصیات کو پس مرگ پدماوبھوشن ایوارڈ سے نوازا گیا ہے اس میں پیجاور مٹھ کے سوامی اور سابق مرکزی وزیر ...

کاروار میں قائم ہوئی بچوں کے لئے ’چائلڈ فرینڈلی‘ خصوصی عدالت؛ کرناٹکا ہائی کورٹ جسٹس بی اے پاٹل کے ہاتھوں افتتاح

بچوں کے ساتھ ہوئے جنسی ہراسانی اور عصمت دری کے مقدمات پوکسو قانون کے تحت نپٹانے کے لئے ریاست کی تیسری ’چائلڈ فرینڈلی‘ خصوصی عدالت کاروار میں قائم کی گئی۔اس کا افتتاح کرناٹکا ہائی کورٹ کے جسٹس بی اے پاٹل کے ہاتھوں عمل میں آیا۔

جماعت اسلامی ہند بیدر کی جانب سے پروگرام ''مکی حالات اور موجودہ حالات۔ تقابل اور لائحہ عمل'' کا انعقاد

تاریخ اسلام کا مطالعہ کریں تو اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کے مکی دور میں دو اہم چیزیں نمایاں طور پر پر دیکھنے کو ملتی ہیں، پہلی چیز دعوت اور دوسری چیز صبرواستقلال ہے، جو ایک دوسرے سے مربوط ہے۔ مکی دور میں جس وقت رسول صلی اللہ علیہ وسلم  نے اپنی نبوت کا اعلان کیا تھا اس سے قبل ...

بھٹکل میں یوم ِ جمہوریہ کی خوب صورت تقریب : بھارتی دستور کی وجہ سے ہی شہری راجابنے ہیں : اسسٹنٹ کمشنر ساجد ملا کا خطاب

تعلقہ انتظامیہ، تعلقہ پنچایت ، بھٹکل میونسپالٹی اور پٹن پنچایت جالی کے اشتراک سے نوائط کالونی میں واقع تعلقہ کھیل میدان میں26جنوری 2020بروز اتوار کو  71واں یومِ جمہوریہ کا جشن بھٹکل اسسٹنٹ کمشنر ساجد ملا کی پرچم کشائی کے ذریعے  دھوم دھام سے منایاگیا ۔

دہلی کے راج پتھ پر دھوم دھام سے71 واں جشن یوم جمہوریہ منایا گیا دنیانے فوج کی طاقت، ہندوستان کی شان و شوکت اور ثقافتی ورثے کا کیا مشاہدہ

صدر رام ناتھ کووندنے اتوار کو 71 ویں یوم جمہوریہ کے موقع پر راج پتھ پرسلامی لی۔لیفٹیننٹ جنرل مستری، جنرل آفیسرکمانڈنگ، ہیڈکوارٹر دہلی ایریا کی طرف سے اس سال یوم جمہوریہ کی پریڈ کی قیادت کی گئی۔ اس دوران راج پتھ پر سخت سیکورٹی کے درمیان ملک کے وزیر اعظم نریندر مودی، مہمان خصوصی ...

تلنگانہ میں بھی شہریت قانون کے خلاف اسمبلی میں تجویز لانے پر کیا جارہا ہے غور؛ وزیراعلیٰ نے  کہا ضرورت پڑی تو تاریخی اجلاس عام بھی کریں گے

شہریت ترمیم قانون (سی اے اے) پارلیمنٹ سے پاس ہونے کے بعد تنازعہ رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے۔کیرلا، پنجاب اور راجستھان میں اس قانون کے خلاف اسمبلی میں تجویز  پاس ہو چکی ہے۔اس کڑی میں اب نئی ریاست تلنگانہ کا بھی شمار ہونے والا ہے۔

بیدر میں 71ویں جشن یومِ جمہوریہ کے موقع پر پولس گراونڈ میں ضلع انچارج منسٹر پربھو چوہان  کے ہاتھوں پرچم کشائی ؛ آٹونگر سمیت کئی علاقوں میں بھی منعقد کی گئی تقریب

آج پولیس پریڈگراؤنڈ پر بیدر ضلع کا مرکزی جشن یومِ جمہوریہ ہند پروگرام کا انعقادعمل میں آیا۔بیدر ضلع انچارج منسٹر مسٹر پربھو چوہان  نے پرچم کشائی کی رسم انجام دینے کے بعد پولیس جوانوں سے سلامی لی۔