مدھیہ پردیش کے مشنری اسکول میں توڑ پھوڑ معاملے میں 11 گرفتار

Source: S.O. News Service | Published on 8th December 2021, 12:22 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

ودیشا، 8؍دسمبر  (ایس او نیوز؍ایجنسی) بجرنگ دل، وشو ہندو پریشد سمیت دیگر انتہا پسند ہندو تنظیموں نے مدھیہ پردیش کے شہر ودیشا کے سینٹ جوزف کانوینٹ اسکول میں توڑ پھوڑ کی مشنری اسکول میں مبینہ طور پر تبدیلی مذہب کے معاملے میں پولیس نے 11 ملزمان کو گرفتار کیا ہے، جب کہ 50 کے خلاف مقدمہ درج کرکے ان کی تلاش جاری ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق کل رات تک احتجاج میں شامل 11 افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ اس معاملے میں 50 لوگوں کو ملزم بنایا گیا ہے۔ فی الحال علاقے کی صورتحال پولیس کے کنٹرول میں ہے تاہم آس پاس کے علاقوں کی پولیس فورس کو طلب کر لیا گیا ہے۔ چرچ اور اسکول کی سیکیورٹی کے لیے پولیس فورس تعینات کردی گئی ہے۔ تحصیل گنج بسودہ کے کانونٹ اسکول میں 8 بچوں کے مذہب تبدیل کرنے کا معاملہ سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ایک ویڈیو کے ذریعے سامنے آیا، جس پر شہر میں اسکول انتظامیہ کے خلاف احتجاج ہونے لگا۔ کئی تنظیموں اور سوسائٹیوں نے کارروائی کے لیے میمورنڈم بھی دیے ہیں۔ 6 دسمبر کو کچھ تنظیموں نے اس کے خلاف احتجاج بھی کیا۔ وہیں اسکول منیجر نے بچوں کے مذہب تبدیل کرنے کے معاملے کو یکسر مسترد کردیا۔ اسکول انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ان کی سوسائٹی کے بچوں کی مذہب سے متعلق رسم ادا کرنے کی ویڈیو کو لوگوں نے غلط طریقے سے سمجھاہے۔

اسکول انتظامیہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ معاملے کی تحقیقات کے لیے موصول ہونے والے خط کا جواب دیتے ہوئے تفتیشی افسران کو 8 بچوں کی فہرست دیتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ ان بچوں کا تعلق مسیحی برادری سے ہے۔ دوسری جانب پولیس سپرنٹنڈنٹ مونیکا شکلا نے کہا کہ ریونیو حکام کی جانب سے اس معاملے کی مکمل جانچ کی جا رہی ہے۔ تحقیقات کے بعد معاملے کی اصل حیثیت واضح ہوسکے گی۔ انہوں نے کہا کہ اسکول کے بچوں کے اہل خانہ کی جانب سے ان کے بچوں کے مذہب تبدیل کرنے کے حوالے سے کوئی شکایت درج نہیں کرائی گئی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

بی جے پی میں شامل ہونے والے اسیم ارون پر اکھلیش یادو کا حملہ ’کیسے کیسے لوگ وردی میں چھپے بیٹھے تھے‘

اتر پردیش میں اسمبلی انتخابات سے قبل سابق آئی پی ایس اسیم ارون کے بی جے پی کی رکنیت حاصل کرنے پر سماجوادی پارٹی کے سربراہ اکھلیش یادو نے سخت ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو افسران پانچ سال تک بی جے پی کے لئے کام کر رہے تھے آج انہوں نے اپنی اصلیت ظاہر کر دی۔ انہوں نے کہا کہ وہ اس ...

دارا سنگھ سماجوادی پارٹی میں شامل، یوگی کے تیسرے وزیر اکھلیش کی سائیکل پر سوار

 سوامی پرساد موریہ کے نقش قدم پر چلتے ہوئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو خیر آباد کہنے والے یوگی حکومت کے سابق وزیر دارا سنگھ چوہان نے اتوار کے روز سماج وادی پارٹی (ایس پی) کا دامن تھام لیا۔

جیل سے رہا ہونے کے بعد رامپور پہنچے عبد اللہ اعظم ’ہم پر جتنا ہو سکتا تھا ظلم ہوا، میرے والد کی جان کو خطرہ‘

اتر پردیش میں انتخابات سے قبل سماجوادی پارٹی کے قدآور لیڈر اعظم خان کے بیٹے عبداللہ اعظم کو بڑی راحت ملی ہے۔ تقریباً 23 مہینے بعد جیل سے رہا ہونے کے بعد عبد اللہ اعظم نے حکومت اور انتظامیہ پر جم کر نشانہ لگایا۔

کانگریس لیڈران نے مرکزی حکومت پر لگایا پسماندہ ہندو سماج اورمظلوم طبقے کی ہتک کرنے کا الزام

ہرسال یوم جمہوریہ کی تقریب میں ریاستوں کی نمائندگی کرنےوالی نمائش  کا اہتمام ہوتاہے۔ اس مرتبہ  ریاست کیرلا کی جانب سےبھیجے گئے انقلابی شخصیت ، سماجی مصلح شری نارائن گرو مجسمہ کو نمائش میں شامل کرنے سے مرکزی حکومت نے انکار کیاہے۔ اس طرح  مرکزی حکومت نے بھارت کی تاریخی ، اہم ...

راگھو چڈھا کا الیکشن کمیشن پر الزام، کہا،الیکشن کمیشن کسی پارٹی کی مددکر رہا ہے

راگھو چڈھا نے آج پریس کانفرنس کرتے ہوئے الیکشن کمیشن پر بڑا الزام لگایا ہے۔ انہوں نے کہاہے کہ چند روز قبل ہم نے پریس کانفرنس کے ذریعے بتایا تھا کہ الیکشن کمیشن رولز میں تبدیلی کرکے نئی سیاسی جماعت کو رجسٹر کرناچاہتاہے۔ الیکشن کمیشن اس پارٹی کو انتخابی نشان دینے جا رہا ہے۔ ...

دہلی میں صبح سے دھند کی چادر، سردی کا ستم جاری

 قومی راجدھانی دہلی اور اس سے ملحقہ علاقوں کو ہفتہ کو دھند نے اپنی لپیٹ میں لے لیا اور سردی کی لہر جاری رہی۔ محکمہ موسمیات کے مطابق راجدھانی اور این سی آر میں اگلے چار دنوں تک گھنی سے درمیانی دھند چھائی رہ سکتی ہے۔

جامعہ اسلامیہ بھٹکل کے ہونہار فرزند کابڑا کارنامہ ۔ انٹرنیشنل سطح پر روشن کیا بھٹکل کانام

کہتے ہیں کہ درخت اپنے پھل سے پہچانا جاتا ہے اور تعلیمی ادارے اپنے فارغین کی لیاقت اور صلاحیت سے پہچانے جاتے ہیں، ہندوستان میں بڑے تعلیمی اداروں کا نام کچھ شخصیات نے ہی روشن کیا ہے ،  الحمد للہ بھٹکل کے دینی و عصری تعلیم گاہوں کے طلبہ و طالبات بھی بڑی حد تک اپنی مادر علمی کی نیک  ...