دہلی: 106 سالہ مختار احمد نے کورونا کو دی شکست، 1918 میں اسپینش فلو کا بھی نہیں ہوا تھا اثر

Source: S.O. News Service | Published on 10th July 2020, 9:50 PM | ملکی خبریں |

نئی دہلی،10؍جولائی(ایس او نیوز؍ایجنسی) کووڈ-19 سے خوف زدہ ہندوستان میں ایک 106 سالہ شخص نے کورونا کو شکست دے کر سبھی کو حیران کر دیا ہے۔ دہلی کے رہنے والے اس شخص کا نام مختار احمد ہے جو کورونا پازیٹو پائے جانے کے بعد اسپتال میں داخل کرائے گئے تھے اور مناسب علاج کے ساتھ ساتھ صحیح دیکھ بھال نے انھیں ایک بار پھر اپنی فیملی کے ساتھ رہنے کا موقع میسر کر دیا۔ ضعیفوں پر کورونا کے مضر اثرات کی خبروں کے درمیان اس مرض پر مختار احمد کی فتح نے یہ ثابت کر دیا ہے کہ اللہ جس کو چاہے طویل عمر عطا کرتا ہے اور کوئی بھی مہلک بیماری اس کا بال بیکا نہیں کر سکتا۔

اس وقت دہلی میں کورونا انفیکشن کا اثر بہت زیادہ دیکھنے کو مل رہا ہے اور روزانہ کئی افراد کی موت ہو رہی ہے۔ ایسے میں 106 سالہ مختار احمد کی اسپتال سے گھر واپسی یقیناً ایک بڑی خوشخبری کی طرح ہے۔ گھر لوٹنے کے بعد مختار احمد نے خود میڈیا سے کہا کہ "میں نے امید نہیں کی تھی کہ میں بچوں گا لیکن صحیح علاج کی وجہ سے اب میں صحت مند ہوں۔" مختار احمد کے گھر والے بھی ان کی گھر واپسی سے کافی خوش ہیں۔ ان کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ وہ بالکل ناامید ہو چکے تھے کیونکہ کورونا ضعیفوں کے لیے زیادہ خطرناک ثابت ہو رہا ہے اور 106 سال کی عمر میں اس وائرس کو شکست دینا خوش آئند ہے۔ گھر والے خدا کا بار بار شکر ادا کرتے ہیں کہ مختار احمد کورونا انفیکشن سے جنگ جیتنے میں کامیاب ہو گئے۔

یہاں قابل ذکر ہے کہ مختار احمد نے صرف کورونا وبا کا ہی دور نہیں دیکھا ہے بلکہ 1918 میں اسپینش فلو کے دور کو بھی دیکھا ہے۔ ان کے اہل خانہ بتاتے ہیں کہ جب اسپینش فلو نے قہر برپا کیا تھا تو وہ صرف 4 سال کے تھے۔ لیکن مختار احمد کا کہنا ہے کہ انھوں نے اپنی زندگی میں کورونا جیسی وبا نہیں دیکھی۔ 106 سالہ عمر میں کورونا سب سے خطرناک بیماری ہے جس کا انھوں نے سامنا کیا۔

ایک نظر اس پر بھی

راجستھان: ’جے شری رام‘ نہ کہنے پر بزرگ مسلم ڈرائیور کے ساتھ مار پیٹ، پاکستان جانے کو کہا!

 راجستھان کے سیر میں ایک 52 سالہ آٹو رکشہ ڈرائیور غفار احمد کچاوا کو ’مودی زندہ آباد‘ اور ’جے شری رام‘ نہ بولنے پر بے رحمی سے پیٹا گیا۔ پولیس نے ہفتہ کے روز یہ اطلاع دی۔ متاثرہ ڈرائیور نے بتایا کہ ان پر حملہ کرنے والے دو لوگوں نے ان کی داڑھی کھینچی اور پاکستان جانے کو کہا۔

ہندوستان: کورونا کے نئے معاملہ ایک دن میں65 ہزار سے پار، اب تک کے سب سے زیادہ

ملک میں کورونا وائرس کی دن بدن خراب ہوتی صورتحال کے درمیان سنیچر کی دیر رات تک65,156نئے معاملے سامنے آنے سے متاثرین کی تعداد 21.50لاکھ سے زیادہ ہوگئی اور 875مزید لوگو کی موت سے مرنے والوں کی تعداد 43,446تک پہنچ گئی لیکن راحت کی بات یہ ہے کہ مریضوں کے صحت یاب ہونے کی شرح 69فیصد کے قریب پہنچ ...

ایئر انڈیا کا طیارہ گرنے کی ایک نہیں کئی وجوہات

ماہرین کا ماننا ہے کہ کیرالہ کے کوزی کوڈ میں جمعہ کی رات ہوئے جہاز حادثے میں تیز بارش کے ساتھ کئی وجوہات رہی ہوں گی۔ائر انڈیا ایکسریس کا بوئنگ 737-800 جہاز جب کوزی کوڈ پہنچا اس وقت وہاں تیز بارش ہورہی تھی۔ جب رن وے گیلا ہوتا ہے تو جہاز کو اترنے کے بعد رکنے کے لئے رن وے پر معمول کے ...