کاروار میں ایک نوجوان جھیل میں غرق ہوکر ہلاک

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 11th September 2018, 12:23 PM | ساحلی خبریں |

کاروار11/ستمبر (ایس او نیوز) تعلقہ کے امدلّی کی ایک جھیل سے ایک نوجوان کی نعش آج منگل صبح برآمد کی گئی، جس کے تعلق سے بتایا گیا ہے کہ وہ کل پیر کو اپنے دوستوں کے ساتھ تیرنے کے دوران غرق ہوکر لاپتہ ہوگیا تھا۔

برآمدکی گئی نعش کی شناخت  ساگر چھترپتی ہری کانت (27) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔

ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق  کل پیر کو تین دوست امدلّی میں واقع کپّے ہونڈا میں تیرنے کی غرض سے گئے تھے، جس کے دوران ایک نوجوان غرق ہوگیا۔ مگر دوستوں نے  غرق ہونے کی بات کسی کو بھی نہیں بتائی۔ بتایا گیا ہے کہ ساگر جب رات کو واپس گھر نہیں لوٹا تو  گھروالے پریشان ہوکر اس کی تلاش میں جٹ گئے، جس کے بعد آج صبح ساگر کی نعش متعلقہ جھیل سے برآمد کی گئی۔

کاروار مضافاتی پولس تھانہ میں معاملہ درج کیا گیا ہے اور پولس مزید چھان بین کررہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

منگلورو کے گمشدہ نوجوان کی لاش تملناڈو میں دستیاب۔ قتل کیے جانے کا شبہ

گنجی مٹھ کے رہنے والے سمیر (35سال) کے والد احمد نے پولیس میں گم شدگی کی شکایت درج کی گئی تھی اور بتایا گیا تھا کہ اپنی بیوی ا وربچی کو ساتھ لے کر ہوائی جہاز کے ذریعے بنگلورو جانے کے بعد وہ لاپتہ ہوگیا ہے اور اس کی بیوی ااپنی بچی کے ساتھ کاپ میں واقع اپنے مائیکے واپس پہنچ گئی تھی۔

بھٹکل تعلقہ میں 24 ستمبر سے ’’سوچھیتا ہی سیوا‘‘ صفائی مہم کا آغاز:تعلقہ انتظامیہ نے کی  عوام سے شرکت کی اپیل

24ستمبر سے 08اکتوبر 2018تک تعلقہ بھر میں تعلقہ انتظامیہ ، بھٹکل بلدیہ اور جالی پنچایت کی طرف سے مشترکہ طورپر  ’’ سوچھیتا ہی سیوا ‘‘  کے عنوان سے عوامی خدمت اور پاکی صفائی پروگراموں کا انعقاد کئے جانے کی تحصیلدار کی طرف سے جاری کردہ پریس ریلیز میں جانکاری دی گئی ہے۔