ایودھیا: رام کی سب سے بڑی مورتی نصب کرنے کی یوگی کی کوشش 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th October 2017, 11:50 PM | ملکی خبریں |

لکھنؤ:10؍اکتوبر ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا ) ایودھیاکے رام مندر کا مسئلہ اگرچہ سپریم کورٹ میں زیر التوا ہو؛ لیکن متنازع مقام سے تھوڑی ہی دور سریو ندی کے کنارے اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ رام کی ایک بڑی مورتی نصب کریں گے. یہ کہا جا رہا ہے کہ یہ دنیا میں رام کا سب سے بڑا مجسمہ ہوگا ۔ اس کے لئے،حکومت این جی ٹی سے بھی اجازت طلب کرے گی۔ رام کے مجسمہ کی تنصیب یوگی حکومت کی’’ زیر تعمیر رام مندر‘‘ منصوبہ بندی کا ایک حصہ ہو گی۔یہی نہیں اس بار دیوالی کے موقع پر جسے رام کے ایودھیا واپسی کا دن بھی سمجھا جاتا ہے، یوگی آدتیہ ناتھ خود ان کے ’’تصوراتی آمد‘‘ کے استقبال کے لئے موجود ہوں گے ۔ قیاس ہے اس بار ایودھیا کو دیوالی کے موقع پر ویسے ہی سجایا جائے گا جیسا کہ دیوالی کے دن لنکا کے راجہ راون پر فتح حاصل کرنے کے بعد سجایا گیا تھا ۔ اس موقع پر رام کی ایودھیا واپسی کی تھیم پر ایک خوبصورت شوبھا یاترا بھی نکالی جائے گی۔ جو چھوٹی دیوالی کے دن تقریبا دوپہر 2 بجے کے متصل ایودھیا میں داخل ہوگی ۔ اس کے بعد وزیراعلی یوگی اور ان کے کابینہ کے وزرا نے رام کی ’’ پوجا ارچنا‘‘ بھی کریں گے ۔ اس موقع پر انڈونیشیا اور تھائی لینڈ کے فنکار رام کے ایودھیاواپسی کے پس منظر میں ایک اسٹیج شو بھی کریں گے جو سریو ندی کے کنارے منعقد کیا جائے گا ، جہاں اس کو مذہبی جوش و خروش کے ساتھ سجایا جا رہا ہے ۔ رام کے پیڑی پر ایک لک لاکھ ستر ہزار دیئے روشن کئے جائیں گے ۔واضح ہو کہ یوگی آدتیہ ناتھ کے وزیر اعلی بننے کے بعدایودھیا مستقل سرخیوں میں ہے اور یوگی از خود تین مرتبہ اس کا دورہ کر چکے ہیں ۔ مصدقہ اطلاعات کے مطابق ایودھیا میں رام سے متعلق تمام جگہوں کوسجانے کی منصوبہ بندی کی گئی ہے۔یہ بھی سنسنی خیز انکشاف ہے کہ یوگی کے وزیر اعلی بننے کے بعد اب تک ایودھیا میں رام مندر بنانے کے لئے 14 ٹرک پتھر پہنچ چکا ہے ۔ رام مندر ورکشاپ میں نقاشی کا عمل فن تعمیر کے ماہرین کے ذریعہ مسلسل چل رہاہے۔ جب کہ عدلیہ کی طرف سے رام مندر کے متعلق فیصلہ ابھی بھی زیرغورہے ۔

ایک نظر اس پر بھی

مودی پر لالو کا وار ، کیا سخت تبصرہ ،چائے نہیں چرس بیچتے تھے مودی ،جے شاہ کے بہانے اینٹی کرپشن کے دعووں پرراجدلیڈرنے نشانہ پرلیا

آرجے ڈی صدر لالو پرساد مسلسل وزیر اعظم نریندر مودی اور بی جے پی پر حملہ کر رہے ہیں۔ اب انہوں نے وزیر اعظم پر سخت تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ چائے نہیں چرس بیچتے تھے ۔

گجرات میں پھر وکاس کی شوشہ بازی ، روڈ شو میں بھیڑ کم ،ہماری سرکار وکاس کیلئے پابندعہد : مودی 

ملک میں وکاس کے نام پر وناش نے اپنے پاؤں پسار لیے ، نوٹ بندی ملک کی معیشت کو لے ڈوبی اور رہی سہی کسر جی ایس ٹی نے پوری کر دی؛ لیکن ان تمام حالات کے بعد بھی گجرات اسمبلی الیکشن کے تناظر میں وکاس کا کارڈ کھیلا جا رہا ہے۔

وسندھرا کے بل پر راہل کا تیکھا طنز،ہم اکیسویں صدی میں جی رہے ہیں ، یہ 2017ہے 1817نہیں : راہل گاندھی

کانگریس کے نائب صدر راہل گاندھی نے ایک متنازع آرڈیننس کے متعلق راجستھان کی وزیراعلی وسندھرا راجے کو ٹوئٹ کرتے ہوئے کہاکہ میڈم! ہم اکیسویں صدی میں جی رہے ہیں یہ 2017ہے ،1817نہیں ہے ۔