نسلی تبصرہ معاملے پر مکند کی حمایت میں اترے کپتان کوہلی اور ٹیم انڈیا

Source: S.O. News Service | Published on 11th August 2017, 7:04 PM | ملکی خبریں | اسپورٹس |

نئی دہلی،11اگست(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ٹیم انڈیا کے اوپننگ بلے بازابھینو مکند حال ہی میں نسلی تبصرے کے شکار بنے تھے۔ سوشل میڈیا پر ان کی تصاویر پر کچھ لوگوں نے انتہائی  شرمناک تبصرے کئے تھے، اگرچہ مکند نے اس کا جواب مثبت انداز میں دینے کا فیصلہ کیا۔مکند نے نہ صرف اپنے بلکہ ہر اس شخص جس کے ساتھ کبھی نہ کبھی اس طرح کا واقعہ ہوا ہے، ان میں سے سب کے لئے آواز اٹھائی۔ انہوں نے ایک حساس ٹوئٹ کے ذریعے اپنے جذبات کا اظہارکیا اور اب ان کی حمایت میں کپتان وراٹ کوہلی سمیت ٹیم انڈیا کے کئی کھلاڑی اتر آئے ہیں۔کپتان کوہلی نے ٹویٹ کیا کہ بہت اچھا کہا ابھینو۔ مکند نے سوشل میڈیا پر نسل پرستانہ تبصرے پر کرارا جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ اپنی جلد کے رنگ کی وجہ سے وہ خود برسوں سے یہ ذلت جھیلتے آئے ہیں۔صرف کوہلی ہی نہیں روی چندرن اشون اور ہاردک پانڈیا نے بھی ان کی حمایت کی۔ اشون نے لکھا کہ پڑھیں مزیدلیں، اسے بڑا مسئلہ نہیں بنائیں کیونکہ یہ کسی کے جذبات ہیں۔ یہاں تک کہ بیڈمنٹن کھلاڑی جوالہ گٹا بھی مکند کا بیان پڑھنے کے بعد ان کی حمایت میں آئیں۔مکند نے اپنے ٹویٹر پیج پر ایک بیان میں جلد کے رنگ کو لے کر بھیجے گئے کچھ پیغامات پر مایوسی ظاہر کی ہے۔ مکند نے سری لنکا کے خلاف سیریز کے پہلے ٹیسٹ کی دوسری اننگز میں 81 رنز بنائے تھے۔ تمل ناڈو کے اس بلے باز نے واضح کیا کہ ان کے بیان میں ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کسی رکن سے کوئی سروکار نہیں ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

وزیر اعلیٰ نتیش کمارکا کشن گنج کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ;ایم پی مولانااسرارالحق قاسمی نے میمورنڈم سونپ کر سیلاب متاثرین کی فوری بازآبادکاری کامطالبہ کیا

بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار نے آج کشن گنج کے سیلاب زدہ علاقوں کا دورہ کرکے سیلاب متاثرین سے ملاقات کی اورراحت وامداد کے کاموں کا جائزہ لیا۔اس موقع پر علاقے کے ایم مولانا اسرارالحق

حادثات سے دکھی پربھونے کہا;ریلوے کے لئے خون اور پسینہ ایک کیا، استعفی پرمودی نے انتظارکرنے کوکہا

گزشتہ پانچ دنوں میں اتر پردیش میں دو ٹرینوں کے حادثات کی اخلاقی ذمہ داری لے کر ریلوے وزیر سریش پربھو استعفی دینے کی پیشکش کی ہے،اگرچہ ان کا استعفی ابھی تک قبول نہیں ہوا تھا۔

حکومت ہماری خاموشی کو بزدلی نہ سمجھے: سید عالمگیر اشرف;رائے پور میں بورڈ کی ہنگامی میٹنگ طلب، ملک بھر میں جاری کیا پیغام،مذہب میں دخل اندازی نا قابل برداشت

مرکزی حکومت کی مسلسل مذہب میں غیر قانونی دخل اندازی حکومت کے لئے اچھا نہیں ہے۔ اپنی ناکامیوں اورمجرموں کو شہ دینے کی مجراانہ سازشوں پر پردہ ڈالنے کے لئے ملک کے

تامل ناڈو میں گہرایا سیاسی بحران، اقلیت میں پلانیسامی حکومت;ڈی ایم کے نے بھی کی اسمبلی سیشن بلانے اوراکثریت ثابت کرنے کی مانگ

تمل ناڈو میں سیاسی بحران جاری ہے۔تمل ناڈو کی حکمراں اے آئی اے ڈی ایم کے میں ششی کلا اور ٹی ٹی وی دناکرن کے وفادار 19ممبران اسمبلی نے منگل کو گورنر سے مل کر کہا کہ انہیں وزیر