اُترپردیش میں امن و امان کی صورت حال نازک؛ جمعیۃ العلماء نے حکومت اُترپردیش پر لگایا نظم و نسق قائم کرنے میں ناکامی کا الزام

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 6th February 2018, 9:11 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی۔ ۶؍فروری (ایس او نیوز/پریس ریلیز) جمعیۃ  علماء ہند کے جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی نے پرتا پ گڑھ میں ایک خاتون کے ساتھ وحشیانہ عمل پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایسے واقعات ہندوستانیت او رانسانیت دونوں کے لیے شرمناک ہیں ۔ مولانا مدنی نے اترپردیش میں امن وامان کی صورت حال پر بھی تشویش ظاہر کی اور کہا کہ کاس گنج میں ایک ہفتہ گزر جانے کے باوجود بھی مسجد پر حملہ کیا گیا جو یہ ظاہرکرتا ہے کہ ریاست میں نظم ونسق قائم کرنے والی ایجنسیاں اپنی ذمہ داری ادا کرنے میں ناکام ہورہی ہیں ۔

مولانا مدنی نے کہا کہ انسپکٹر راج کو بڑھاوا دینے سے جرائم میں کمی نہیں آتی بلکہ انتظامیہ کو جواب دہ بنانا بہت ضروری ہے ۔ انھوں نے کہا کہ آج فرقہ پرستوں کے حوصلے کافی بلند ہیں کیو ں کہ ان کے اندر یہ زعم پیدا ہو گیا ہے کہ موجودہ صورت حال میں وہ قانون کی گرفت سے باہر ہیں ۔ مولانا مدنی نے اس با ت پر ز ور دیا کہ پرتاپ گڑھ میں رابعہ نا م کی خاتون کے ساتھ عصمت دری کی کوشش او رپٹائی کی وجہ سے دردناک موت اور ملک بھر میں خواتین کے خلاف بڑھ رہے جرائم ہماری سرکاروں کو یہ سوچنے کی دعوت دیتے ہیں کہ وہ کسی خاص طبقے کی خواتین کے مسائل پر سیاست سے بازآئیں اور اجتماعی طور سے ان کے بنیادی مسائل کا حل تلاشنے کی کوشش کریں ۔

ادھر دوسری طرف مولانا مدنی کی ہدایت پر جمعیۃ علماء پرتاپ گڑھ کا ایک وفد اس کے سکریٹری مولانا محمد فاروق قاسمی کی سربراہی میں متاثرہ خواتین کے اہل خانہ سے ملا اور جنازہ وغیرہ میں شرکت کی ۔اس سلسلے میں مولانا حکیم الدین قاسمی سکریٹری جمعیۃ  علماء ہند نے بتایا کہ جمعیۃ  علماء کے ضلعی ذمہ داروں کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ مجرموں کو کیفرکردار تک پہنچانے میں قانونی واخلاقی ہر طرح کا تعاون دیں ، کیوں کہ یہ واقعہ سماج کے ماتھے پر بدنما داغ ہے۔ اس وفد میں مولانا تاجدار قاسمی ضلع نائب صدر اور مولانا جاوید قاسمی بھی شریک تھے ۔

ایک نظر اس پر بھی

رافیل :مودی نے اپنی چوری تسلیم کرلی !راہل فضائیہ سے پوچھے بغیرمعاہدہ میں تبدیلی کی گئی

رافیل طیارہ سودا کے معاملے میں مودی حکومت کو مسلسل نشانہ بنانے والے کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے ایک بار پھر آج وزیر اعظم نریندر مودی پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے سپریم کورٹ میں دائر حلف نامے میں اپنی غلطی تسلیم کرلی ہے ۔

الہ آبادکانام بدلنے پر چیلنج

الہ آباد ہائی کورٹ کی لکھنؤ بنچ نے الہ آباد کا نام بدل کر پریاگ راج کئے جانے کے معاملے میں عوامی عرضی پر ریاستی حکومت سمیت دیگر فریقوں سے جواب مانگا ہے ۔

وزیر اعظم نے مانا کہ فضائیہ سے بغیر پوچھے بدلا تھا رافیل کا کنٹریکٹ: راہل گاندھی نے کی ٹویٹ، کہا؛ پکچر ابھی باقی ہے

کانگریس صدر راہل گاندھی نے سپریم کورٹ میں حکومت کے رافیل معاملے سے متعلق حلف نامے کو لے کر منگل کو وزیر اعظم نریندر مودی پر نشانہ لگایا اور دعوی کیا کہ مودی نے فضائیہ سے پوچھے بغیر کنٹراکٹ بدلنے کی بات قبول کر لی ہے۔گاندھی نے ٹویٹ کر کہاکہ سپریم کورٹ میں مودی جی نے مانی اپنی ...

منی لانڈرنگ معاملے میں صحافی اپیندر رائے کی ضمانت کی درخواست مسترد

دہلی کی ایک عدالت نے مبینہ طور پر زبردستی وصولی اور مشکوک مالیاتی لین دین سے متعلق منی لانڈرنگ کے ایک معاملے میں گرفتار صحافی اپیندر رائے کی ضمانت کی درخواست منگل کو مسترد کر دی۔ایڈیشنل سیشن جج راکیش سیال نے رائے کو یہ کہہ کر راحت دینے سے انکار کر دیا کہ ان کے خلاف لگے الزامات ...

کْولنگ ٹیکنالوجی میں اہم اختراعات کے تین ملین امریکی ڈالر انعام کا اعلان 

آج نئی دہلی میں دو روزہ گلوبل کْولنگ انوویشن سمٹ کے افتتاحی اجلاس کے دوران معیاری روم ایئر کنڈیشننگ(آر اے سی)کے مقابلے میں پانچ گنا کم ماحولیاتی اثرات کی حامل رہائشی کولنگ ٹیکنالوجی میں اختراع اور ترقی کو ترغیبات فراہم کرنے کے لیے ایک بین الاقوامی مسابقہ گلوبل کولنگ پرائز کا ...

شادی میں شرکت مہنگی پڑی : 9خاندانوں کا سماجی بائیکاٹ ؛آج بھی انسانیت سوز روایت زندہ ؟

گاؤں کے ذمہ دار کی اجازت کے بغیر شادی میں شریک ہونے پر 9خاندانوں کابائیکاٹ کرتے ہوئے انہیں گاؤں سے ہی باہر کئے جانے کا غیرانسانی واقعہ پیش آیاہے۔ سماجی مقاطعہ ، عدم تعاون جیسے ناسور آج بھی زندہ رہنے کی تازہ مثال ہے۔

مدھیہ پردیش : اقتدار میں آئے تو سرکاری دفاتر میں نہیں ہوگی آر ایس ایس کی نشست ، ملازمین پر بھی پابندی

مدھیہ پردیش میں انتخابی ماحول گرم ہے۔ سیاسی پارٹی ووٹروں کو لبھانے کے لئے زور شور سے تشہیر میں مصروف ہیں۔ تمام طرح کے وعدے کئے جا رہے ہیں۔ اس دوران کانگریس نے اپنا منشور جاری کر دیا ہے۔