اتر پردیش بلدیاتی انتخابات میں EVM کی دھاندلی؛ بیلٹ پیپرکے نظام کو دوبارہ لاگو کرنے ایس ڈی پی آئی کا مطالبہ

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 3rd December 2017, 8:05 PM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

کالی کٹ 3/ڈسمبر ( پریس ریلیز/ایس اونیوز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا کے قومی صدر اے سعید نے اپنے اخباری اعلامیہ میں EVM ووٹنگ نظام کے تعلق سے اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ اترپردیش کے حالیہ بلدیاتی انتخابات کے بعد EVM ووٹنگ مشین کے تعلق سے واضح طور پر اس حقیقت کا پتہ چل چکا ہے کہ کس طرح EVM کا استعمال ناقابل اعتماد ہے۔ بی جے پی اس جگہ ہی کامیاب ہوئی ہے جہاں EVM کا استعمال کیا گیا ہے اور جن جگہوں میں بیلیٹ پیپر کے نظام کا استعمال کیا گیا ہے وہاں بی جے پی بری طرح ہاری ہے۔

ایس ڈی پی آئی قومی صدر اے سعید نے اس بات کی طرف خصوصی نشاندہی کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایس ڈی پی آئی سمیت دیگر کئی سیاسی پارٹیاں ایک عرصہ سے EVMکے خلاف اعتراضات اور شکایات درج کرتی رہی ہیں  اور الیکشن کمیشن سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ EVMکو ترک کرکے بیلٹ پیپر سسٹم سے انتخابات کروائے۔ سیاسی پارٹیوں اور عوام کے مسلسل اعتراضات کے باوجود الیکشن کمیشن نے اتر پردیش میں EVM کا استعمال کیا ہے جس سے یہ بات صاف ثابت ہوچکی ہے کہ EVM نظام قابل اعتماد نہیں ہے اوراس میں دھاندلی اور دھوکہ دہی کرنے کے صد فیصد امکانات موجود ہے۔ الیکشن کمیشن کو چاہئے کہ وہ اپنی غفلت اور منافقت پر فوری طور پر ملک کے عوام کے سامنے معافی مانگے۔  اے سعید نے اس بات کی طرف توجہ دلاتے ہوئے کہا ہے کہ ایس ڈی پی آئی دیگر پارٹیوں نے الیکشن کمیشن سے کئی مرتبہ مطالبہ کیا ہے کہ وہ انتخابات میں EVM نظام کو ترک کر بیلٹ پیپر نظام کا استعمال کرے۔ تمام ترقی یافتہ ملک نے بھی EVMکے غلط استعمال ، دھاندلیوں اور ہیکنگ کرنے کو مدنظر رکھتے ہوئے EVMکا استعمال ترک کردیا ہے۔ ہمارے سامنے کئی ایسی مثالیں موجود ہیں  جب بھی ووٹر کسی دوسرے پارٹیوں کے نشان پر بٹن دباتا ہے تو بی جے پی کے کمل نشان کا لائٹ سلگتا ہے اور بی جے پی کو ووٹ چلا جاتا ہے۔ مدھیہ پردیش میں خو د ریاستی الیکشن کمشنر کے سامنے EVM میں اس طرح ہوتے ہوئے دیکھا گیا ہے۔ ان تمام خرابیوں اور ثبوت کے باوجود الیکشن کمیشن نے EVM کا استعمال کیا ہے جو ناقابل معافی عمل ہے۔ اتر پردیش کے نتائج کے بعد یہ بات کھل کرسامنے آگئی ہے کہ الیکشن کمیشن بی جے پی کی کٹھ پتلی ہے اور دھاندلیوں میں برابرکی شریک ہے۔  اے سعید نے اس بات پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی انتخابات میں دھاندلیوں کے ذریعے جمہوریت کا خاتمہ کررہی ہے اور الیکشن کمیشن بھی اس سازش اور مجرمانہ کارروائیوں میں برابر کی شریک ہے جو ملک کے ساتھ غداری کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی اور الیکشن کمیشن کو اس طرح کی دھوکہ دہی کے لیے قانون کے کٹہرے میں کھڑا کیا جانا چاہئے۔ 

ایک نظر اس پر بھی

بنگلور میں جے ڈی ایس کا شاندار اجلاس؛ مایاوتی کی شرکت؛ کہا مودی حکومت اب آخری سانس لے رہی ہے؛ کمارسوامی نے جاری کی 126 اُمیدواروں کی پہلی فہرست

شہر کے یلہنکا میں جنتادل (ایس) کا  شاندار جلسہ کمارا پرو یاترا کنونشن کے نام پر سنیچر شام کو منعقد ہوا ، جس میں ریاست کے مختلف گائوں اور دیہاتوں سے کثیر تعداد میں لوگوں نے   شرکت کی۔ اس موقع پر سابق وزیراعلیٰ  کماراسوامی نے  ریاست کرناٹک میں آئندہ دو  تین ماہ بعد ہونے والے ...

اروندر سنگھ لولی کی کانگریس میں واپسی، بی جے پی میں نظریاتی طور پر ’’بے میل ‘‘تھا :اروندسنگھ لولی

دہلی کانگریس کے سابق صدر اروندرسنگھ لولی کی آج کانگریس میں’’ گھر واپسی‘‘ ہو گئی۔ کچھ ماہ قبل پارٹی چھوڑ کر بی جے پی میں شامل ہوئے لولی نے کہا کہ وہ نے کہا کہ وہاں وہ ’’ نظریاتی طور پر بے میل ‘‘ تھے۔

گورکھپوراورپھول پور لوک سبھا ضمنی الیکشن کے لیے کانگریس نے امیدواروں کے نام کااعلان کیا

کانگریس نے گورکھپور اور پھول پورلوک سبھا سیٹوں پر ضمنی انتخابات کے لیے اپنے امیدواروں کااعلان کر دیاہے۔اتر پردیش کانگریس کے ترجمان وریندر مدان نے بتایا کہ پارٹی نے ڈاکٹر سرہیتا کریم کو گورکھپور اور منیش مشرا کو پھول پور لوک سبھاسیٹ پر ضمنی انتخاب کے لیے امیدواربنایاہے۔

تری پورہ اسمبلی الیکشن کے لئے تمام تیاریاں مکمل؛کل ہوگی ووٹنگ

تری پورہ میں اسمبلی کے انتخابات کے لیے تمام تیاریاں مکمل ہو چکی ہیں۔جمعہ کو انتخابی مہم ختم ہونے کے بعد،اتوار کے روز سب کی نگاہیں اب ووٹنگ پرہیں۔دراصل، تری پورہ میں کل یعنی اتوار کو انتخابات ہونے ہیں اور بھارتیہ جنتا پارٹی ان انتخابات میں حکمران بائیں محاذ کے سامنے اہم ...

کاسرگوڈ:غیرمحسوب14لاکھ روپے نقد لے جاتے ہوئے ایک شخص گرفتار

مصدقہ خفیہ اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے کُمبلے پولیس اسٹیشن کے افسران نے شانتی پالّا کے علاقے میں ایک کارروک لی اور اس کی تلاشی لینے پر کار کی سیٹ کے نیچے چھپاکر رکھے گئے 14,26,500روپے نقد بر آمد کیے جس کے تعلق مذکورہ شخص کے پاس کوئی حساب وکتاب نہیں تھا۔

حضرت مولانامفتی عبد القیوم رائے پوری کا انتقال

خانقاہ  رائے پور کی عالمی شہرت یافتہ شخصیت حضرت مولانامفتی عبد القیوم رائے پوری کا آج صبح یہاں طول علالت کے بعدانتقال ہوگیا۔ وہ طویل عرصہ سے صاحب فراش تھے۔ ان کی عمر تقریباً 85سال تھی۔