پاکستانی سفارت کاروں کے سفر پر کوئی پابندی عائد نہیں کی جا رہی: امریکہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th April 2018, 5:10 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن11اپریل (ایس او نیوز؍ آئی این ایس انڈیا) امریکی محکمہ خارجہ کے ایک اہل کار نے کہا ہے کہ ’’امریکہ میں پاکستانی سفارت کاروں کے سفر پر کوئی پابندی عائد نہیں ہے‘‘۔محکمہ? خارجہ نے یہ بات میڈیاکے سوال کے جواب میں کہا ہے ۔ اہل کار سے پاکستانی اور بھارتی ذرائع ابلاغ پر آنے والی اس خبر کے بارے میں پوچھا گیا تھا کہ کیا یہ بات درست ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ نے پاکستانی حکام کو مطلع کیا ہے کہ امریکہ میں پاکستانی سفارت خانے اور قونصل خانوں میں تعینات سفارت کار اجازت کے بغیر 40 کلومیٹر سے دور سفر نہیں کر سکیں گے۔اطلاعات میں بتایا گیا تھا کہ اس بات کا امکان ہے کہ یہ اقدام مئی سے نافذ ہو جائے گا۔اس سے قبل، واشنگٹن میں پاکستانی سفارت خانے نے منگل کے روز ’وائس آف امریکہ‘ کو بتایا تھا کہ ایسی پابندیوں کے بارے میں اْنھیں کوئی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان ہیدر نوئرٹ نے منگل کے روز اخباری بریفنگ کو بتایا کہ اس عنوان پر اْن کے پاس بتانے کے لیے کوئی اطلاع نہیں ہے۔ جاننے کی کوشش کرنے پر، وائٹ ہاؤس نے ایسی کسی پالیسی کی تبدیلی کے بارے میں کوئی جواب نہیں دیا۔یہ خبریں ایسے میں سامنے آرہی تھیں جب افغانستان میں لڑائی کے معاملے پر پاکستان اور امریکہ کے مابین تناؤ بڑھا ہوا ہے؛ اور طالبان اور دیگر شدت پسند گروپوں کے ساتھ پاکستانی فوج کے تعلقات کے بارے طویل مدت سے تشویش جاری ہے۔گذشتہ ہفتے، اسلام آباد میں امریکی سفارت خانے کے ڈیفنس اتاشی سڑک کے ایک مہلک حادثے میں ملوث بتائے جاتے ہیں، جس کے نتیجے میں ایک موٹر سائیکل سوار ہلاک جب کہ دوسرا زخمی ہوا۔ پاکستانی حکام نے اتاشی، کرنل جوزف امانوئل ہال پر مقدمہ چلانے کے لیے کہا ہے۔ امریکی سفارت خانے کا کہنا ہے کہ تفتیش کے سلسلے میں تعاون کیا جا رہا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

اسرائیلی زندانوں میں عمر قید کے سزا یافتہ فلسطینیوں کی تعداد 513 ہوگئی

فلسطین میں اسیران کے حقوق کے لیے کام کرنے والے ایک گروپ نے کہا ہے کہ دو روز قبل اسرائیل کی ایک عدالت نے دو فلسطینیوں کو تا حیات عمر قید کی سزا سنائی جس کے بعد عمر قید کے سزا یافتہ فلسطینیوں کی تعداد 513 ہوگئی ہے۔

طالبان کے حملے میں بارہ پولیس اہلکار ہلاک

افغانستان کے جنوب مشرقی صوبے غزنی میں طالبان کے ایک حملے میں کم از کم 12 مقامی پولیس اہلکار ہلاک ہو گئے ہیں۔ حالیہ کچھ دنوں میں افغان فورسز کے خلاف طالبان کے حملوں میں نمایاں تیزی دیکھی گئی ہے۔