امریکی بمبار طیاروں کی شمالی کوریا کی سرحد کے قریب پرواز

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 24th September 2017, 10:29 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن،24؍ستمبر(آئی این ایس انڈیا)اپنی فوجی طاقت کے اظہار کے لیے امریکا کے بمبار اور لڑاکا طیاروں نے گزشتہ روز دونوں کوریائی ریاستوں کی سرحد پر شمالی کوریا کے قریب ترین علاقے میں پرواز کی۔ پینٹاگان کے مطابق رواں صدی کے دوران ایسا پہلی مرتبہ ہوا ہے۔پینٹاگان کی طرف سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ بین الاقوامی فضاؤں میں پرواز کرنے والے اس مشن کا مقصد دراصل یہ بات واضح کرنا تھا کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ شمالی کوریا کے ’’عاقبت نا اندیشانہ‘‘ رویے کو کس قدر سنجیدگی سے لیتے ہیں۔

امریکی محکمہ دفاع کی خاتون ترجمان ڈانا وائٹ کی طرف سے ایک بیان میں مزید کہا گیا، ’’یہ مشن امریکی عزم کا اظہار اور ایک واضح پیغام ہے کہ صدر کے پاس کسی بھی خطرے کو شکست دینے کے لیے بہت سے فوجی راستے موجود ہیں۔‘‘شمالی کوریا کے حالیہ جوہری اور میزائل تجربات کے حوالے سے وائٹ ہاؤس کی طرف سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا، ’’شمالی کوریا کا ہتیھاروں کا پروگرام ایشیا پیسیفک کے علاقوں اور پوری عالمی برادری کے لیے ایک گھمبیر خطرہ ہے۔ امریکی سر زمین اور اپنے اتحادیوں کے دفاع کے لیے ہم فوجی صلاحیتوں کے مکمل استعمال کے لیے تیار ہیں۔‘‘امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی سے اپنے اولین خطاب میں کہا تھا کہ اگر امریکا کو اپنے یا اپنے اتحادیوں کے دفاع پر مجبور کیا گیا تو شمالی کوریا کو ’’مکمل طور پر تباہ‘‘ کر دیا جائے گا۔ اس کے ردعمل میں شمالی کوریائی رہنما کِم جونگ اْن نے کہا تھا کہ ٹرمپ کو شمالی کوریا کو دھمکانے کی ’’بھاری قیمت‘‘ چکانا پڑے گی۔ شمالی کوریا کے وزیر خارجہ نے بھی صحافیوں سے گفتگو میں کہا کہ شمالی کوریا کی طرف سے ٹرمپ کی دھمکی کا جواب بحرالکاہل میں طاقتور ترین ہائیڈروجن بم کے دھماکے سے دیا جا سکتا ہے۔پینٹاگان کے مطابق ہفتہ 23 ستمبر کو گوام ایئربیس سے اڑنے والے B۔12 بمبار طیاروں اور اوکیناوا جاپان سے اڑنے والے F۔15C ایگل فائٹرز نے شمالی کوریا کی مشرقی سرحد کے قریب سمندر کے اوپر بین الاقوامی فضاؤں میں پرواز کی۔ امریکا کے مطابق 21ویں صدی کے دوران یہ پہلا ایسا موقع تھا کہ امریکی بمبار اور لڑاکا طیاروں نے شمالی اور جنوبی کوریا کے درمیان غیر فوجی علاقے کے اس قدر قریب ترین علاقے میں پرواز کی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

مالدیپ کے صدارتی انتخابات میں اپوزیشن امیدوار ابراہیم محمد سولیح جیتے

مالدیپ میں صدر کے عہدہ کے لئے اتوار کو ہوئے متنازعہ انتخابات میں اپوزیشن امیدوار ابراہیم محمد سولیح نے جیت حاصل کرلی۔ میڈیا رپورٹوں کے مطابق طویل عرصہ سے رکن پارلیمان سولیح کی جیت کا اعلان یہاں واقع ان کی پارٹی کے مہم ہیڈکوارٹر میں کیا گیا۔ رپورٹوں کے مطابق نصف شب تک ہوئی ...

فتح تحریک کا حماس پر اسرائیل کے ساتھ سازباز کا الزام

فلسطینی تحریک ’فتح‘ نے ’حماس‘کی قیادت پر الزام لگایا ہے کہ اس نے اسرائیل کے ساتھ سازباز کی ہے اور وہ پناہ گزینوں کی واپسی کے حق سے دست بردار ہو گئی ہے۔ جمعے کی شام جاری ایک بیان میں فتح تحرتیک کا کہنا ہے کہ حماس تنظیم ٹرمپ انتظامیہ اور نیتین یاہو کی حکومت کو پیغامات بھیج رہی ...

اسلام مخالف اے ایف ڈی دوسری سب سے بڑی جماعت، جائزہ رپورٹ

ایک تازہ عوامی جائزے کے مطابق اسلام اور مہاجرین مخالف دائیں بازوں کی سیاسی جماعت آلٹرنیٹیو فار ڈوئچ لینڈ یا اے ایف ڈی، جرمنی کی دوسری سب سے بڑی جماعت بن گئی ہے۔ اس جائزے کے مطابق حکومتی اتحاد اپنی حمایت کھو رہا ہے۔ جرمن براڈ کاسٹر ARD کی طرف سے کرائے جانے والے عوامی جائزے کے ...