غزہ میں اسرائیلی مظالم، بدھ کو جنرل اسمبلی کا ہنگامی اجلاس طلب

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 11th June 2018, 12:29 PM | عالمی خبریں |

نیویارک11جون ( ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا )فلسطین میں اسرائیلی مظالم کے خلاف گذشتہ ہفتے پیش کی گئی قرارداد امریکا کی جانب سے ویٹو کیے جانے کے بعد جنرل اسمبلی کا ہنگامی اجلاس آئندہ بدھ کو طلب کیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق کویت کی درخواست پر جنرل اسمبلی کے ہنگامی اجلاس میں غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوج کے ہاتھوں نہتے فلسطینیوں کے قتل عام کی روک تھام کے لیے قرارداد منظور کی جائے گی۔جنرل اسمبلی کے چیئرمین میروسلاؤ لاجاک نے اسمبلی کے 193 رکن ممالک کو مکتوب ارسال کیے ہیں جن میں ان سے کہا گیا ہے کہ وہ بدھ کے روز ہونے والے ہنگامی اجلاس میں شرکت کو یقینی بنائیں۔خیال رہے کہ گذشتہ ہفتے کویت کی درخواست پر سلامتی کونسل کا ایک اجلاس منعقد کیا گیا جس میں فلسطین میں اسرائیلی مظالم کی روک تھام پر غور کیا گیا۔

اس موقع پر کویت کی طرف سیفلسطینیوں کو تحفظ فراہم کرنے کے حق میں ایک قرارداد پیش کی گئی تاہم امریکا نے مداخلت کرتے ہوئے وہ قرارداد اسرائیل کے حق میں ویٹو کردی۔کل جمعہ کے روز اقوام متحدہ میں فلسطین کے مندوب ریاض منصورنے قابض فوج کے ہاتھوں نہتے فلسطینیوں کے قتل عام کی شدید مذمت کی اور کہا کہ اسرائیل ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت غزہ کی سرحد پر بے گناہ فلسطینی مظاہرین کو قتل کررہے۔ ریاض منصور نے کویت اور بعض دوسرے ممالک کی طرف سے اقوام متحدہ میں فلسطینیوں کے حقوق کے لیے آواز اٹھانے کا خیر مقدم کیا اور تمام رکن ممالک پر زور دیا کہ وہ بدھ کے روز ہونے والے جنرل اسمبلی کے اجلاس کو کامیاب بنانے کے لیے اپنا سفارتی اور سیاسی کردار ادا کریں۔

ایک نظر اس پر بھی

بنگلہ دیش انتخابات میں شیخ حسینہ کامیاب، اپوزیشن نے نتائج ماننے سے کیا انکار

خبر رساں اداروں کے مطابق بنگلہ دیشی وزیر اعظم شیخ حسینہ واجد کی حکمران جماعت عوامی لیگ نے اتوار 30 دسمبر کو ہونے والے عام انتخابات میں اپوزیشن کے مقابلے میں بڑی برتری حاصل کر لی ہے اور حتمی نتائج میں عوامی لیگ کو کل 350 نشستوں میں سے 281 نشستوں پر کامیابی حاصل ہوئی ہے۔

ایرانی حکومت ٹوئٹراستعمال کر رہی ہے مگر عوام کے لیے ممنوع ہے : امریکی سفیر

جرمنی میں امریکی سفیر رچرڈ گرینل کا کہنا ہے کہ ایرانی حکومت خود ٹویٹر کا استعمال کر رہی ہے مگر عوام کے لیے اس کا استعمال روکا ہوا ہے۔ انہوں نے یہ بات ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر علی لاریجانی سے منسوب ٹویٹر اکاؤنٹ کھولے جانے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہی۔اگرچہ ایرانی میڈیا نے مذکورہ ...