ساحلی علاقے میں ریت کا مسئلہ جلد ہی حل کیا جائے گا: اُڈپی میں تشریف فرما کرناٹک کے وزیرا علیٰ کمارا سوامی کی یقین دھانی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th September 2018, 12:45 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

اڈپی 8؍ستمبر (ایس او نیوز) وزیر اعلیٰ کمارا سوامی نے اڈپی ضلع میں ترقیاتی کاموں کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ میٹنگ میں یقین دلایا ہے کہ ضلع میں ریت نکالنے پر جو پابندی ہے اور اس سے عوام کو جن مسائل کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ، اس کا حل جلد ہی نکالاجائے گا۔

منی پال میں واقع ضلع پنچایت میٹنگ ہال میں جلسے کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ مکانات کی تعمیر کے لئے ریت کی دستیابی آسان ہونی چاہیے۔ اس تعلق سے قانونی دائرے میں رہتے ہوئے ضلع انتظامیہ کو روایتی انداز سے ریت نکالنے کی اجازت دینی چاہیے۔ البتہ کسی بھی قیمت پر مشینوں سے ریت نکالنے کی اجازت نہیں دی جانی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ ساحلی علاقے میں ریت کے جو مسائل ہیں اس کا پوری طرح جائزہ لینے اور اس کا حل نکالنے کے لئے جلد ہی ساحلی پٹی کے اراکین اسمبلی کے ساتھ ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ بنگلورو میں منعقد کی جائے گی ۔

قدرتی آفت سے حال ہی میں ہوئے نقصانات کے تعلق سے وزیراعلیٰ نے کہا کہ141کروڑ روپوں کا مالی نقصان ہوا ہے جبکہ 10افراد کی جان چلی گئی ہے۔ 1,232مکانات کو نقصان پہنچا ہے۔ریاستی حکومت نے اب تک 18کروڑ روپے ریلیف فنڈ جاری کیا ہے۔ مزید ریلیف فنڈجلد ہی جاری کیا جائے گا۔وزیر اعلیٰ نے ضلع ڈپٹی کمشنر کو ہدایت دی کہ راشن کارڈ کے موصولہ درخواستوں کو نپٹانے کے ٹھیکے کی بنیاد پر بیرونی افراد سے خدمات لی جائیں اور کارڈ تقسیم کرنے کا عمل تیز کیا جائے۔مزید یہ بھی کہا کہ ضلع میں پینے کے پانی کا مسئلہ حل کرنے کے لئے تجویز اور منصوبہ حکومت کے پاس بھیج دیا جائے۔جلد ہی اس مسئلے کو حل کرنے کے لئے بنگلورو میں میٹنگ منعقد کی جائے گی۔انہوں نے ضلع ڈی سی کی طرف سے لیڈیز ہاسٹل کے لئے مناسب جگہ کی نشاندہی کرنے پر فنڈ جاری کرنے کا بھی یقین دلایا۔موجود ہ لیڈیز ہاسٹل میں درخواست کنندگان کے لئے جگہ نہ رہنے کی صورت میں کرایے کی عمارت میں ان خواتین کے لئے قیام کا بندوبست کرنے کی ہدایت بھی دی۔کورگاسماج والوں کو گھروں کی تعمیر کے لئے امداد دینے کے باوجود پیش آنے والی مشکلات پر بولتے ہوئے وزیراعلیٰ نے یقین دلایا کہ سرکار کی طرف سے کسی ایجنسی کی معرفت کورگا سماج کو گھر تعمیر کرکے دئے جائیں گے۔

اس موقع پر اراکین اسمبلی کے رگھو پتی بھٹ، سنیل کمار،ہالاڈی سرینواس شیٹی وغیرہ نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا۔میٹنگ میں ضلع ڈی سی پریانکا میری، ایس پی لکشمن نمبرگی ، محکمہ جاتی افسران اور سیاسی لیڈران موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

اُڈپی:مذاہب کے تقابلی مطالعہ میں  ماہر نہال احمد اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیاکرناٹکا  (SIO) کے ریاستی صدر منتخب

گلبرگہ کے ہدایت سنٹر میں منعقدہ اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا کرناٹکا کے اسٹیٹ ایڈوائزی کونسل کی انتخابی  نشست میں  اُڈپی ضلع  سے تعلق رکھنے والے ایس آئی اؤ کے فعال و متحرک ممبر نہا ل احمد کدیور کو ایس آئی اؤ کی اگلی میقات 20196-2020کے لئے ریاستی صدر کی حیثیت سے منتخب ...

بھٹکل میں کنٹیروا فرینڈ س کے زیراہتمام خوبصورت کبڈی ٹورنامنٹ : میزبان ٹیم نے ہی جیتا خطاب

مٹھلی گرام پنچایت حدود والے  تلاند کے کٹے ویرا مہاستی میدان میں کنٹیروا فرینڈس کے زیراہتمام منعقدہ تعلقہ سطح کے 55کلو   کبڈی ٹورنامنٹ میں میزبان  کنٹیرو فرینڈس  نے فائنل  میں مہاستی منونڈو ٹیم کو شکست دیتے ہوئے خطاب جیت لیا ۔

بھٹکل میں 1009آخری رسومات امداد کی عرضیاں  باقی : دوبرسوں سے عوام امداد کے انتظار میں

آخری رسومات منصوبے کے تحت اترکنڑا ضلع کو سال 2018-2019میں 38.10لاکھ روپئے کی امداد منظور کی گئی ہے، تیسری قسط کے طورپر 20.30لاکھ روپئے منظور کئے جارہے ہیں، کل 1009عرضیوں کو معاشی امداد  باقی رہنے کی ریاست کے وزیر تحصیل آر وی دیش پانڈے نے  سرمائی اجلاس کے دوران تحریری جانکاری دی ہے۔

کرناٹکا سے گوا کے لئے  مچھلی سپلائی پابندی میں ڈھیل:چھوٹی سواریوں کے ذریعے مچھلی سپلائی کی اجازت: دیشپانڈے کی کوشش رنگ لائی  

ریاست سے گوا کوچار پہیہ سواری سمیت چھوٹی سواریوں کےذریعے مچھلی   سپلائی پر کوئی پابندی نہیں ہونے کی ریاستی کابینہ کے اسکل ڈیولپمنٹ اور تحصیل وزیر آر وی دیش پانڈے نے جانکاری دی ہے۔

مینگلور میں سابق وزیر پلّم راجو نے کیا ریفائیل معاہدے کے سلسلے میں جوائنٹ پارلیمنٹری کمیٹی کے ذریعے تحقیقات کا مطالبہ

سابق مرکزی وزیر پلّم راجو نے منگلورو میں میڈیا سے بات چیت کے دوران مطالبہ کیا کہ جنگی ہوائی جہاز ریفائیل کی خریداری میں ہوئی بدعنوانی کے تعلق سے تحقیقات کے لئے جوائنٹ پارلیمنٹری کمیٹی تشکیل دی جانی چاہیے ۔

ریاستی حکومت اقلیتوں کی ترقی کی پابند: کمارسوامی، بجٹ میں اقلیتوں کے گرانٹس میں پانچ سو کروڑ کے اضافے کا اعلان

ریاست کی مخلوط حکومت کا منشاء ہے کہ اقلیتوں کو اس قدر تعلیمی ، سماجی اور معاشی طور پر مضبوط کیا جائے کہ وہ ملک کے دیگر طبقوں کے شانہ بہ شانہ ملک کی ترقی کے حصے دار بنیں۔

چھٹویں پے کمیشن کی سفارشات زیر غور: کمار سوامی

سرکاری ملازمین کی تنخواہوں پر نظر ثانی کے متعلق ریاستی حکومت کو چھٹویں پے کمیشن کی جو رپورٹ پیش کی گئی ہے اس کی پہلی اور دوسری جلد میں شامل سفارشات پر حکومت سنجیدگی سے غور کررہی ہے،

کابینہ میں توسیع کے ساتھ وزارت میں ردوبدل بھی ممکن، پانچ تا چھ وزراء کو ہٹانے پر غور: دنیش گنڈو راؤ

رناٹکا پردیش کانگریس کمیٹی صدر دنیش گنڈو راؤ نے آج اشارہ دیا کہ ریاستی کابینہ کی 22 دسمبر کو توسیع کے مرحلے میں وزارت میں بڑے پیمانے پر ردوبدل بھی ہوسکتی ہے اور ردوبدل کے مرحلے میں پانچ چھ وزراء کو ہٹایا بھی جاسکتا ہے۔

ریاست کرناٹک میں22 دسمبر کو کابینہ توسیع 

کرناٹک میں ایچ کمار سوامی کی قیادت والے کابینہ میں توسیع 22 دسمبر کی جائے گی ۔ کابینہ میں توسیع نہ ہونے سے پارٹی کے اندر کافی عدم اطمینان کی افواہیں گردش کر رہی ہیں ۔