ساحلی علاقے میں ریت کا مسئلہ جلد ہی حل کیا جائے گا: اُڈپی میں تشریف فرما کرناٹک کے وزیرا علیٰ کمارا سوامی کی یقین دھانی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 8th September 2018, 12:45 PM | ساحلی خبریں | ریاستی خبریں |

اڈپی 8؍ستمبر (ایس او نیوز) وزیر اعلیٰ کمارا سوامی نے اڈپی ضلع میں ترقیاتی کاموں کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ میٹنگ میں یقین دلایا ہے کہ ضلع میں ریت نکالنے پر جو پابندی ہے اور اس سے عوام کو جن مسائل کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ، اس کا حل جلد ہی نکالاجائے گا۔

منی پال میں واقع ضلع پنچایت میٹنگ ہال میں جلسے کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ مکانات کی تعمیر کے لئے ریت کی دستیابی آسان ہونی چاہیے۔ اس تعلق سے قانونی دائرے میں رہتے ہوئے ضلع انتظامیہ کو روایتی انداز سے ریت نکالنے کی اجازت دینی چاہیے۔ البتہ کسی بھی قیمت پر مشینوں سے ریت نکالنے کی اجازت نہیں دی جانی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ ساحلی علاقے میں ریت کے جو مسائل ہیں اس کا پوری طرح جائزہ لینے اور اس کا حل نکالنے کے لئے جلد ہی ساحلی پٹی کے اراکین اسمبلی کے ساتھ ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ بنگلورو میں منعقد کی جائے گی ۔

قدرتی آفت سے حال ہی میں ہوئے نقصانات کے تعلق سے وزیراعلیٰ نے کہا کہ141کروڑ روپوں کا مالی نقصان ہوا ہے جبکہ 10افراد کی جان چلی گئی ہے۔ 1,232مکانات کو نقصان پہنچا ہے۔ریاستی حکومت نے اب تک 18کروڑ روپے ریلیف فنڈ جاری کیا ہے۔ مزید ریلیف فنڈجلد ہی جاری کیا جائے گا۔وزیر اعلیٰ نے ضلع ڈپٹی کمشنر کو ہدایت دی کہ راشن کارڈ کے موصولہ درخواستوں کو نپٹانے کے ٹھیکے کی بنیاد پر بیرونی افراد سے خدمات لی جائیں اور کارڈ تقسیم کرنے کا عمل تیز کیا جائے۔مزید یہ بھی کہا کہ ضلع میں پینے کے پانی کا مسئلہ حل کرنے کے لئے تجویز اور منصوبہ حکومت کے پاس بھیج دیا جائے۔جلد ہی اس مسئلے کو حل کرنے کے لئے بنگلورو میں میٹنگ منعقد کی جائے گی۔انہوں نے ضلع ڈی سی کی طرف سے لیڈیز ہاسٹل کے لئے مناسب جگہ کی نشاندہی کرنے پر فنڈ جاری کرنے کا بھی یقین دلایا۔موجود ہ لیڈیز ہاسٹل میں درخواست کنندگان کے لئے جگہ نہ رہنے کی صورت میں کرایے کی عمارت میں ان خواتین کے لئے قیام کا بندوبست کرنے کی ہدایت بھی دی۔کورگاسماج والوں کو گھروں کی تعمیر کے لئے امداد دینے کے باوجود پیش آنے والی مشکلات پر بولتے ہوئے وزیراعلیٰ نے یقین دلایا کہ سرکار کی طرف سے کسی ایجنسی کی معرفت کورگا سماج کو گھر تعمیر کرکے دئے جائیں گے۔

اس موقع پر اراکین اسمبلی کے رگھو پتی بھٹ، سنیل کمار،ہالاڈی سرینواس شیٹی وغیرہ نے بھی اپنے خیالات کا اظہار کیا۔میٹنگ میں ضلع ڈی سی پریانکا میری، ایس پی لکشمن نمبرگی ، محکمہ جاتی افسران اور سیاسی لیڈران موجود تھے۔

ایک نظر اس پر بھی

سرسی اور اطراف میں سرگرم ہے لاولد جوڑوں کو اولاد ہونے کی دوائی کے نام پر دھوکہ دینے والا گروہ ۔ عوام رہیں ہوشیار!

پچھلے تین چار مہینوں سے سرسی ، سداپور اور اس کے اطراف میں ایک گروہ سرگرم ہے جو لاولد جوڑوں کو اولاد ہونے کا یقین دلاکر دوائیاں فروخت کررہا ہے اوربھاری رقم وصول کررہا ہے ، جب کہ دوائیوں کاکوئی مثبت اثر نہیں ہوتا۔

گوکرن میں سیاحوں کو یومیہ کرایہ پر اسکوٹر دینا مالکان کو پڑ گیا مہنگا؛ پولس نے کیا 25 اسکوٹر ضبط

کرایہ پر اسکوٹی بائکس سیاحوں کو دینا اب گوکر ن والوں کو مہنگا پڑ گیا؛ پولس نے بغیر لائسنس اسکوٹی کو کرائے پر دینے کا الزام لگاتے ہوئے قریب ۲۵ اسکوٹی کو ضبط کرلیا ہے اور مالکان پر معاملہ درج کرلیا ہے۔

کنداپورمیں آئس کریم کھانے سے 30بچے بیمار؛ بڑی عمر کی خواتین بھی متاثر

یہاں پیش آئے ایک المناک واقعے میں بیلوے، ہینگاولی اور ٹومبیٹو نامی علاقے میں تقریباً 30بچے آدھی رات کو غذائی سمیت (ٖفوڈ پوئزننگ)   کا شکار ہوگئے جس سے انہیں قئے شروع ہوگئی اور طبیعت بگڑنے لگی تو پہلے انہیں بیلوے کے سرکاری اسپتال میں داخل کیاگیا اور پھر صبح میں کئی بچوں کو نجی ...

ڈانڈیلی کی صادقہ انجم نے ایم ٹیک میں حاصل کی شاندارکامیابی؛  یونیورسٹی لیول پر دوسرا رینک : اردو میڈیم طالبہ کی بہترین کارکردگی پرخوشی کی لہر

ڈانڈیلی کی صادقہ انجم بدرالزماں  ڈاونگیرہ کی یو بی ڈی ٹی کالج آف انجنئیرنگ کی طالبہ وشویشوریا ٹکنکل یونیورسٹی بلگام کی طرف سے منعقدہ ایم ٹیک امتحانات میں یونیورسٹی پر دوسرا اور کالج کی سطح پرپہلا رینک حاصل کرنےپر تعلیمی ماحول میں خوشی ومسرت کی لہر دوڑی ہے۔

سابق ماہی گیر وزیر پرمود مادھوراج نےملپے سے سات ماہی گیروں کے ساتھ بوٹ کی گم شدگی کے لئے نیوی کو قرار دیا ذمہ دار

اڈپی اورچکمگلورو سیٹ سے جنتادل اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار اور سابق وزیر ماہی گیری پرمود مادھو راج نےسات ماہی گیروں کے ساتھ سوورنا تریبھوجا نامی کشتی کی گم شدگی کے لئے بحری فوج کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔

انتخابات کیلئے سرمایہ اکٹھا کرنے اولاٹیکسی پرپابندی عائد کی گئی تھی۔ گوڑا

مرکزی وزیر ڈی وی سداننداگوڑا نے الزام لگایا ہے کہ انتخابات کے لئے سرمایہ توقع کے مطابق جمع نہ ہونے کی وجہ سے کانگریس ۔ جنتادل (یس) مخلوط حکومت نے اولا ٹیکسی خدمات پر6؍ماہ کے لئے پابندی عائد کی تھی۔

دیوے گوڈا ٹمکورسے نامزدگی داخل کریں گے، کانگریس کے موجودہ ایم پی مدوہنومے گوڈا بھی اس حلقہ سے نامزدگی داخل کرنے پر بضد

اب تک بھی یہ خبریں ہیں کہ جے ڈی ایس کے سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڈا ٹمکورپارلیمانی حلقہ سے چناؤ لڑیں گے۔ کانگریس اور جے ڈی ایس کے درمیان سیٹوں کی تقسیم میں ٹمکور حلقہ جے ڈی ایس کے حصے میں گیاہے ،