ٹیوٹر پر گمراہ کن خبر، آر ایس ایس کے حملے کو سی پی ایم حملہ قرار دینے کی کوشش مہنگی پڑی

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 19th May 2017, 2:51 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:18/مئی(ایس او نیوز) ریاست سے منتخب رکن راجیہ سبھا اور کیرلا کے ایشیا نیٹ چینل کے مالک راجو چندرشیکھر مصیبت میں پھنس گئے ہیں۔کنور میں آر ایس ایس کارکنوں کی طرف سے ایک ایمبولنس پر حملہ کی خبر کو توڑمروڑ کر ٹیوٹر پر انہوں نے ایمبولنس پر سی پی ایم کا رکنوں کا حملہ قرار دیاتھا۔ اسی خبر کو نئے نیوز چینل ریپلک ٹی وی نے بھی دکھایا۔اسی بنیاد پر ایشیا نیٹ اور ریپبلک ٹی وی کے خلاف تعذرات ہند کی دفعہ 153Aکے تحت فوجداری مقدمہ دائر کرنے کیلئے ایف آئی آر درج کیاگیا ہے۔ آر ایس ایس کے اس حملے کو کمیونسٹ پارٹی کارکنوں کا حملہ قرار دیتے ہوئے راجو چندر شیکھر نے جو ٹیوئٹ کیاتھا اسی کی بنیاد پر پولیس نے یہ کارروائی شروع کی ہے۔ حملہ میں ایک مریض کو ایمبولنس کے ذریعہ یہاں کے پریارم میڈیکل کالج میں داخل کیاجارہاتھاکہ آر ایس ایس کارکنوں کے ایک بڑے گروپ نے اس ایمبولنس پر حملہ کیا اور ڈرائیور کو زخمی کردیا۔ کنور میں ایمبولنس ڈرائیوروں نے اس حملہ کے خلاف احتجاجی مظاہرہ بھی کیا۔ سی سی ٹی وی مناظر کی بنیاد پر پولیس نے یہ نتیجہ اخذ کیا کہ یہ حملہ آر ایس ایس کارکنوں نے کیا ہے، لیکن راجو چندر شیکھر نے اپنے چینلوں پر یہ خبر اڑائی کہ یہ حملہ سی پی ایم کارکنوں نے کیا ہے۔ اس سلسلے میں کیرلا ریاستی بی جے پی صدر راج شیکھرن کے خلاف بھی اس سلسلے میں مقدمہ درج کیاگیا ہے۔دفعہ153A کے تحت ان پر سماج میں منافرت پھیلانے کا مقدمہ درج کیاگیا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی کرناٹک: سمندری لہروں میں اچانک اچھال۔الال اورآس پاس کے علاقے متاثر۔ گھروں میں گھس آیا سمندرکا پانی۔ایک لڑکا ہوگیا غرقاب

پچھلے کچھ دنوں سے بدلتے ہوئے موسم اور بحیرۂ عرب میں ہوا کے گھٹتے ہوئے دباؤ کی وجہ سے 22اپریل کی دوپہر سے ہی سمندر کی لہروں میں اچانک غیر معمولی اچھال پیدا ہوگیا جس سے ساحلی علاقوں میں سُنامی جیسی خوف و دہشت کا عالم دکھائی دیا۔ 

کانگریس کی دوسری فہرست جاری۔بادامی سے بھی سدارامیاامیدوار، رائچور سے سید یاسین اورشانتی نگر سے حارث کی سیٹ محفوظ

ریاست میں اسمبلی انتخابات کے لئے مختلف سیاسی پارٹیوں کی جانب سے پرچۂ نامزدگی داخل کرنے کا سلسلہ جاری ہے ۔کانگریس پارٹی کی جانب سے جاری آخری حتمی فہرست نے جہاں وزیراعلیٰ سدارامیاکو بادامی اسمبلی حلقہ سے بی فارم جاری کیاہے

بنگلور میں اے پی سی آر کی جانب سے قانونی جانکاری کا اہم پروگرام؛ ریاست بھر کے ذمہ داران کی شرکت؛ اے پی سی آر اب لوگوں کی اُمید بن گئی ہے؛ یوسف کنّی کا پرزور خطاب

ریاست کرناٹک میں اسمبلی انتخابات کے پیش نظراسوسی ایشن فار پروٹکشن آف سول رائٹس (اے پی سی آر) کرناٹکا چاپٹر کے زیر اہتمام 22اپریل بروز اتوار کو ضلعی ذمہ داران کا ایک اہم پروگرام بفٹ ہال، دارلسلام بنگلورمیں منعقد کیاگیا جس میں ریاست بھر کے ذمہ داران نے شرکت کرتے ہوئے اپنے اپنے ...