ملائیشین وزیراعظم اور ٹرمپ میں دہشت گردی کے امور پر بات چیت

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 13th September 2017, 11:54 PM | عالمی خبریں |

واشنگٹن،13ستمبر(ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا)ملائیشیا کے وزیراعظم نجیب رزاق نے گذشتہ روز واشنگٹن میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ملاقات کی۔ اس ملاقات میں دونوں ہ نماؤں کے درمیان دہشت گردی کے خلاف جاری جنگ، عالمی تنازعات اور دو طرفہ تجارت کو فروغ دینے سمیت باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ صدر ٹرمپ نے وائٹ ہاؤس میں ملیشیا کے وزیر اعظم نجیب رزاق کا خیر مقدم کرتے ہوئے اپنے ملک میں سرمایہ کاری کرنے اور دہشت گردی کے خلاف لڑنے کی کوششوں کو سراہا۔صدر ٹرمپ نے منگل کے روز کہا کہ وہ اور انڈونیشیا کے وزیر اعظم نجیب بہت بڑے تجارتی معاہدوں پر کام کررہے ہیں جن میں 10ارب سے 20ارب ڈالر مالیت کے بوئنگ طیارے اور جنرل الیکٹرک جیٹ انجن شامل ہیں۔

وزیر اعظم نجیب نے تصدیق کی کہ پانچ سال کی مدت میں اس معاہدے کی مالیت 10ارب ڈالر سے بڑھ جائے گی۔ انہوں نے بتایا کہ یہ طیارے سرکاری کمپنی ملائیشیا ایئر لائنز میں شامل کیے جائیں گے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ ملائیشیا دہشت گردی کے خلاف جنگ میں امریکا کے ساتھ بھرپور تعاون جاری رکھے گا۔ان کا کہنا تھا کہ ہم نے 737قسم کے 25اور 787ماڈل کے 8طیاروں کے سودے کئے ہیں جب کہ 737ماڈل کے مزید 25طیارے خریدے جا سکتے ہیں۔

ملائیشیا کے وزیر اعظم نے کہا ملک کے پنشن فنڈ کے 7ارب ڈالر سے پہلے ہی امریکہ میں سرمایہ کاری کی جا چکی ہے جب کہ مزید تین سے چار ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا منصوبہ ہے۔نجیب رزاق نے کہا ہے کہ ان کا ملک داعش اور القاعدہ جیسے دہشت گرد گروپس کے خلاف لڑنے کے لیے پر عزم ہے اور یہ کہ دہشت گرد امریکہ اور ملائیشیا دونوں کے دشمن ہیں۔ہم دنیا کے اس حصے کو دہشت گردوں سے محفوظ رکھنے کے لیے ہر ممکن اقدامات کریں گے۔انہوں نے صدر ٹرمپ پر زور دیا کہ وہ اعتدال اور ترقی پسند مسلم حکومتوں کی مدد کے لیے اسلامی دنیا کے عوام کے دل اور ذہن جیتنے کی کوشش کریں۔ ان کا کہنا تھا کہ اسلام کا حقیقی چہرہ آپ ملائیشیا میں دیکھ سکتے ہیں۔

وزیراعظم نجیب رزاق نے کہا کہ امریکا کا دشمن ملائیشیا کا دشمن ہے۔ دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خلاف ملائیشیا امریکا کے ساتھ مل کر کام کرتا رہے گا۔خیال رہے کہ ملائیشیا کا شمار جنوب مشرقی ایشیائی ممالک میں امریکا کے اہم اتحادیوں میں ہوتا ہے۔ توقع ہے کہ رواں سال کے آخیر تک صدر ٹرمپ بھی ملائیشیا کا دورہ کریں گے۔ متوقع طور پر وہ جنوب مشرقی ایشیائی ریاستوں کے دورے کے دوران فلپائن اور ویتنام بھی جائیں گے۔

ایک نظر اس پر بھی

ایجنسیوں سے بہتر رپورٹیں تو میڈیا سے مل جائیں گی: سپریم کورٹ

سپریم کورٹ نے فیض آباد دھرنے سے متعلق خفیہ اداروں کی رپورٹوں پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے نئی رپورٹیں جمع کرانے کی ہدایت کی ہے۔عدالتِ عظمیٰ کے جج قاضی فائز عیسٰی نے ریمارکس دیے ہیں کہ جب ریاست ختم ہو جائے گی تو قتل سڑکوں پر ہوں گے۔

نائیجیریا میں نمازیوں پر حملہ انتہائی قابلِ مذمت: ترجمان

امریکی محکمہ خارجہ نے منگل کو نائجیریا میں ریاستِ ادماوا میں موبی کے مقام پر ہونے والے دہشت گرد حملے کی مذمت کی ہے۔ترجمان ہیدر نوئرٹ نے کہا ہے کہ ’’اِس جانی نقصان پر ہم نائجیریا کے عوام اور متاثرہ خاندانوں سے دلی تعزیت کا اظہار کرتے ہیں‘‘۔

بنگلہ دیش میں جماعتِ اسلامی کے 6 رہنمائوں کو سزائے موت

 بنگلہ دیش میں ایک عدالت نے بدھ کو جماعتِ اسلامی کے 6 ارکان کو 1971 کی پاکستان کے خلاف جنگِ آزادی کے دوران جنگی جرائم کے مبینہ الزامات پر موت کی سزا سنادی۔ان افراد کو انٹرنیشنل کرائم ٹریبونل کے ایک تین رکنی پینل نے سزاسنائی ۔