مغربی بنگال: کرشنا گنج سے ترنمول کانگریس کے ممبر اسمبلی ستیہ جیت بشواس کاقتل

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 10th February 2019, 11:34 PM | ملکی خبریں |

کولکاتہ،10 ؍فروری (ایس او نیوز؍آئی این ایس انڈیا) مغربی بنگال میں سیاسی قتل کا دور ختم ہونے کا نام نہیں لے رہا ہے۔نادیہ ضلع کے کرشنا نگر اسمبلی سیٹ سے ٹی ایم سی کے ممبر اسمبلی ستیہ جیت بشواس کو نامعلوم حملہ آوروں نے گولی مار کر قتل کر دیا ہے۔حملے کی اطلاع ملتے ہی مقامی پولیس موقع پر پہنچی اور زخمی رکن اسمبلی کو اسپتال پہنچایا گیا۔جہاں ڈاکٹروں کی ٹیم نے انہیں مردہ قرار دیا۔پولیس نے اس وقت لاش کو قبضے میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لئے بھیج دیا ہے۔پولیس کی خصوصی ٹیم اس پورے معاملے کی فی الحال تحقیقات کر رہی ہے۔معاملے کی تحقیقات کر رہے پولیس کے مطابق بشواس پر اس وقت حملہ ہوا جب وہ جلپائی گڑی ضلع کے پھلباڑي علاقے میں سرسوتی پوجا کے موقع پر پوجا کر رہے تھے۔واقعہ کے وقت بشواس ریاست کے وزیر رتن گھوش اور ٹی ایم سی کے ضلع صدر گوری شنکرکے ساتھ تھے۔پولیس افسر نے بتایا کہ 37 سالہ بشواس کی کچھ دن پہلے ہی شادی ہوئی تھی۔اہلکار کے مطابق ملزمان نے بشواس پر تابڑ توڑ کئی راؤنڈ فائرنگ کی۔

ایک نظر اس پر بھی

ریاستیں کشمیری شہریوں کو تحفظ فراہم کرائیں،مرکز نے مشاورت جاری کی

پلوامہ دہشت گردانہ حملے کے پیش نظر ملک کے مختلف حصوں میں جموں کشمیر سے متعلق لوگوں پر حملے کی خبروں کے درمیان مرکزنے جمعہ کی رات تمام ریاستوں کو جموں کشمیر سے متعلق لوگوں کی حفاظت کو یقینی بنانے کی ہدایت دی۔

پی چدمبرم کا طنز، مودی کے رہتے بی جے پی کو کسی کی صلاح کی کیا ضرورت

لیفٹیننٹ جنرل (ریٹائرڈ) ڈی ایس ہڈا کو کانگریس کی جانب سے قومی سلامتی پرمشاورت تیار کرنے کی ذمہ داری دئے جانے کو لے کر وزیر خزانہ ارون جیٹلی کے حملے پر جوابی حملہ کرتے ہوئے کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم نے ہفتہ کو طنز کیا

رابرٹ واڈرا نے عدالت میں عرضی داخل کر معاملے سے منسلک دستاویزات کی کاپیاں مانگی

منی لانڈرنگ کے معاملات میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ (ای ڈی) کی جانچ کا سامنا کر رہے رابرٹ واڈرا نے ہفتہ کو دہلی کی ایک عدالت میں عرضی داخل کر جانچ ایجنسی سے کیس سے منسلک دستاویزات کی کاپیاں مانگی۔

ہماری حکومت بنی تو نیم فوجی دستوں کے جوانوں کو ملے گا شہید کا درجہ: راہل گاندھی

کانگریس صدر راہل گاندھی نے سنیچر کو کہا کہ آئندہ لوک سبھا انتخابات کے بعد ان کی پارٹی کی حکومت بننے پرملک کے لیے جان نچھاور کرنے والے نیم فوجی دستوں کے جوانوں کو بھی ’شہید‘ کا درجہ دینے کا بندوبست کیا جائے گا۔