امین سیف اللہ بی پی ایل ٹورنامنٹ: ٹریک چارجرسیمی فائنل میں داخل؛ اگلے جمعہ کو کھیلا جائے گا سیمی فائنل اور فائنل

Source: S.O. News Service | By I.G. Bhatkali | Published on 31st March 2018, 8:29 PM | خلیجی خبریں | اسپورٹس |

عجمان 31/مارچ (ایس او نیوز) جمعہ کو کھیلے گئے آخری لیگ میچوں کے بعد  ٹریک چارجر امین سیف اللہ بی پی ایل 2018 کرکٹ ٹورنامنٹ  کے  سیمی فائنل میں پہنچنے میں کامیاب ہوگئی ہے، اس سے قبل تین ٹیمیں  این جی ٹی، کے ایم وارئیرس اور ڈی وی ایس یونائٹیڈ سیمی فائنل میں پہنچنے میں کامیاب ہوگئیں تھیں۔

جمعہ کو کھیلے گئے تین لیگ میچوں میں کے ایم وارئیرس نے ابوظبی رائیڈرس کو، ڈی وی ایس یونائیٹیڈ نے رکن الدین چیلنجرس کو اور این جی ٹی اسٹرائکر نے ٹریک چارجرس کو شکست دی تھی۔ خیال رہے کہ ابوظبی رائیڈرس، رکن الدین چیلنجرس اور ٹریک چارجرس اپنے کھیلے گئے تینوں میں میچوں میں ایک بھی میچ جیتنے میں کامیاب نہیں ہوسکیں اور نتیجتاً رن ریٹ کی بنیاد پر  ٹریک چارجرس کو سیمی فائنل میں داخل ہونے کا موقع ملا۔

پہلا میچ ابوظبی رائڈرس اور کے ایم واریئر کے درمیان کھیلا گیاتھا ۔ ٹاس ہار کر پہلے بلے بازی کرتے ہوئے کے ایم واریئر نے 19.5اوروں میں 132 رن بنائے ۔میچ میں کپتان شہزاد اکرمی اور سید رافع بافقی نے آخری اوروں میں اچھی بلے بازی کا مظاہرہ پیش  کرتے ہوئے ٹیم کو ایک حدتک اچھے اسکور تک  پہنچایا ۔ مخالف ٹیم کے سید نورالمبین اور سید اعجاز صدیقہ نے اچھی گیند بازی کی اور تین، تین وکٹیں  حاصل کرنے میں کامیاب ہوئے ۔ حالانکہ اسکور زیادہ بڑا نہیں تھا، مگر اس کے بائوجود ابوظبی رائڈرس کی اننگز شروع سے لے کرآخر تک بے حد  خراب رہی  اور پوری  ٹیم ۷۰ رنوں کے مجموعی اسکور پر ڈھیر ہوگئی ۔  ناگراج نائک نے  تباہ کن گیندبازی کرتے ہوئے  اپنے تین اوورں میں پانچ رن دیکر ۴ کھلاڑیوں کو اپنا شکار بنایا اور اس طرح یہ میچ 52 رنوں سے کے ایم وارئیرس نے جیت لیا ۔ ناگراج نائک کو مین اف دی میچ  کے اعزاز سے نوازا گیا۔ 

دوسرا میچ رکن الدین چیلنجر اور ڈی وی ایس یونائٹید کے درمیان کھیلا گیا ۔ ڈی وی ایس یونائیٹڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ ۲۰ اوورو ں میں ۹ وکٹوں کے نقصان پر ۱۶۵ رن بنائے جس میں عبدالمقیط کوچاپو کے ۳۶ اور معتصم جاکٹی کے ۵۵ رن شامل ہیں ۔ جعفر صادق شاہ بندری نے تین وکٹ حاصل کئے ۔ رکن الدین چیلنجر کے لئے یہ بڑا چیلنج تھا لیکن وہ اس میچ  کو بھی  جیت میں تبدیل کرنے میں  ناکام رہے ۔ ذاکر رکن الدین کے ۲۳ ‘ سمیع اللہ ائیکری کے ۲۷ اور جعفر توصیف قاسمجی کے ۲۳ رن کے باو جود مقررہ ۲۰ اووروں میں پوری ٹیم ۱۴۹ رن ہی بنا پائی ‘ عبدالمقیط کوچاپو نے آل راؤنڈ کا کردگی پیش کرتے ہوئے چار وکٹ اور معتصم جاکٹی نے بھی بہترین کارکردگی پیش کرتے ہوئے تین وکٹ حاصل کئے اس طرح یہ میچ ڈی وی ایس یونائیٹیڈ نے ۱۶ رنوں سے جیت لیا ۔ عبدالمقیط کوچاپو کو مین آف دی میچ کے خطاب سے نوازا گیا ۔ 

تیسرا میچ  این جی ٹی اسٹرائکر اور ٹریک چارجر کے درمیان کھیلا گیا ۔ ٹاس ہار کر پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے این جی ٹی کے بلے باز عبادہ برماور نے دھواں دھار اننگز کھیلی جس میں انہوں نے ۳۷ گیندوں پر ۱۰ چھکوں او ر ۵ چوکوں کی مدد سے ۹۶ رن بنائے اس کے علاوہ صفوان شانو نے بھی ۳۱ رن بنائے اس طرح ٹیم نے  ۲۱۰ رنوں کا پہاڑ نما ا اسکور کھڑا کردیا ۔ میچ میں ٹریک چارجر کے  شمعون شاہ بندری نے ہیٹ ٹرک بھی لی، مگر این جی ٹی کو بڑا اسکور کھڑا کرنے سے نہ روک سکے۔ ایک مضبوط اسکور کا پیچھا کرتے ہوئے ٹریک چارجر نے بھی اچھی بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اس کے بلے باز خاص کر نعمان طاہرہ  نے دھواں دار بلے بازی کی اور ۳۰ گیندوں پر ۵ چھکوں اور ۴ چوکوں کی مدد سے ۶۰ رن بنائے ۔ اس کے علاوہ محبوب رضا اور شیس ملا نے بھی بالترتیب ۴۱ اور ۲۵ رن بنائے اور اپنی ٹیم کو جیت کے قریب تک لے آئے لیکن ان تمام کی کوشش کو این جی ٹی بولروں نے کامیاب ہونے نہیں دیا اور آخری اوو ر میں طحہ معلم نے بہترین گیند بازی کرتے ہوئے  ٹریک چارجر کی کوششوں پر پانی پھیر دیا۔ ایک دلچسپ اور سخت مقابلے میں  میچ این جی ٹی اسٹرائکر نے صرف ۴ رنوں سے میچ جیت لیا ۔ لیکن چونکہ  ٹریک چاجر کا رن ریٹ دیگر تین ہارے والی ٹیموں کے مقابلے میں کافی اچھے تھے، اُسی بنیاد پر یہ ٹیم بھی سیمی فائنل تک پہنچنے میں کامیاب ہوئی۔  این جی ٹی اسٹرائکر کی طرف سے عبادہ‘عبدالرحمن اور صفوان شانونے دو دو وکٹ حاصل کئے  عبادہ کو مین آف دی میچ کے خطاب سے نوازا گیا ۔ 

امین سیف اللہ بی پی ایل 2018 کا سیمی فائنل اگلے جمعہ ۶ اپریل صبح این جی ٹی اسٹرائکر اور ٹریک چارجر کے درمیان اور دوپہر میں کے ایم واریئر اور ڈی وی ایس یونائیٹیڈ کے درمیان کھیلا جائیگا ، جبکہ اسی  شام ۷ بجے ٹورنامنٹ کا فائنل میچ ہوگا۔

ایک نظر اس پر بھی

ایران میں قید ضلع شمالی کینرا کے ماہی گیروں نے رہائی کی اپیل کے ساتھ جاری کیا نیا ویڈیو؛ اُترکنڑا کے ڈپٹی کمشنر نے جلد رہائی کی دی یقین دہانی

ایرانی سمندری حدود کے خلاف ورزی کرنے کے الزام میں دبئی سے ماہی گیری کے لئے نکلنے والے شمالی کینرا کے جن 18افراد کو ایرانی حفاظتی دستے نے گزشتہ تقریباً ساڑھے تین مہینوں سے ’کشتیوں میں قید‘کررکھا ہے ، انہوں نے ایک نیا ویڈیو جاری کرتے ہوئے مجلس اصلاح وتنظیم، دبئی جماعت ، ضلع ...

 قطر  حلقہ ادب اسلامی کے زیراہتمام ڈاکٹر شاہ رشاد عثمانی کی صدارت میں  نعتیہ اجلاس ومشاعرہ کا انعقاد

بڑی مسرت کی بات ہے کہ حلقہء ادب اسلامی۔قطر نے 8 نومبر 2018م کی شب اپنا سالانہ نعتیہ اجلاس ومشاعرہ  ادار ہ ادب اسلامی ہند کے کل ہند صدر  ڈاکٹر شاہ رشاد عثمانی کی صدارت میں منعقد کیا، موصوف محترم، حلقے کی خصوصی دعوت پر دوحہ قطر تشریف لائے ہوے تھے، اجلاس میں ڈاکٹر رضوان رفیقی فلاحی ...

دوحہ قطر میں ’جدید ادبی تحریکات و نظریات پر ایک نظر‘توسیعی خطبہ کا انعقاد : ڈاکٹر شاہ رشاد عثمانی    کا پرمغز خطاب

جدید ادبی تحریکات و نظریات پر ایک نظر، اس عنوان کے تحت مؤرخہ 10 نومبر 2018م سنیچر کی شام حلقہء ادب اسلامی قطر نے ڈاکٹر شاہ رشاد عثمانی صاحب کی ہندوستان سے آمد کی مناسبت سے استفادہ کرتے ہوئے ایک توسیعی خطبہ کا اہتمام کیا، ڈاکٹر صاحب حلقہ کے سالانہ نعتیہ اجلاس و مشاعرہ کی صدارت کے ...

جیل میں بندہیرا گروپ کی ڈائریکٹر نوہیرانے فوٹو شاپ جعلسازی سے عوام کو دیا دھوکہ۔ گلف نیوز کا انکشاف

دبئی سے شائع ہونے والے کثیر الاشاعت انگریزی اخبار گلف نیوز نے ہیرا گولڈ کی ڈائرکٹر نوہیرا شیخ کی جعلسازی کا بھانڈہ پھوڑتے ہوئے اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ    کس طرح اس نے فوٹو شاپ کا استعمال کرتے ہوئے بڑے بڑے ایوارڈ حاصل کرنے اور مشہور ومعروف شخصیات کے ساتھ اسٹیج پر جلوہ افروز ...

سعودی شہزادے کی گیارہ ماہ بعد رہائی

سعودی عرب میں گذشتہ سال بدعنوانی پرکریک ڈاؤن کے عمل کی تنقید کرنے والے سعودی شہزادے خالد بن طلال کو کئی ماہ کی حراست کے بعد رہا کر دیا گیا ہے۔شہزادہ خالد بن طلال کے رشتہ داروں نے سوشل میڈیا پر ان کی تصویر پوسٹ کی ہے جس کے بارے میں یہ خیال ظاہر کیا جا رہا ہے کہ وہ گذشتہ ایک دو روز ...

آئی پی ایل 2019:کولکاتہ نائٹ رائیڈرس نے تیز گیندباز مچل اسٹارک کا معاہدہ ختم کردیا 

آسٹریلیا کے تیز گیند باز مچل اسٹارک نے کہا کہ انڈین پریمیئر لیگ ٹیم کولکاتا نائٹ رائڈرس نے انہیں ٹیم سے ریلیز کر دیا ہے۔ انہیں اس کی معلومات ٹیم کے مالکان کی جانب سے ایس ایم ایس کے ذریعہ ملی۔