ٹیپو سلطان کا کَنّڑا حکم نامہ

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th November 2017, 11:11 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو،11/نومبر(ایس او نیوز)ٹیپو جینتی تقریبات کو لے کر بعض حلقوں کی طرف سے ٹیپو سلطان پر یہ الزام بار بار عائد کیا جاتا رہا ہے کہ وہ کنَّڑا دشمن تھے۔تاریخوں میں یوں تو ذکر آتا رہا ہے کہ ٹیپوسلطان کَنّڑا سے خوب اچھی طرح واقف تھے لیکن اس دعوے کی تائید میں کوئی ثبوت ابھی تک پیش نہیں کیا گیا تھا۔اس سلسلے میں پروفیسر م ن سعید صاحب نے اپنی تحقیق کے ذریعے یہ معلوم کر لیا ہے کہ ٹیپو سلطان نہ صرف یہ کہ کَنّڑا سے واقف تھے بلکہ انہوں نے کَنّڑا زبان میں سلطانی احکامات و فرامین بھی جاری کئے تھے۔ ٹیپو سلطان کے دربار سے اس طرح کا ایک حکم نامہ کَنّڑا زبان میں دریافت ہوا ہے جو سلطانی عہد میں قائم کئے ہوئے ذخیرہ گھروں کے اہلکاروں کی تنخواہوں کی تفصیل پیش کرتا ہے۔ اس کَنّڑاحکم نامے کا عنوان ہے۔حکم نامہ بنامِ داروغہ و متصدیانِ حال و ااسقبال تعلقہ اُگرانا۔یعنی یہ حکم نامہ تعلقہ ذخیرہ گھروں کے داروغان و متصدیان کے نام جاری کیا جاتا ہے۔یہ حکم نامہ قدیم کَنّڑا میں تحریر کیا گیا ہے جسے موڈی کَنّڑا کہا جاتا ہے اور تین صفحات پر مشتمل ہے۔پروفیسر م ن سعید نے مو؛ی کنّڑا کے ماہرین سے مل کر اسے جدید کنّڑا میں منتقل کیا اور ٹیپو جینتی کے موقع پر وزیرِ اعلیٰ سدّرامیّا کو پیش کیا۔اس موقع پر وزیرِ انفرا اسٹرکچر و حج جناب روشن بیگ صاحب اور جناب وزیر جناب ایچ کے پاٹل موجود تھے۔وزیرِ اعلیٰ نے اس کی بڑی ستائش کی اور کہا کہ یہ ثبوت ہے اس حقیقت کا کہ ٹیپو کنّڑا جانتے بھی تھے اور سرکاری امور میں اس کا استعمال بھی کرتے تھے۔اس کے ہوتے بی جے پی کے سارے پروپیگنڈے کا جھوٹ ظاہر ہو گیا ہے۔ٹیپو جینتی کی تقریب کے دوران پروفیسر م ن سعید نے یہ حکم نامہوزیرِ اعلیٰ کو فریم کرواکر پیش کیا۔مذکورہ حکم نامہ ایشیاٹک سوسائٹی، کولکاتا کے ذخیرۂ مخطوطات میں موجود ہے اور اس کا نمبر PSC 1686ہے۔پروفیسر سعید کا کہنا ہے کہ عہدِ ٹیپو میں کنّڑا کے سرکاری استعمال کی مزید شہادتوں کے بارے میں ان کی تحقیق جاری ہے اور ان سب کو یکجا کرکے شائع کیا جائے گا۔

ایک نظر اس پر بھی

انتخابات کے پیش نظر پارٹی لیڈروں کے باہمی تبادلہ خیالات کاسلسلہ سی ایم ابراہیم کی جے ڈی ایس سربراہ دیوے گوڈا سے ملاقات

ریاستی اسمبلی انتخابات جیسے جیسے قریب آنے لگے ہیں ، سیاسی قائدین سے ملاقاتیں اور ان سے تبادلہ خیالات کا سلسلہ شروع ہوجاتا ہے جوکافی اہم اور دلچسپ ہوا کرتا ہے ۔

کانگریس نے لوک سبھا میں بھی طلاق ثلاثہ بل کی مخالفت کی تھی کرناٹک وقف بورڈ کے انتخابات میں تاخیر افسوسناک :ڈاکٹر کے رحمٰن خان

لوک سبھا میں طلاق ثلاثہ بل کے خلاف کانگریس نے کوئی آواز نہیں اٹھائی یہ ایک غلط خبر ہے اور بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی پیداوار ہے جس کو اسی کی ایماء پر میڈیا نے پھیلایاہے۔

اگلا وزیراعلیٰ بنانے ہائی کمان کے اعلان سے سدارامیاکا حوصلہ بلند راہل گاندھی کے بیان سے وزیراعلیٰ کی کرسی پر نظر رکھے لیڈروں کو مایوسی۔ بغاوت کے آثار

ریاست کرناٹک میں ہونے و الے اگلے اسمبلی انتخابات میں کانگریس پارٹی اگر اکثریت حاصل کرکے دوبارہ اقتدار حاصل کرلے گی تو سدارامیا ہی اگلے وزیراعلیٰ ہوں گے ۔

مودی ، یوگی اور ونود سب نے کرناٹک کی توہین کی ،گالی گلوچ بی جے پی کا مزاج ؛گوا کے وزیر آبپاشی ونود پالیکر نے کیا کنڑیگا س کو ذلیل

منہ پھٹ بی جے پی لیڈرز ہر دن کوئی نہ کوئی متنازعہ اور اشتعال انگیز بیان دیتے ہوئے عوامی غیض وغضب کا شکار ہورہے ہیں، بیلگاوی ضلع کے خانہ پور تعلقہ میں چل رہے کلسا نالا تعمیراتی کاموں کا معائنہ کرنے کے بعد گوا کے وزیر برائے آبپاشی ونود پالیکر نے کرناٹک کے باشندوں کو حرامی کہہ ...

اُترکنڑا کے سُودّی ٹی وی نیوز چینل کے رپورٹرکی بائک درخت سے ٹکراگئی؛ رپورٹر کی موقع پر موت

سرسی سے ہانگل جانے کے دوران ایک کنڑا نیوز چینل کے رپورٹر کی بائک تیز رفتاری کے ساتھ  ایک درخت سے ٹکرانے کے نتیجے میں موقع پر ہی اُس کی موت واقع ہوگئی۔ یہ حادثہ اتوار کو ضلع ہاویری کے ہانگل کے قریب گُنڈورو نامی دیہات میں علی الصباح پیش آیا۔