اگلے سال سے ٹیپو سلطان جینتی نہ منانے پر حکومت کا غور

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 14th November 2018, 10:49 PM | ریاستی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بنگلورو،14؍نومبر(ایس او نیوز) ریاستی حکومت کی جانب سے امسال ٹیپو سلطان جینتی تقریبات کا اہتمام جہاں بی جے پی کی طرف سے شدید مخالفت کا سبب بنا تو دوسری طرف جینتی کے اہتمام کو لے کر کانگریس اور جے ڈی ایس میں بھی اختلافات سامنے آرہے ہیں ، بتایاجاتا ہے کہ 10 نومبر کو وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی اور نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر پرمیشور نے ہدایت دی تھی کہ ٹیپوسلطان جینتی تقریبات کا اہتمام مرکز اقتدار ودھان سودھا کی بجائے رویندرا کلاکشیترا میں کیا جائے، اس کے لئے سیکورٹی وجوہات کا حوالہ دیاگیا ۔ لیکن اس کے باوجود وزیراعلیٰ اور نائب وزیراعلیٰ کی ہدایت کی صریح خلاف ورزی کرتے ہوئے ضد کی گئی کہ ٹیپو سلطان جینتی کا اہتمام ودھان سودھا میں ہی ہو، وزیراعلیٰ ایچ ڈی کمار سوامی نے جہاں صحت خراب ہونے کے سبب ٹیپو سلطان جینتی تقریبات میں شرکت نہیں کی تو اس سے پہلے ہی انہوں نے محکمۂ کنڑا اینڈ کلچر اور دیگر کو سخت ہدایت دی تھی کہ اس تقریب کے نامے میں ان کا نام شامل نہ کیا جائے۔ دوسری طرف نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر پرمیشور جو اس تقریب میں مہمان خصوصی کے طور پر مدعو تھے، انہوں نے بھی آخری لمحات میں سنگاپور جانے کے بہانے سے تقریب سے غیر حاضر رہے۔ ان تمام وجوہات کا جائزہ لینے کے بعد وزیر اعلیٰ ایچ ڈی کمارسوامی اور نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور نے اس بات پر اتفاق کرلیا ہے کہ آئندہ سال سے ٹیپو سلطان جینتی کا کوئی سرکاری جلسہ منایا نہیں جائے گا۔ بی جے پی کی طرف سے بارہا یہ الزام لگایا جارہاہے کہ ٹیپو سلطان جینتی کا اہتمام اقلیتوں کورجھانے کے لئے کیا جاتاہے،جے ڈی ایس کا موقف ہے کہ پچھلے اسمبلی انتخابات میں جب اقلیتوں نے اس کا ساتھ ہی نہیں دیاتو پھر وہ کیوں کر اقلیتوں کو رجھائے ، دوسری طرف نائب وزیراعلیٰ ڈاکٹر جی پرمیشور بھی وزیر اعلیٰ کمار سوامی کے موقوف سے متفق ہیں کہ ریاستی حکومت کی طرف سے ایسی کسی بھی تقریب کا اہتمام کرنے سے گریز کیا جائے ، جس کے لئے غیر معمولی سیکورٹی انتظامات کی ضرورت پڑے۔ ان تقریبات کی آڑ میں کچھ لوگوں کی طرف سے سیاسی فائدہ اٹھانے کی کوشش کا بھی وزیراعلیٰ نے سخت نوٹس لیتے ہوئے یہ موقوف اپنایا ہے کہ آئندہ ٹیپو سلطان جینتی تقریبات کا اہتمام حکومت کی طرف سے ہرگز نہیں کیا جائے گا البتہ سیاسی پارٹیاں ، ادارے اور انجمنیں اگر کرناچاہیں تو حکومت اس میں مداخلت نہیں کرے گی۔ ٹیپو سلطان جینتی کی آڑ میں بی جے پی کی طرف سے فرقہ وارانہ بنیاد پر صف بندی کی کوشش کا بھی سخت نوٹس لینے کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ آئندہ ان تمام سے گریز کیا جائے گا۔ 

ایک نظر اس پر بھی

بنگلورو کے تینوں پارلیمانی حلقوں میں بی جے پی انتخابی مہم ،کانگریس اور جے ڈی ایس کے مخلوط امیدواروں کا اب تک اعلان نہیں

بنگلورو شہر کے تینوں پارلیمانی حلقوں میں بھارتیہ جنتاپارٹی( بی جے پی) امیدواروں نے اپنی انتخابی مہم شروع کردی ہے۔ لیکن اتحادی جماعتوں کانگریس،جنتادل نے ابھی تک اپنے امیدواروں کا اعلان نہیں کیاہے۔ بنگلور نارتھ سے موجودہ رکن پارلیمان ومرکزی وزیر ڈی اے سدانندگوڈا، سنٹرل حلقہ ...

لوک سبھا انتخابات میں حق رائے دہی استعمال کرنے زنخوں سے ڈپٹی کمشنر کی اپیل

جمہوری نظام میں18سال سے زائد عمر کے تمام افراد کو رائے دہی کا حق دیاگیاہے۔ ووٹنگ کے اس حق کو ہر صورت میں استعمال کریں۔ بلاکسی خوف وخدشہ کے پولنگ بوتھ پہنچیں اور ووٹنگ کریں۔ یہ باتیں ڈپٹی کمشنر والیکشن افسر بی ایم وجئے شندرا نے کہیں۔

ہوناور میں تمام سہولیات سے آراستہ پہلے "سٹی سنٹر " کا شاندار افتتاح : کئی برانڈڈ کمپنیوں کے اسٹال؛ خریداری کی ہر چیز ہوگی دستیاب

 ہوناورسمیت اطراف کے  عوام  کو اپنی ضروریات کی خریداری کے لئے  دور دراز شہروں میں جانے کی ضرورت  نہیں ہوگی کیونکہ شہر میں  ایک شاندار  ’’سٹی سنٹر  ‘‘ کا افتتاح عمل میں آیا ہے۔ کرناٹکا مائنارٹی ڈیولپمنٹ بورڈ کے سابق چیرمن سلیمان یو تلکھنی کے ہاتھوں آج  بروز پیر اس پہلے ...

بغیر لائسنس کا ریوالوررکھنے پر سابق وزیر آنند اسنوٹیکراوران کے 2 ساتھیوں پر کیس درج۔ ریوالور اور کار ضبط

لائسنس رینیو کیے بغیرریوالور رکھنے کے الزام میں سابق ریاستی وزیر اور درپیش پارلیمانی انتخاب میں جنتا دل اور کانگریس کے مشترکہ امیدوار سمجھے جانے والے آنند اسنوٹیکر اور ان کے دیگر ساتھیوں پر کیس درج کیا گیا ہے۔

بھٹکل مخدوم کالونی میں تیز رفتار کار کی اسکوٹر سے ٹکر؛ عمر رسیدہ شخص جاں بحق

مخدوم کالونی  کے قریب بندر روڈ پر ایک تیز رفتار کار کی اسکوٹر سے ہوئی ٹکر میں اسکوٹر سوار  جاں بحق ہوگیا جس کی شناخت محمد عمر کنڈنگوڑا (76) کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ حادثہ اتوار رات قریب 10:30بجے پیش آیا۔