بلندور تالاب کی صفائی کیلئے جولائی تک مہلت طلب

Source: S.O. News Service | By Jafar Sadique Nooruddin | Published on 19th May 2017, 1:36 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو:18/مئی(ایس او نیوز) شہر کے بلندور تالاب میں دن بدن حالات کے بگاڑ اور آلودگی کے بے قابو حدوں کو عبور کردئے جانے پر نینشل گرین ٹریبونل نے شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے محکمہئ ترقیات بنگلور کے افسران کو آڑے ہاتھوں لیااور اس سلسلے میں ایک شکایت درج کرتے ہوئے اس آلودگی کے ذمہ داروں کے خلاف از خود کارروائی کرنے کی پہل کی ہے۔ اس تالاب کے اردگرد اپارٹمنٹوں اور کامپلکسوں سے جو گندگی تالاب میں بہائی جاتی ہے اس پر روک لگانے کیلئے ٹریبونل نے سخت ہدایات جاری کئے تھے۔ آج ٹریبونل کے جج جسٹس ستیندر کمار نے ریاستی حکومت کو سخت ہدایت دی کہ اس تالاب میں گندہ پانی کسی بھی حالت میں نہ آنے پائے یہ یقینی بنایا جائے۔ تالاب کے اردگرد جتنے بھی اپارٹمنٹ اور کامپلکس موجود ہیں مقررہ وقت میں ان مقامات کا آلودگی کنٹرول بورڈ کی طرف سے معائنہ یقینی بنایا جائے۔ اس حکم کے ساتھ ٹریبونل نے معاملے کی اگلے سماعت 13جولائی تک ملتوی کردی ہے۔ آج اس معاملے میں محکمہئ شہری ترقیات کے اڈیشنل چیف سکریٹری مہیندر جین عدالت میں حاضر رہے۔ اور بلندور تالاب کی صفائی کیلئے جولائی تک کی مہلت دینے کیلئے محکمہ کی طرف سے حلف نامہ دائر کیا۔ اس پر ٹریبونل نے برہمی ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ کسی بھی حال میں اس تالاب میں گندگی بہانے نہ دیا جائے۔

ایک نظر اس پر بھی

اسکولی بچوں کے سوشیل میڈیا استعمال کرنے پر پابندی،پابندی پامال کرنے والوں کو اسکول سے نکال دینے کی تاکید

ریاستی محکمۂ تعلیمات نے کمسن ذہنوں پر سوشیل میڈیا کے اثرات کو دیکھتے ہوئے سختی سے یہ فرمان جاری کیا ہے کہ 13سال کی عمر تک کے بچوں کو سوشیل میڈیا کا استعمال کرنے کی اجازت قطعاً نہ دی جائے۔

مودی حکومت کے انسداد گؤ کشی قانون کو کمار سوامی نے قرار دیا خوش آئند: گائیوں کی دیکھ بھال کیلئے مراکز قائم کرنے کا بھی مشورہ

مرکزی حکومت کی طرف سے کل ملک بھر میں لاگو کئے گئے انسداد گؤ کشی قانون کا سابق وزیراعلیٰ اور ریاستی جنتادل(ایس) صدر ایچ ڈی کمار سوامی نے خیر مقدم کیااور کہاکہ مرکزی حکومت کو چاہئے کہ اس قانون کو نافذ کرنے کے ساتھ ملک بھر میں گائیوں کی دیکھ بھال کیلئے مراکز قائم کرے۔

موسلادھار بارش کی وجہ سے شہر میں عام زندگی متاثر،نشیبی علاقے زیر آب ، دوسو سے زائد درخت اور متعدد بجلی کے کھمبے زمین بوس

شہر میں کل رات ہوئی زبردست بارش کے سبب 200 سے زائد مقامات پر درخت اور بجلی کے کھمبے اکھڑگئے اور ساتھ ہی نہ صرف نشیبی علاقے بلکہ چند مشہور ومعروف سرکاری اور دیگر عمارتوں میں بھی بارش کا پانی گھس آیا۔