کرناٹک ضمنی انتخابات کے نتائج سیکولر پارٹیوں کی اتحاد کی جیت: ایم کے فیضی

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 7th November 2018, 10:57 PM | ملکی خبریں | ریاستی خبریں |

نئی دہلی،7؍نومبر (پریس ریلیز؍ایس او نیوز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا نے کرناٹک میں ہوئے حالیہ ضمنی انتخابات کے نتائج پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے ضمنی انتخابات میں کانگریس ۔ جے ڈی ( ایس ) اتحاد نے 5سیٹوں میں 4پر جیت حاصل کرکے بی جے پی کو شرمناک شکست سے دوچار کیا ہے۔اس ضمن میں ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے اخباری اعلامیہ میں کہا ہے کہ اس کامیابی کی اصل وجہ سیکولر پارٹیوں کی اتحاد ہے۔ ایم کے فیضی نے نتائج پر اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضمنی انتخابات کے نتائج سے پتہ چلتا ہے کہ عوام نے ترقی پسند اور سیکولر اقدار کی قدر کرنے والی پارٹیوں کو منتخب کیا ہے اور بی جے پی جیسی عوام مخالف اور نفرت کی سیاست کو فروغ دینے والی پارٹی کو مسترد کیا ہے۔ یہ کامیابی اس وقت ممکن ہوئی ہے جب کانگریس اور جے ڈی ایس لیڈر شپ نے اپنے انا کو پرے رکھ کر ایک عام کاز کیلئے انتخابی اتحاد کرکے انتخابات میں حصہ لیا ہے۔ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اس بات کی طرف خصوصی نشاندہی کرتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی جو اپنے آپ کو بدعنوانی مٹانے والی پارٹی ہونے کا دعوی کرتی ہے اس نے کرناٹک کے حالیہ ضمنی انتخابات میں ایک پارلیمانی نشست پر ریاست کرناٹک کے بدعنوان سیاستدان کے ایک رشتہ دار کو امیدوار کے طور پر اتارا تھا۔اس بار بی جے پی کو ریڈی۔ یڈی کے پیسے کی طاقت بھی کام نہیں آئی ہے۔ایم کے فیضی نے مزید کہا کہ کرناٹک ضمنی انتخابات کے نتائج 2019کے لوک سبھا انتخابات کے نتائج کا ٹریلر ہے۔ایم کے فیضی نے 2014کے لوک سبھا انتخابات کی یاددہانی کراتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت انا پرست سیکولر پارٹیوں نے آپس میں اتحاد نہیں کیا اور اکیلے ہی انتخابات میں حصہ لیا تھا ۔جس سے سیکولر ووٹ تقسیم ہوئے اور صرف 31%فیصد ووٹ سے بی جے پی اقتدار میں آگئی اور دوسری طرف 69%فیصد رائے دہندگان کے ووٹ مختلف پارٹیوں میں تقسیم ہوگئے جس سے مرکز میں نریندر مودی کی قیادت والی بی جے پی سرکار اقتدار پر قابض ہونے میں کامیاب ہوئی۔ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے اخباری اعلامیہ میں تمام بڑی چھوٹی سیکولر سیاسی پارٹیوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنے انا کو پرے رکھ کر ایک مشترکہ پلیٹ فارم میں جمع ہوکر2019کے عام انتخابات میں کرناٹک کے ضمنی انتخابات کے نتائج کو دہرائیں۔ اس کے علاوہ مستقبل قریب میں ہونے والے ریاستی اسمبلی انتخابات میں بھی تمام سیکولر پارٹیاں متحد ہوکرانتخابات میں حصہ لیں اور عوام مخالف بی جے پی حکومت کو اقتدار سے بے دخل کریں۔

ایک نظر اس پر بھی

پربھنی میں جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کی ورکنگ کمیٹی میں اہم امور طے ہوئے

جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کے اراکین عاملہ کا ایک اہم اجلاس مفتی مرزا کلیم بیگ ندوی صدر جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کی صدارت میں سٹی فنکشن ہال ،پربھنی میں منعقد ہوا ،جس میں حالات حاضرہ اور دیگر چند اہم امور پر تبادلہ خیال کے بعد فیصلہ لیا گیا ۔مجلس عاملہ جمعیۃعلماء مراٹھواڑہ کے اس اجلاس ...

ہندو لیڈر سورج نائک سونی نے اننت کمار ہیگڈے کو کہا،مودی حکومت کا داغدار وزیر؛ اُس کی مخالفت میں کام کرنے کے لئے نوجوانوں کی ٹیم تیار

ضلع شمالی کینرا میں ایک نوجوان ہندو لیڈر کے طور پر اپنی پہچان رکھنے والے کمٹہ کے سورج نائک سونی نے اخباری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ’’ وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں چل رہی مرکزی حکومت میں اننت کمار ہیگڈے کی حیثیت ایک داغداروزیر کی ہے۔ اور ایسا لگتا ہے کہ انہیں ...

کرناٹک میں نوٹیفکیشن کے پہلے دن 6؍امیداروں کی نامزدگیاں داخل 

ریاست میں لوک سبھا الیکشن کے پہلے مرحلہ میں 14؍سیٹوں پر 18؍اپریل کو ہونے والے الیکشن کے لئے پرچہ نامزدگی کرنے کا آغاز ہوگیا ۔ پہلے دن چار حلقوں میں6؍ امیدواروں کی جانب سے 11؍ مزدگیاں داخل کئیں۔ یہ اطلاع ریاستی الیکشن افسر سنجیو کمار نے دی۔

بنگلورو کے تینوں پارلیمانی حلقوں میں ڈی سی پیز کی زیرنگرانی سخت بندوست لائسنس یافتہ 7؍ہزار ہتھیارات تحویل میں :پولیس کمشنر ٹی۔ سنیل کمار

پولیس کمشنر ٹی۔ سنیل کمار نے بتایا کہ بنگلور سنٹرل ،بنگلور نارتھ اور بنگلور ساؤتھ لوک سبھا حلقوں میں ہونے والے پارلیمانی انتخابات کے لئے ڈپٹی کمشنر آف پولیس (ڈی سی پی) سطح کے پولیس افسروں کی نگرانی میں پولیس کا سخت بندوبست کیاگیا ہے۔

کرناٹک میں انتخابات متحد ہوکر لڑنے کانگریس جے ڈی ایس کا فیصلہ 

اگلے لوک سبھا انتخابات کی تیاریوں کے درمیان کانگریس اور جے ڈی ایس کو مقامی سطحوں پر جن مشکلوں کاسامنا کرنا پڑرہاہے ان سے نپٹنے اور متحد ہوکر انتخابات لڑنے کے ساتھ ریاست میں زیادہ سے زیادہ سیٹوں پر کامیابی حاصل کرنے کے لیے آج کانگریس اور جے ڈی ایس قائدین کااعلیٰ سطحی اجلاس ہوا۔ ...

دھارواڑمیں زیر تعمیر عمارت گر گئی ، 2افراد ہلاک ، کئی زخمی 

دھارواڑ میں زیر تعمیر 5منزلہ عمارت بیٹھ گئی جس کے سبب 2افراد ہلاک اورکئی افراد کے زخمی ہونے کی اطلاع ملی ہے ۔ اس حادثے میں سلیم مکاندار (28)ہلاک ہوگئے ہیں ۔ دھارواڑ کے کمار میشورنگر میں زیر تعمیر کامپلکس گرگیا۔ ملبے کے نیچے دبے ہوئے افراد کو باہر نکالنے کے لیے محکمۂ پولیس ، فارئر ...