کرناٹک ضمنی انتخابات کے نتائج سیکولر پارٹیوں کی اتحاد کی جیت: ایم کے فیضی

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 7th November 2018, 10:57 PM | ملکی خبریں | ریاستی خبریں |

نئی دہلی،7؍نومبر (پریس ریلیز؍ایس او نیوز) سوشیل ڈیموکریٹک پارٹی آف انڈیا نے کرناٹک میں ہوئے حالیہ ضمنی انتخابات کے نتائج پر مسرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے ضمنی انتخابات میں کانگریس ۔ جے ڈی ( ایس ) اتحاد نے 5سیٹوں میں 4پر جیت حاصل کرکے بی جے پی کو شرمناک شکست سے دوچار کیا ہے۔اس ضمن میں ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے اخباری اعلامیہ میں کہا ہے کہ اس کامیابی کی اصل وجہ سیکولر پارٹیوں کی اتحاد ہے۔ ایم کے فیضی نے نتائج پر اپنا ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضمنی انتخابات کے نتائج سے پتہ چلتا ہے کہ عوام نے ترقی پسند اور سیکولر اقدار کی قدر کرنے والی پارٹیوں کو منتخب کیا ہے اور بی جے پی جیسی عوام مخالف اور نفرت کی سیاست کو فروغ دینے والی پارٹی کو مسترد کیا ہے۔ یہ کامیابی اس وقت ممکن ہوئی ہے جب کانگریس اور جے ڈی ایس لیڈر شپ نے اپنے انا کو پرے رکھ کر ایک عام کاز کیلئے انتخابی اتحاد کرکے انتخابات میں حصہ لیا ہے۔ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اس بات کی طرف خصوصی نشاندہی کرتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی جو اپنے آپ کو بدعنوانی مٹانے والی پارٹی ہونے کا دعوی کرتی ہے اس نے کرناٹک کے حالیہ ضمنی انتخابات میں ایک پارلیمانی نشست پر ریاست کرناٹک کے بدعنوان سیاستدان کے ایک رشتہ دار کو امیدوار کے طور پر اتارا تھا۔اس بار بی جے پی کو ریڈی۔ یڈی کے پیسے کی طاقت بھی کام نہیں آئی ہے۔ایم کے فیضی نے مزید کہا کہ کرناٹک ضمنی انتخابات کے نتائج 2019کے لوک سبھا انتخابات کے نتائج کا ٹریلر ہے۔ایم کے فیضی نے 2014کے لوک سبھا انتخابات کی یاددہانی کراتے ہوئے کہا ہے کہ اس وقت انا پرست سیکولر پارٹیوں نے آپس میں اتحاد نہیں کیا اور اکیلے ہی انتخابات میں حصہ لیا تھا ۔جس سے سیکولر ووٹ تقسیم ہوئے اور صرف 31%فیصد ووٹ سے بی جے پی اقتدار میں آگئی اور دوسری طرف 69%فیصد رائے دہندگان کے ووٹ مختلف پارٹیوں میں تقسیم ہوگئے جس سے مرکز میں نریندر مودی کی قیادت والی بی جے پی سرکار اقتدار پر قابض ہونے میں کامیاب ہوئی۔ایس ڈی پی آئی قومی صدر ایم کے فیضی نے اپنے اخباری اعلامیہ میں تمام بڑی چھوٹی سیکولر سیاسی پارٹیوں سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنے انا کو پرے رکھ کر ایک مشترکہ پلیٹ فارم میں جمع ہوکر2019کے عام انتخابات میں کرناٹک کے ضمنی انتخابات کے نتائج کو دہرائیں۔ اس کے علاوہ مستقبل قریب میں ہونے والے ریاستی اسمبلی انتخابات میں بھی تمام سیکولر پارٹیاں متحد ہوکرانتخابات میں حصہ لیں اور عوام مخالف بی جے پی حکومت کو اقتدار سے بے دخل کریں۔

ایک نظر اس پر بھی

مالیگاؤں 2008ء بم دھماکہ معاملہ، بم دھماکوں میں زخمی ہونے والے دو افراد نے گواہی دی، دفاعی وکلاء عدالت سے غیر حاضر ، جرح اگلے ہفتہ متوقع

مالیگاؤں ۲۰۰۸ء بم دھماکہ معاملے میں سماعت روز بہ روز جاری ہے ، آج اس معاملے میں بم دھماکوں میں زخمی ہونے والے دو افراد کی گواہی عمل میں آئی

مثبت فکر اورتوانائی سے ملک کی ترقی ہوتی ہے:ارون جیٹلی 

مودی حکومت کے ناقدین کو بات بات پر احتجاج کرنے والا بتاتے ہوئے وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے جمعرات کو ان پر جھوٹ گھڑنے اور ایک منتخب حکومت کو کمزور کرکے جمہوریت کو برباد کرنے کا الزام لگایا۔ طبی معائنہ کے لیے امریکہ دورہ پر گئے ارون جیٹلی نے ایک فیس بک پوسٹ میں کہا کہ اظہار رائے کی ...

عد لیہ نے مہاراشٹر میں ڈانس بار پر پابندی لگانے والی کئی تجاویزمستردکیں 

سپریم کورٹ نے مہاراشٹر میں ڈانس بار کے لئے لائسنس اور اس کاروبار پر پابندی لگانے والے کچھ تجاویز جمعرات کومنسوخ کردیئے۔ جسٹس اے کے سیکری کی صدارت والے بنچ نے مہاراشٹر کے ہوٹل، ریستوران اور بار ہاؤس میں فحش رقص پر پابندی اورعورتوں کے وقار کی حفاظت سے متعلق قانون 2016 کے کچھ دفعات ...

کانگریس تشہیری کمیٹی کے نئے صدر ایچ کے پاٹل نے عہدہ کا جائزہ لے لیا ملک کواچھے دن کا وعدہ کرکے اقتدار پرآئی بی جے پی کے لیڈروں نے ملک کوبے روزگاروں کا مرکز بنا دیاہے:وینو گوپال

سابق ریاستی وزیر ایچ کے پاٹل نے آج کرناٹک پردیش کانگریس تشہیری کمیٹی کے صدر کی حیثیت سے عہدہ کاجائزہ لے لیا ۔

بی جے پی کوابھیشک منوسنگھوی نے کہا ، کرناٹک میں کھلواڑہوتاتوقانونی منصوبہ تیارتھا

کرناٹک کے تازہ سیاسی واقعات کے پس منظر میں کانگریس کے سینئر لیڈر ابھیشیک منو سنگھوی نے جمعرات کو کہا کہ اگر بی جے پی ریاست کی مخلوط حکومت کو غیر مستحکم کرنے کے لیے اپنے ’آپریشن لوٹس‘پر آگے بڑھتی تو اس کومنہ توڑجواب دینے کے لیے کانگریس نے منصوبہ تیار کر رکھا تھا۔