یورپی یونین ترکی کے بغیر نامکمل ہے: ایردوآن

Source: S.O. News Service | By Afeef Gawai | Published on 11th January 2017, 8:41 PM | عالمی خبریں |

انقرہ11جنوری(آئی این ایس انڈیا)ترک صدر رجب طیب ایردوآن نے مطالبہ کیا ہے کہ یورپی یونین ترکی کی رکنیت کے حوالے سے معطل شُدہ مذاکراتی عمل پھر سے شروع کرے۔ ایردوآن کا کہنا ہے کہ ترکی کے بغیر یورپی یونین نامکمل ہے۔رجب طیب ایردوآن نے واضح اندازمیں کہا کہ یورپی یونین ترکی کے ساتھ طے کردہ معاہدے کے تحت فوری طور پر ترک شہریوں کے لیے شینگن ممالک کے ویزہ فری سفر کی اجازت دے۔ گزشتہ برس مارچ میں طے پانے والے اس معاہدے کے تحت ترکی کو پابند بنایا گیا تھا کہ وہ اپنے ہاں سے مہاجرین کو غیرقانونی طورپربحیرۂ ایجیئن عبور کر کے یونان پہنچنے سے روکے جب کہ اس کے بدلے میں دیگرمراعات کے علاوہ ترک شہریوں کے لیے شینگن ممالک کے ویزہ فری سفر کا وعدہ بھی کیاگیاتھاجس پراب تک عمل درآمدنہیں ہو پایا ہے۔ یورپی یونین کا موقف ہے کہ ترکی میں ناکام فوجی بغاوت کے بعد جاری کریک ڈاؤن کی آڑ میں حکومت مخالف عناصرکے خلاف کارروائیاں، دہشت گردی سے متعلق سخت قوانین اور آزادیء اظہار پر قدغنیں ختم ہونے کے بعد ہی ویزا فری انٹری سے متعلق یورپی وعدے پر عمل درآمد ممکن ہو سکے گا۔پیر کے روز اپنے ایک بیان میں ایردوآن نے ایک بار پھر یورپی یونین پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا، یورپی یونین ترکی کے لیے اب بھی بہترین اسٹریٹیجک انتخاب ہے۔ تاہم یورپی یونین کی بے ربط پالیسیاں اور ہمارے ملک کی بابت دوہرے معیارات کو اندھے بن کرقبول نہیں کیاجاسکتا۔ترک وزیرخارجہ مولودچاوُش اولو کا کہنا ہے کہ یورپی یونین رکنیت کے حوالے سے مذاکرات میں حائل مصنوعی رکاوٹوں کے خاتمے کے لیے مزید وضاحتیں کرے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ انقرہ حکومت ترک شہریوں کے لیے یورپ میں داخلے کے لیے ویزے کی پابندی جلد ختم ہو جانے کی امید کر رہی ہے۔ یہ بات اہم ہے کہ ترکی کی آبادی 80 ملین ہے، جب کہ ترکی میں سیاسی افراتفری اور رجب طیب ایردوآن کے سخت طرز حکومت کی وجہ سے متعدد صحافی اور دیگر شعبہ ہائے زندگی سے وابستہ ترک شہری یورپی ممالک میں سیاسی پناہ کی درخواست دائر کرتے دکھائی دے رہے ہیں اور ایسے میں ترکی کے لیے ویزے کی پابندیاں ختم کرنے پر متعدد یورپی ممالک کی جانب سے مخالفت دیکھنے میں آ رہی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

چین کی انتہاپسندی جاری: ’محمد‘ نام پر پابندی

چینی حکام نے مسلمان اکثریتی مغربی ریاست ’مشرقی ترکستان‘ یعنی سنکیانگ میں انتہا پسندی سے نمٹنے کا ایک انوکھا طریقہ اختیار کیا ہے اور ریاست بھر میں نوموجود بچوں کینام ’محمد‘ اور ’جہاد‘ رکھنے پر پابندی عاید کی گئی ہے۔امریکی اخبار ’نیویارک ٹائمز‘ میں شائع ہونے والے ایک ...

سیناء: مصری قبیلے نے داعشی کمانڈر کو زندہ جلا ڈالا

مصر میں سیناء کے قبائل نے دھمکی دی ہے کہ دہشت گرد تنظیم داعش کے عناصر کے تعاقب اور ان کو ہلاک کرنے کا سلسلہ جاری رہے گا یہاں تک کہ سیناء کا علاقہ شدت پسندوں سے پاک ہو جائے۔اس دوران الترابین قبیلے کی جانب سے ایک وڈیو جاری کی گئی ہے جس میں قبیلے کے افراد نے داعش کے ایک کمانڈر کو ...

شام میں جنگ بندی کیلئے روس پر دباؤ ڈالنے کا امریکی مطالبہ

امریکا نے سلامتی کونسل کے اجلاس کے دوران عالمی برادری پر زور دیا ہے کہ وہ صدر بشار الاسد کے دیرینہ حلیف روس پر شام میں جنگ بندی اور امدادی کارروائیوں کی بحالی کے لیے ہر ممکن حد تک دباؤ ڈالے۔ سلامتی کونسل کیاجلاس سے خطاب کرتے ہوئے امریکی خصوصی مندوبہ نکی ہیلی نے کہا کہ ’شام میں ...

وینزویلا کا امریکی ریاستوں کی تنظیم کیواے ایس کو چھوڑنے کا فیصلہ

لاطینی امریکی ملک وینزویلا نے اعلان کیا ہے کہ وہ امریکی ریاستوں کی تنظیم OAS کو چھوڑ رہا ہے۔ وینزویلا کے وزیر خارجہ ڈیلسی روڈریگز کے مطابق ان کی حکومت واشنگٹن میں قائم اس علاقائی اتحاد سے نکلنے کے لیے دو سالہ عمل کا آغاز کر دے گی۔ وینزویلا