ہاشم پورہ سانحہ پر دہلی ہائی کورٹ کا فیصلہ دیر سے آیا ہوا ایک درست فیصلہ : مولاناارشدمدنی

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 1st November 2018, 11:41 AM | ملکی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

نئی دہلی،یکم نومبر( پریس ریلیز ؍ایس او نیوز)یہ ملک کی تاریخ میں اپنی نوعیت کا انوکھافیصلہ ہے جو دیر آید درست آید کا مصداق ہے مگر اس سے انصاف کو سربلندی حاصل ہوئی ہے ،یہ الفاظ جمعیۃعلماء ہند کے صدرمولانا سید ارشدمدنی کے ہیں جو انہوں نے ہاشم پورہ قتل عام معاملہ پر آج دہلی ہائی کورٹ کے فیصلہ پر اپنے ردعمل کااظہار کرتے ہوئے کہاکہ اطمینان بخش بات یہ ہے کہ 31برس کے طویل انتظار اور قانونی جدوجہد کے بعد متاثرین کو انصاف مل گیا اور خاطیوں کو ان کے گناہوں کی سزامل گئی ، مولانا مدنی نے کہا کہ آزادی کے بعد سے اب تک ملک بھرمیں25 ہزارسے زائد فسادات ہوچکے ہیں لیکن بیشتر معاملوں میں متاثرین کو انصاف سے محروم رکھا گیا اس تناظرمیں انہوں نے وضاحت کی کہ اگر آزادی کے فورا بعد ہوئے جبل پورجیسے بھیانک فسادات میں خاطیوں کو سزامل جاتی اور قانون و انصاف کے معیارکو برقراررکھا جاتا تو اس کے بعد وقفہ وقفہ سے مسلسل ہونے والے فسادات کو رونماہونے سے روکا جاسکتا تھا اور ان فسادات کے دوران جو ہزاروں قیمتی جانیں ضائع ہوئی اور کروڑوں اربوں کی املاک کا نقصان ملک کوہوا اس سے بچاجاسکتا تھا ،ساتھ ہی فرقہ پرستی کو پھلنے پھولنے سے بھی روکا جاسکتا تھا ، مگر افسوس! جہاں کہیں بھی اس طرح کے واقعات ہوئے تو انہیں ہمیشہ تعصب کی عینک سے دیکھا گیااور انتظامیہ وحکومتی سطح پر متاثرین کے ساتھ امیتاز کا رویہ اپنا کر خاطیوں کی درپردہ حوصلہ افزائی کی گئی جس کے خطرناک نتائج اب سامنے آچکے ہیں ، انہوں نے مزید کہا کہ اسی معاملہ کو دیکھیں پہلے ہی دن سے سب کچھ آئینہ کی طرح صاف تھا عینی شاہدین تھے جو چیخ چیخ کر کہہ رہے تھے کہ پی اے سی نے عمداًاس قتل عام کو انجام دیا ہے مگر انصاف کے حصول میں 31برس کا طویل عرصہ صرف ہوگیا ، مولانا مدنی نے یہ بھی کہا کہ کیا یہ بات حیرت انگیز نہیں ہے کہ ایک ہی معاملہ میں ایک عدالت تمام خاطیوں کو باعزت بری کردیتی ہے تو دوسری عدالت انہیں خاطی قراردیکر سزاسناتی ہے ، انہوں نے آخرمیں کہا کہ اس فیصلے سے عدلیہ پر ہمارااعتماد مزید مضبوط ہوا ہے اور ہم اکثرمواقع پر یہ کہتے آئے ہیں کہ جو کام حکومتوں کو کرنا چاہئے تھا وہ عدلیہ کررہی ہے ، ہاشم پورہ واقعہ اس کی روشن مثال ہے ، انہوں نے کہا کہ ہمارا یہ مانناہے کہ انصاف کا دوہرا پیمانہ نہیں ہونا چاہئے بلکہ اگر کوئی مجرم ہے اور اس کا جرم ثابت ہوجاتا ہے تو وہ خواہ کسی بھی مذہب سے تعلق رکھتا ہواورکسی بھی رتبہ یا منصب پر فائز ہواسے سزاملنی چاہئے ، ،قابل ذکر ہے کہ 2015میں دہلی کی تیس ہزاری کورٹ نے تمام خاطیوں کو کلین چیٹ دیدی تھی تو اس کے فورابعد مولانا مدنی نے اترپردیش کے اس وقت کے وزیراعلیٰ اکھلیش یادوسے ملاقات کرکے اس فیصلے کے تناظر میں گفتگوکی تھی اور یہ مطالبہ کیا تھا کہ ریاستی حکومت مثاثرین کی مالی امدادکرے ، اہم بات یہ ہے کہ مولانا مدنی کے مطالبہ کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے اکھلیش سرکارنے نہ صرف 48 متاثرین کو پانچ لاکھ روپے فی کس مالی امدادفراہم کی تھی بلکہ یہ بھی اعلان کیا تھا کہ اس معاملہ میں زیریں عدالت کے فیصلہ کے خلاف اترپردیش حکومت ہائی کورٹ میں اپیل کریگی ۔چنانچہ اس روز کی ملاقات میں جو فیصلہ لیا گیا دہلی ہائی کورٹ کے فیصلہ کی شکل میں اس کا نتیجہ آج سب کے سامنے ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

پارٹی کے’ وقف کارکن‘ کی طرف سے روی شنکر پرساد سمیت دیگر کے خلاف مقدمہ درج

پٹنہ کی ایک عدالت میں بی جے پی کا ’وقف کارکن‘ ہونے کا دعویٰ کرنے والے شخص نے گزشتہ ماہ پرکاش نارائن ہوائی اڈے کے احاطے میں اس کے ساتھ مارپیٹ اور لوٹ ۔پاٹ کا الزام لگاتے ہوئے مرکزی وزیر روی شنکر پرساد، ان کی نجی سکریٹری ، بی جے پی کے دو ممبران اسمبلی اور دیگر لوگوں کے خلاف جمعرات ...

مودی نوجوان نسل کو گمراہ کرنے میں ملوث ہیں : اشوک گہلوت

راجستھان کے وزیراعلیٰ اشوک گہلوت نے جمعرات کو کہا کہ آزادی کے بعد ملک کے عوام اور کانگریسی حکومتوں کی طرف سے کئے گئے کاموں کے باعث بھارت آج سپر پاور بننے کی جانب بڑھا ہے۔ اس کے ساتھ ہی گہلوت نے سابقہ کانگریسی حکومتوں کے کاموں پر سوال اٹھانے کو لے کر وزیر اعظم نریندر مودی پر ...

ہوائی شورمیں بنیادی مسائل دبائے جارہے ہیں،بی جے پی کے دماغ میں پاکستان سماگیاہے، وزیراعظم تھوڑاوقت ملک کودے پاتے،’’ناچ نہ جانے پاکستان ٹیڑھا‘‘ کنہیا کا گری راج سنگھ پر حملہ

سی پی آئی کے بیگوسرائے کے امیدوار کنہیا کمار کی تیاری زوروں پر ہے۔ بہار کے بیگو سرائے سیٹ سے کنہیا کمار کا مقابلہ مرکزی وزیر گری راج سنگھ اور آر جے ڈی کے تنویر حسن سے ہے۔کنہیا کمار نے اس درمیان فیس بک پر پوسٹ لکھ کر بی جے پی امیدوار گری راج سنگھ پر جم کر حملہ بولا۔ کنہیا کمار نے ...

سادھوی پرگیہ سنگھ کو بی جےپی امیدوار بنائے جانے کا اعلان کرنے کے دوران بی جےپی ترجمان پر پھینکا گیا جوتا

بھوپال سے سادھوی پرگیہ سنگھ کو بی جےپی اُمیدوار کا اعلان کرنے کے موقع پر بلائی گئی پریس کانفرنس میں   بی جے پی ترجمان  جی وی ایل نرسمہا راو پر اچانک جوتا پھینکا گیا جس سے ہر کوئی ششدر رہ گیا۔

ہیلی کاپٹر چیکنگ کے دوران مرکزی وزیر دھرمیندر پردھان نے کھویا آپا 

وزیر اعظم نریندر مودی کے ہیلی کاپٹر کی مبینہ تحقیقات کو لے کر الیکشن کمیشن کی طرف سے ایک آئی اے ایس افسر کو معطل کئے جانے کے بعد اب ایک ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوا ہے، جس میں مرکزی وزیر دھرمیندر پردھان اپنے ہیلی کاپٹر کی جانچ کے دوران آپا کھوتے نظر آ رہے ہیں۔ ویڈیو میں ...

وزیر اعظم ہو تو اکھلیش یادو یا مایاوتی جیسا ، کانگریسی امیدوار شتروگھن سنہا کا بیان

حال ہی میں کانگریس میں شامل ہونے والے شتروگھن سنہا نے بڑا بیان دیا ہے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم ہو تو اکھلیش یادو یا مایاوتی جیسا ہو، جن کے اندر قابلیت اور خصوصیات ہیں،کام کرنے کاجذبہ ہے۔انہوں نے کہا کہ اکھلیش یادو میں بہت صلاحیت ہے،وہ یہیں نہیں رکے،اکھلیش یادو کی تعریفوں کے ...

ضلع شمالی کینرا میں محکمہ انکم ٹیکس کے چھاپے۔ بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے قریبی افراد پر۔87.70لاکھ روپے ہوئے ضبط

ضلع ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر ہریش کمار کی طرف سے جاری کی گئی رپورٹ کے مطابق مصدقہ اطلاعات کی بنیا د پر انتخابی ضابطہ اخلاق لاگو کرنے پر تعینات فلائی اسکواڈ اور محکمہ انکم ٹیکس نے سرسی اور سداپور میں بی جے پی امیدوار اننت کمار ہیگڈے کے شناسا افراد پر چھاپہ ماری کی اوراس کے نتیجے میں ...

بی جے پی کا حصہ بن چکی ہیں سرکاری ایجنسیاں:کنی موجھی

گزشتہ چند دنوں میں محکمہ انکم ٹیکس نے ملک کے مختلف حصوں میں چھاپہ ماری کی ہے۔حکام نے منگل کو ڈی ایم کے لیڈر کنی موجھی کے گھر پر چھاپہ ماری کی تھی۔رپورٹوں کے مطابق ان کے پاس سے بڑی مقدار میں نقد رقم جمع ہونے کی اطلاع ملی تھی،اسے لے کر کنی موجھی نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر ...

کانگریس پارٹی نے کیا غیر رہائشی ہندوستانی ووٹروں کے لئے ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹرکے بطوربھٹکل کے قمر سعدا کا تقرر

بھٹکل کے مشہورغیر رہائشی سماجی خدمت گار اور سعودی عرب کے تاجر قمر سعدا صاحب کو کرناٹکا پردیش کانگریس کی طرف سے پارلیمانی انتخابات کے موقع پر ووٹنگ کے لئے وطن میں تشریف لانے والے این آر آئیز کے لئے’ ڈسٹرکٹ کوآر ڈینیٹر‘ مقرر کیا ہے ۔

پی یو سی دوم میں مینگلور سینٹ الوسیس کالج کے شاندار نتائج، 98.12 فیصد طلبا کامیاب

مینگلور کی معروف سینٹ الوسیس  پی یو کالج نے گذشتہ سالوں کی طرح امسال بھی شاندار کامیابی درج کی  اور بالجملہ نتائج کی شرح 98.12 فیصد درج کی گئی۔ امسال کالج سے جملہ 1916 طلبا نے پی یو سی دوم کا امتحان دیا تھا جس میں 1880 طلبا کامیاب رہے۔کامیاب ہونے والوں میں 526 طلبا  نے امتیازی نمبرات  ...