آرسی بی سے مقابلہ بہت سخت ہوگا: روہت

Source: S.O. News Service | By Sheikh Zabih | Published on 13th April 2017, 8:27 PM | اسپورٹس |

ممبئی،13اپریل(ایس او نیوز/آئی این ایس انڈیا)ممبئی انڈینس ٹیم کے کپتان روہت شرما کا خیال ہے کہ وراٹ کوہلی کی کپتانی والی آرسی بی سے ان سخت ٹکر ملے گی۔ روہت نے کہا کہ یہ ان کے لئے کسی بڑی چیلنج سے کم نہیں ہوگا۔ روہت نے اس کے ساتھ ہی، انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کے 10 ویں سیزن میں منگل کی رات سن رائزرس حیدرآباد کے خلاف ملی جیت کا کریڈٹ بھی گیند بازوں اور فیلڈروں کو دیا۔ممبئی نے سن رائزرس حیدرآباد کو چار وکٹ سے شکست دے کر آئی پی ایل کے اس سیزن میں اب تک کھیلے گئے تین میچوں میں دوسری جیت درج کی ہے، اسے اپنے پہلے میچ میں رائزنگ پونے سپرجایٹ سے سات وکٹ سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا، وہیں دوسرے میچ میں ٹیم نے کولکاتا نائٹ رائڈرس کو چار وکٹ سے شکست دے دی۔ سن رائزرس کے خلاف ٹیم کے گیند بازوں نے اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کیااور ہدف حاصل کرنے میں بلے بازوں نے بہترین کھیل کا مظاہرہ رہا، ابھی تو صرف تین میچ کھیلے ہیں اور سب سے بڑا چیلنج بنگلور ٹیم ہے، یہ ہمارے لئے گیند کے ساتھ اپنی قابلیت کو دکھانے کا ایک شاندار پلیٹ فارم ہے، کیونکہ ہم سب سن رائزرس کی ٹیم کو اچھی طرح جانتے تھے۔ خاص طور پر اس ٹیم کے پہلے چار بلے بازوں کو، لہذا، اس ٹیم کے خلاف ملی جیت کا کریڈٹ گیندبازوں اورفیلڈروں کو جاتا ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

سائنا نہوال انڈونیشیا اوپن کے دوسرے راؤنڈ میں

ہندوستان کی سب سے سینئر خاتون بیڈمنٹن کھلاڑی اور لندن اولمپکس کی کانسے کا تمغہ فاتح سائنا نہوال انڈونیشیا اوپن ورلڈ سپر سیریز پریمیئر بیڈمنٹن ٹورنامنٹ کے دوسرے راؤنڈ میں پہنچ گئی ہیں۔سائنا نے خواتین کے سنگلز کے پہلے دور میں آٹھویں درجہ بندی کی تھائی کھلاڑی اتانون رتچانوک کو ...

ہندوستان کے خلاف ذہنی طور پر مضبوط ہونے کی ضرورت ہے:غازی اشرف

آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کے سیمی فائنل میچ میں ہندوستان سے مقابلے کو لے کر بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان غازی اشرف نے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ ٹیم کو ذہنی طور پر مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔ہندوستان کے خلاف میچ کے لئے یہیں سب سے زیادہ ضروری چیز ہوگی،اگر ایسے ہوتا ہے، تو یقینی طور پر ...

کرکٹ کھیلنے کے لئے انگلینڈ سے بہتر جگہ نہیں:کوہلی

ہندوستانی کپتان وراٹ کوہلی نے کہا ہے کہ موسم صاف رہنے پر انگلینڈ سے بہتر جگہ کرکٹ کھیلنے کے لئے نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ یہاں گیند ہمیشہ کی طرح سوئنگ نہیں لے رہی اور بادل آنے پر حالات مشکل ہو جاتے ہیں۔یہاں کھیلنے کی سب سے اچھی بات یہ ہے کہ بطور بلے باز چیلنجز ملتے ہیں۔