امریکی طالبہ کا اسرائیل میں داخلہ یا ملک بدری، فیصلہ عدالت کریگی

Source: S.O. News Service | By Staff Correspondent | Published on 8th October 2018, 8:26 PM | عالمی خبریں |

مقبوضہ بیت المقدس8اکتوبر ( آئی این ایس انڈیا ؍ایس او نیوز) اسرائیل کی عبرانی یونیورسٹی کی ایک فلسطینی نڑاد امریکی طالبہ کو کئی روز سے "اللد" شہر میں قائم بن گوریون ہوائی اڈے پر حراست میں رکھا گیاہے۔ اسرائیلی حکام کا دعویٰ ہے کہ لارا قاسم اسرائیل کے بائیکاٹ کے لیے جاری عالمی تحریک 'BDS' کی سرگرم رکن ہے اور اسے اسرائیل میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ اطلاعات کے مطابق لارا قاسم کا معاملہ اس وقت اسرائیل کی مرکزی عدالت میں ہے۔ عدالت فیصلہ کرے گی کہ آیا لارا قاسم کو اسرائیل میں داخل ہونے اور عبرانی یونیورسٹی میں تعلیم جاری رکھنے کی اجازت دینا ہے یا نہیں۔ خیال رہے کہ اسرائیلی میڈیا میں آنے والی اطلاعات کے مطابق 22 سالہ لارا قاسم گذشتہ منگل سے 'بن گوریون' ہوائی اڈے پر قید ہے اور اسے اسرائیل داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جا رہی ہے۔عبرانی اخبار 'ہارٹز' کے مطابق لارا قاسم کے دادا اور دادی دونوں فلسطینی تھے جو امریکا میں آباد ہوگئے تھے۔ لارا کو اسرائیلی قونصل خانے کی طرف سے تعلیمی ویزہ جاری کیا گیا تھا اور وہ اسی ویزے کے تحت اسرائیل کی عبرانی یونیورسٹی میں داخل ہوئیں مگر امریکا واپس جانے کے بعد اسے دوبارہ اسرائیل میں داخل ہونیسے روک دیا گیا ہے۔ وہ اسرائیلی یونیورسٹی میں ’’ہیومن رائٹس‘‘ کے مضمون میں ایم اے کررہی ہیں۔دوسری جانب انسانی حقوق کے کارکنوں نے لارا قاسم کو ہوائی اڈے پر حراست رکھنے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ انسانی حقوق کے گروپوں کا کہنا ہے کہ اسرائیل کا فلسطینی نڑاد طالبہ کو روکنا انسانی حقوق کی خلاف ورزی ہے۔

ایک نظر اس پر بھی

امریکی رپورٹ کا خلاصہ؛ ہندوستان کی حکومت مسلم مخالف ! مسلم اداروں کے خلاف اقدامات؛ بی جے پی قائدین کی اشتعال انگیز تقاریر کا سلسلہ جاری؛ شہروں کے مسلم نام بدلنے کا بھی حوالہ

مذہبی آزادی سے متعلق  امریکہ کے اسٹیٹ  ڈپارٹمنٹ کی تازہ رپورٹ میں ہندوستان میں ہجومی تشدد، تبدیلی مذہب کی صورتحال، اقلیتوں کے قانونی موقف اور سرکاری پالیسیوں کا احاطہ کیا گیا  ہے۔ رپورٹ میں واضح کیا گیا ہے کہ  ہندوستان میں سال 2018 کے دوران ہندو انتہا پسند تنظیموں کی جانب سے ...

امریکہ اور ایران کے درمیان حالات انتہائی دھماکہ خیز ،خطے میں جنگ کا خطرہ،ہندوستان سمیت مختلف ممالک نے کیاہرمز سے پروازوں کا ر استہ تبدیل، سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس

گزشتہ چنددنوں سے ایران اور امریکہ کے درمیان جاری کشیدگی میں اس وقت مزید شدت آگئی جب ایران نے امریکہ کے ڈرون کو مارگرایا۔

امریکہ کی طرف سے ہندوستان کو دھمکی روس سے ڈیل کی صورت میں دفاعی امداد محدود ہوجائے گی

امریکہ کی وزارت خارجہ کی افسر ایلس جی ویلس نے جمعہ کو کہا کہ ان کا ملک ہندوستان کی دفاعی ضروریات پورا کرنے کے لئے تیار ہے، لیکن روسی ایس-400 نظام اس میں رکاوٹ بن رہا ہے- ہندوستان-روس ڈیل سے امریکہ کا تعاون محدود کردیا جائے گا -