بارش کی تباہی کا جائزہ لینے مرکزی ٹیم کی آمد،  دو دنوں تک ٹیم متاثرہ اضلاع کا دورہ کرے گی

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 12th September 2018, 11:57 AM | ریاستی خبریں |

بنگلورو12؍ستمبر(ایس او نیوز) ریاستی وزیر مالگزاری آر وی دیش پانڈے نے بتایاکہ ریاست کے مرکیرہ ، کورگ ، دکشن کنڑا، ہاسن اور دیگر اضلاع میں طوفانی بارش ، سیلاب اور زمین کھسکنے کی وجہ سے مچی تباہی کا جائزہ لینے کے لئے مرکزی حکومت کی طرف سے اعلیٰ افسروں کی ٹیم بنگلور پہنچ رہی ہے۔

انہوں نے کہاکہ 12 اور13 ستمبر کو یہ ٹیم ریاست کے اعلیٰ افسروں کے ہمراہ مرکیرہ ، ہاسن اور دکشن کنڑا اضلاع کا دورہ کرے گی اور یہاں پر مچی تباہی کا از خود جائزہ لے گی۔ انہوں نے کہاکہ مرکزی ٹیم کی رہنمائی کے لئے متاثرہ اضلاع کے انچارج وزراء ، ڈپٹی کمشنرس اور دیگر تمام عہدیداروں کو موجود رہنے کی سخت ہدایت دی گئی ہے۔

انہوں نے کہاکہ مرکزی ٹیم کی طرف سے بارش کی وجہ سے ہلاک ورثاء میں وزیر اعظم مودی کی طرف سے معاوضے کی رقم تقسیم کی جائے گی۔انہوں نے کہاکہ مہلوکین کی ایک فہرست ریاستی حکومت کی طرف سے مرکز کو روانہ کی گئی ہے۔

انہوں نے کہاکہ ریاست کے چکبالاپور، کولار، منڈیا ، گدگ، کلبرگی، بیجاپور، اور بلاری میں بارش کی قلت کے سبب پینے کے پانی کا مسئلہ کھڑا ہوگیا ہے۔اس سے نپٹنے کے لئے 200کروڑ روپیوں کا خصوصی پیکیج منظور کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ مرکزی حکومت کی طرف سے ریاست کو جو بھی مدد منظور کی جائے گی حکومت اس رقم سے فوری طور پر باز آباد کاری کے کاموں کی شروعات کرے گی۔ تاکہ آنے والے دنوں میں متاثرین کو پریشانی اٹھانے کی ضرورت نہ پڑے ۔ 

ایک نظر اس پر بھی

یشونت پور۔منگلورو نئی ٹرین : سفر کے دنوں میں تبدیلی سے مسافر ناخوش

بنگلورو اور منگلورو کو جوڑنے والی نئی یشونت پور۔منگلورو ٹرین جوکہ رات کے وقت چلنے والی ہے اس کا جو ٹائم ٹیبل پہلے پیش کیا گیا تھا اب اس میں تبدیلی کی گئی ہے ، جس پر مسافروں نے اپنی بے اطمینانی کا اظہار کیا ہے۔

بنگلور میں ائیرو انڈیا شو شروع ہونے سے قبل پریکٹس سیشن میں دو ائرکرافٹ کی فضا میں ٹکر؛ ایک پائلٹ ہلاک، دو کو بچالیا گیا

یلہنکا ائیربیس کے قریب پریکٹس سیشن میں دو ہوائی جہاز کرتب دکھلانے کے دوران اچانک فضا میں ہی ٹکراجانے سے  دونوں جہاز آگ کی لپیٹ میں آکر گرپڑے، جس کے نتیجے میں ایک پائلٹ  ہلاک ہوگیا، مگر دیگر دو پائلٹوں کو بچالیا گیا  ہے۔ 

کانگریس لوک سبھا انتخابات کی تیاریوں میں مصروف، جے ڈی ایس سے اتحاد کی صورت میں کانگریس آٹھ حلقے چھوڑنے پر آمادہ

ریاست کی مخلوط حکومت کو گرانے کے لئے بی جے پی کی طرف سے بارہا کئے گئے آپریشن کمل کی ناکامی نے اب کانگریس کو لوک سبھا انتخابات کی تیاریوں کے لئے راحت کی سانس لینے کا موقع فراہم کیا ہے۔