موہنی بستی کی چھت کا ایک حصہ گرنے کےبعد بھٹکل تحصیلدار نے کیا بھٹکل کی جین بسدی کا معائنہ 

Source: S.O. News Service | By Shahid Mukhtesar | Published on 5th September 2018, 10:23 PM | ساحلی خبریں | ان خبروں کو پڑھنا مت بھولئے |

بھٹکل 4؍ستمبر (ایس او نیوز)شہر کے قلب میں واقع قدیم زمانے کی جین بسدی کی چھت کا ایک حصہ گرنے کی اطلاع ملنے پر بھٹکل تحصیلدار وی این باڈکر نے موقع پر پہنچ کر بسدی کا معائنہ کیا۔

1556میں تعمیر شدہ  جین بسدی جسے عرف عام میں موہنی بستی کہا جاتا ہے۔محکمہ آثار قدیمہ کے زیر انتظام ہے۔ مقامی لوگوں کے مطابق اس بسد کو  باہری طورپر سجانے کا کام تو کیاجاتاہے مگر اندرونی سطح پر مضبوط کرنے کی کوئی بات دیکھنے میں نہیں آرہی ہے ۔ جس کے نتیجے میں  بسدھی کی چھت کے پتھر بارش کی وجہ سے ایک ایک کرکے گرنے شروع ہوگئے ہیں۔ سمجھا جارہا ہے کہ  اس  طرف فوری توجہ نہیں دی گئی  تو چھت کے مزید پتھر  گرنا یقینی ہے۔معاملے کی  سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے   بھٹکل تحصیلدار نے موقع پر پہنچ کر جائزہ لیا۔

خیال رہے کہ بھٹکل میں 18سے زیادہ اس قسم کی پرانی عمارتیں ہیں جو محکمہ آثار قدیمہ کے زیر انتظام ہیں۔انہیں بچائے رکھنااور ان کی حفاظت کرنا اس محکمے کی ذمہ داری ہے۔ بعض حلقوں کی طرف سے یہ الزام لگایا جارہا ہے کہ محکمہ کے افسران اس طرف سنجیدگی سے توجہ نہیں دے رہے ہیں اور بااثر افراد کے دباؤ میں آکر ان عمارتوں کے تحفظ کے لئے موجود قوانین پر پوری طرح عمل درآمد نہیں کرتے ۔ جس سے ان قدیم عمارتوں کو نقصان پہنچ رہا ہے۔پتہ چلا ہے کہ ان الزامات کے پس منظر میں دھارواڑ میں موجودمحکمہ آثار قدیمہ کے اعلیٰ افسران سے رابطہ قائم کیا گیا ہے۔

تحصیلدار باڈکر نے چھت کا ایک حصہ گرنے سے اس قدیم عمارت کو ہونے والے نقصان، عوام پر اس کے نتائج اور آثار قدیمہ کا نظارہ کرنے کے لئے آنے والے سیاحوں پراس کے اثرات کا مکمل جائزہ لینے کے بعدمیڈیا کو بتایا کہ وہ اپنی رپورٹ متعلقہ محکمے کو روانہ کریں گے۔

 

ایک نظر اس پر بھی

ساحلی علاقے میں ریت کا مسئلہ 15اکتوبر تک حل کیا جائے گا؛ وزیر اعلیٰ کمارا سوامی کا تیقن

وزیراعلیٰ کمارا سوامی نے ساحلی علاقے اڈپی اور منگلورو ضلع کے اراکین اسمبلی کے ساتھ ودھان سودا میں منعقدہ میٹنگ کے دوران تیقن دیا ہے کہ ریت نکالنے اور اس کی فراہمی کے متعلق مسائل کو 15اکتوبر حل کیا جائے گا۔

ریت کی سپلائی کا مستقل حل ڈھونڈ نکالنے بھٹکل رکن اسمبلی کی وزیراعلیٰ سے ملاقات؛ تعمیراتی کام ٹھپ پڑنے سے مزدوربھی پریشان

منگل کی شام بنگلورو کے ودھان سبھا ہال میں وزیرا علیٰ کمار سوامی کی صدارت میں منعقدہ میٹنگ میں بھٹکل کے رکن اسمبلی سنیل نائک نے اترکنڑا، اُڈپی اور دکشن کنڑا اضلاع میں ریت سپلائی شروع نہیں  کئے جانے سے پیش آنے والے مسائل کا تذکرہ کرتے ہوئے خوشگوار طورپر حل کرنے  کے لئے ریاستی ...

ہیلمٹ اور کاغذات نہ ہونے پربھٹکل پولس نے وصولا ایک ماہ میں 85 ہزار روپیہ جرمانہ؛ بائک اور کار کے بعد اب آئی آٹو کی شامت

شہر میں نئے آنے والے پولس سب انسپکٹر " کے کوسومادھر" جگہ جگہ گاڑیوں کی چیکنگ کرنے  میں لگے ہوئے ہیں اور ہیلمیٹ نہ پہننے ، گاڑی کے ضروری دستاویزات نہ ہونے، بغیر لائسنس گاڑی چلانے وغیرہ پر جرمانہ عائد کررہے ہیں۔  اب تک موٹر بائک اور کار وغیرہ کو روک کر چیکنگ کی جارہی تھی، مگر آج ...

ہیلمٹ اور کاغذات نہ ہونے پربھٹکل پولس نے وصولا ایک ماہ میں 85 ہزار روپیہ جرمانہ؛ بائک اور کار کے بعد اب آئی آٹو کی شامت

شہر میں نئے آنے والے پولس سب انسپکٹر " کے کوسومادھر" جگہ جگہ گاڑیوں کی چیکنگ کرنے  میں لگے ہوئے ہیں اور ہیلمیٹ نہ پہننے ، گاڑی کے ضروری دستاویزات نہ ہونے، بغیر لائسنس گاڑی چلانے وغیرہ پر جرمانہ عائد کررہے ہیں۔  اب تک موٹر بائک اور کار وغیرہ کو روک کر چیکنگ کی جارہی تھی، مگر آج ...

ہیومن ویلفیئر فاونڈیشن ، کیرالامیں 500 نئے گھروں کی تعمیرکرے گا

کیرالامیں آئے صدی کے سب سے بڑے سیلاب سے لگ بھگ ساڑھے چار سو سے زائد جانیں تلف ہونے کی اطلاعات ہیں ، اور 40 ہزار کروڑ کا مالی نقصان ہوا ہے ۔ مصیبت کی اس گھڑی میں پورا ملک کیرالا کے ساتھ کھڑا رہا ۔ پہلے مرحلے میں ریلیف کے بعد اب تباہ حال کیرالا کی باز آبادکاری کا مرحلہ شروع ہوا ہے

یہودی شرپسندوں کے طرف سے قبلہ اول پر مجرمانہ حملے جاری

فلسطین کے مقبوضہ بیت المقدس میں مسجد اقصیٰ میں یہودی آبادکاروں کے دھاوے اور مقدس مقام کی مجرمانہ بے حرمتی کا سلسلہ جاری ہے۔ کل سوموار کو90 یہودی آباد کار اور اسرائیلی فوجی پولیس کی فول پروف سیکیورٹی میں مسجد اقصیٰ میں داخل ہوئے اور قبلہ اول میں گھس کرنام نہاد مذہبی رسومات کی ...

دادری ہجومی تشدد معاملہ کا ملزم روپیندر رانا نوائیڈ ا سے اگلے لوک سبھا کا ہوگا امیدوار؛ نو نرمان سینا دے گی ٹکٹ

سال 2015میں پیش ائے دل دہلادینے والے دادری ہجومی تشدد کا واقعہ جس میں مشتبہ بیف کے نام پر محمد اخلاق کا بے رحمی کے ساتھ قتل کردیا گیا تھا اس کیس کا ایک اہم ملزم اترپردیش نو نرمان سینا کے ٹکٹ پر مجوزہ لوک سبھا الیکشن میں نوائیڈا سے امیدوار ہوگا۔